ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

بہار: سینکڑوں راونڈ فائرنگ اور 10 لاکھ کے انعامی زونل کمانڈر سمیت تین نکسلی ہلاک، جانیں انکاونٹر کی پوری کہانی

پولیس نکسلی تصادم (Police-naxalite encounter) کے دوران ایک پولیس اہلکار اور دو دیگر گاوں والے بھی زخمی ہوئے ہیں، جنہیں علاج کے لئے اے این ایم سی ایچ (ANMCH) میں داخل کرایا گیا ہے۔

  • Share this:
بہار: سینکڑوں راونڈ فائرنگ اور 10 لاکھ کے انعامی زونل کمانڈر سمیت تین نکسلی ہلاک، جانیں انکاونٹر کی پوری کہانی
بہار: سینکڑوں راونڈ فائرنگ اور 10 لاکھ کے انعامی زونل کمانڈر سمیت تین نکسلی ہلاک، جانیں انکاونٹر کی پوری کہانی

گیا: بہار کے گیا میں پولیس نے انکاونٹر (Police  Encounter) میں 10 لاکھ کے انعامی ایک بدنام زمانہ نکسلی سمیت تین نکسلیوں کو مار گرایا ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ اس سے پہلے نکلسیوں نے ایک بار پھر بڑے حادثہ کو انجام دیتے ہوئے دو لوگوں کا قتل (Murder) کردیا، جس کے بعد پولیس نے یہ انکاونٹر کیا۔


موصولہ اطلاعات کے مطابق، نکسلی تنظیم کے اندل گروپ نے گزشتہ شب باراچٹی ہی کے مہوآرای میں نگرپور ڈیہہ کے مکھیا کے دیور ویریندر یادو اور ان کے ایک معاون کا گولی مار کر قتل کردیا۔ اس حادثہ کی اطلاع پر سرچ میں نکلی بارا چٹی تھانہ کی پولیس اور کوبرا 205 کمپنی کی ٹیم موقع پر فوراً پہنچ کر نکسلیوں کی گھیرا بندی کردی۔ اس کے بعد دونوں طرف سے سینکڑوں راونڈ فائرنگ ہوئی، جس میں جھارکھنڈ حکومت سے 10 لاکھ کے انعامی زونل کمانڈر آلوک یادو کو موقع پر ہی ہلاک کردیا گیا۔ وہیں دو دیگر نکسلی بھی زخمی ہونے کے بعد موقع سے بھاگ گئے تھے۔ حالانکہ بعد میں پولیس کو ان دونوں کی ہی لاش ملی۔


موصولہ اطلاعات کے مطابق تصادم کے دوران ایک پولیس اہلکار اور دو دیگر گاوں والے بھی زخمی ہوئے ہیں، جنہیں علاج کے لئے این ایم سی ایچ میں داخل کرایا گیا ہے۔ دراصل تصادم کا یہ حادثہ مہوآری کے اس مقام پر پیش آیا، جہاں چھٹھ میلے کے موقع پر ثقافتی تقریب کا انعقاد کیا جارہا تھا۔ ایس ایس پی راجیو مشرا نے بتایا کہ ایک نکسلی آلوک کی لاش برآمد ہوگئی ہے، جبکہ دو دیگر نکسلی زخمی ہونے کے بعد بھاگ گئے تھے۔ پولیس نے ان کی تلاش میں سرچ آپریشن چلایا، جس کے بعد ان دونوں کی ہی لاش برآمد ہوئی۔ پولیس نے موقع سے ایک اے کے-47 اور ایک انساس رائفل کے ساتھ ہی کئی کارتوس اور دیگر دھماکہ خیز اشیا برآمد کی ہے۔ سیکورٹی اہلکاروں کی طرف سے ابھی بھی سرچ آپریشن چلایا جارہا ہے۔


واضح رہے کہ نکسلیوں کی ٹیم نے جس ویریندر یادو کا قتل کیا ہے، وہ اور اس کی فیملی نکسلیوں کے نشانے پر شروع سے ہورہا ہے۔ کئی سال پہلے ویریندر یادو کے بھائی کا قتل نکسلیوں نے ساسارام علاقے میں کردیا تھا اور وہ خود نکسلیوں کے خوف سے اپنے گاوں کو چھوڑ کر بارا چٹی شہر میں رہتا تھا، لیکن چھٹھ تیوہار کے موقع پر وہ اپنے گاوں آیا ہوا تھا۔ نکسلیوں نے ایک معاون کے ساتھ اس کا قتل کردیا۔

 
Published by: Nisar Ahmad
First published: Nov 22, 2020 11:43 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading