ہوم » نیوز » وطن نامہ

حجاب ہٹانے سے انکار کرنے پر خاتون کو یو جی سی نیٹ کے امتحان میں بیٹھنے سے روکا

سفینہ خان نے الزام لگائے کہ گوا کی دارالحکومت پنجی میں 18 دسمبر کو جب وہ امتحان دینے پہنچی تو چیکنگ کے دوران ان سے حجاب اتارنے کے لئے کہا گیا۔

  • Share this:
حجاب ہٹانے سے انکار کرنے پر خاتون کو یو جی سی نیٹ کے امتحان میں بیٹھنے سے روکا
علامتی تصویر

قومی اہلیتی ٹیسٹ (نیٹ) منظم کرنے والے افسران پر 24 سال کی ایک خاتون نے الزام لگایا کہ جب اس نے ’حجاب‘ اتارنے سے انکار کیا تو اسے امتحان میں نہیں بیٹھنے دیا گیا۔ وہیں دوسری جانب افسران نے کہا کہ امتحان میں چوری روکنے اور سکیورٹی کے تحت حجاب اور دوسری چیزوں کی اجازت نہیں ہے۔


سفینہ خان نے الزام لگائے کہ گوا  کی دارالحکومت پنجی میں 18 دسمبر کو جب وہ امتحان  دینے پہنچی تو چیکنگ کے دوران ان سے حجاب اتارنے کے لئے کہا گیا۔ سفینہ  نے صحافیوں کو بتایا کہ جب اس نے ایسا کرنے کے لئے انکار کیا تو انہوں نے اسے امتحان میں بیٹھنے نہیں دیا۔ قابل غور ہے کہ یو جی سی کے نیٹ امتحان نیشنل ٹسٹنگ ایجنسی کرا رہی ہے۔


سفینہ نے کہا کہ وہ منگل کو دوپہر کے ایک بجے امتحان دینے پہنچی اور قطار میں کھڑی ہو گئی جب امیدواروں کے ایڈمٹ کارڈ کی جانچ کا عمل شروع ہوا تو انہوں نے میرے دستاویز دیکھے، مجھے دیکھا اور حجاب اترانے کے لئے کہا۔ انہوں نے کہا کہ جحاب کے ساتھ میں امحتان نہیں دے سکتی‘‘۔


سفینہ نے معائنہ کر رہے افسر سے کہا کہ ’’حجاب ہٹانا اس کے مذہبی روایت کے مخالف ہے۔ جس کے جواب میں افسر نے کہا کہ حجاب کے ساتھ وہ امتحان میں بیٹھنے کی اجازت نہیں دے سکتے‘‘۔
First published: Dec 21, 2018 09:49 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading