உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    گوا میں کانگریس کی اڑی نیند، کئی اراکین اسمبلی کے BJP میں شامل ہونے کی خبر سے پارٹی میں مچا ہنگامہ

    Goa Congress, Goa Congress Crisis: گوا میں کانگریس کے پاس نو اراکین اسمبلی ہیں اور اگر پارٹی میں الگ ہوکر نو اراکین اسمبلی بی جے پی کا دامن تھام لیتے ہیں تو کانگریس کے پاس صرف 2 ہی اراکین اسمبلی بچیں گے۔ وہیں دوسری طرف برسر اقتدار بی جے پی نے امید ظاہر کی ہے کہ دن ختم ہونے تک تین اور اراکین پارٹی میں شامل ہونے کے لئے مان سکتے ہیں۔

    Goa Congress, Goa Congress Crisis: گوا میں کانگریس کے پاس نو اراکین اسمبلی ہیں اور اگر پارٹی میں الگ ہوکر نو اراکین اسمبلی بی جے پی کا دامن تھام لیتے ہیں تو کانگریس کے پاس صرف 2 ہی اراکین اسمبلی بچیں گے۔ وہیں دوسری طرف برسر اقتدار بی جے پی نے امید ظاہر کی ہے کہ دن ختم ہونے تک تین اور اراکین پارٹی میں شامل ہونے کے لئے مان سکتے ہیں۔

    Goa Congress, Goa Congress Crisis: گوا میں کانگریس کے پاس نو اراکین اسمبلی ہیں اور اگر پارٹی میں الگ ہوکر نو اراکین اسمبلی بی جے پی کا دامن تھام لیتے ہیں تو کانگریس کے پاس صرف 2 ہی اراکین اسمبلی بچیں گے۔ وہیں دوسری طرف برسر اقتدار بی جے پی نے امید ظاہر کی ہے کہ دن ختم ہونے تک تین اور اراکین پارٹی میں شامل ہونے کے لئے مان سکتے ہیں۔

    • Share this:
      نئی دہلی: مہاراشٹر کے بعد اب گوا میں ایک بڑی سیاسی ہلچل دیکھنے کو مل رہی ہے۔ گوا میں کانگریس (Goa Congress Crisis) کو ایک بڑا جھٹکا لگ سکتا ہے۔ ماناجا رہا ہے کہ کانگریس کے تقریباً 8 سے 9 اراکین اسمبلی برسراقتدار بی جے پی میں شامل ہوسکتے ہیں۔

      ذرائع کی مانیں تو بی جے پی بھی ان اراکین اسمبلی کو پارٹی میں لانے کی کوشش میں لگی ہوئی ہیں، لیکن ابھی تک بی جے پی صرف 6 اراکین اسمبلی کو ہی منانے میں کامیاب ہوپائی ہے۔ حالانکہ ابھی کانگریس پارٹی میں کسی بھی طرح سے  ٹوٹ سے انکارکر رہی ہے، لیکن اس خبر نے کانگریس کی نیند اڑا دی ہے۔

      آپ کو بتادیں کہ گوا میں کانگریس کے پاس نو اراکین اسمبلی ہیں اور اگر پارٹی میں الگ ہوکر 9 اراکین اسمبلی بی جے پی کا دامن تھام لیتے ہیں تو کانگریس کے پاس صرف 2 ہی اراکین اسمبلی بچیں گے۔ وہیں دوسری طرف برسراقتدار بی جے پی نے امید ظاہرکی ہے کہ دن ختم ہونے تک تین اور اراکین اسمبلی پارٹی میں شامل ہونے کے لئے مان سکتے ہیں۔

      اے آئی سی سی آبزرور نے ٹوٹ سے کیا انکار

      گوا کانگریس میں پھوٹ کی خبریں مزید تیز ہوگئیں، جب کانگریس نے اپنے اے آئی سی سی آبزرور دنیش گنڈو راو کو گوا بھیجا۔ اراکین اسمبلی کے برسراقتدار جماعت میں جانے کی خبروں کو لے کر دنیش گنڈو راو سمیت کئی سینئر لیڈران نے افواہ بتایا۔ اس سے قبل دنیش گنڈو راو نے کانگریس اراکین اسمبلی کے ساتھ پنجی کے ایک ہوٹل میں میٹنگ بھی کی تھی۔  اس میٹنگ سے متعلق انہوں نے کہا کہ اس کا ان خبروں سے کوئی لینا دینا نہیں ہے، بلکہ یہ میٹنگ مانسون سیشن سے متعلق منعقد کی گئی تھی۔

      کانگریس ڈیسک انچارج گنڈو راو کی اراکین اسمبلی کے ساتھ ہوئی آج میٹنگ ایسے دن ہوئی جب آج سے ٹھیک 3 سال پہلے 2019 میں 10 اراکین اسمبلی 10 جولائی کو ایک الگ گروپ بناکر بی جے پی میں شامل ہوگئے تھے۔ ایک رکن اسمبلی نے نام نہ چھاپنے کی شرط پر بتایا کہ کوشش جاری ہے، لیکن یہ کتنا کامیاب ہوگا، یہ آنے والا وقت ہی بتائے گا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: