ہوم » نیوز » وطن نامہ

بہار کے بعد امیدیں وابستہ کئے اویسی کو بنگال کے عوام نے دیا بڑا جھٹکا ، امیدواروں کی ہوئی ایسی حالت

اسد الدین اویسی جب مغربی بنگال میں الیکشن لڑنے کیلئے پہنچے تھے ، تب میڈیا میں کافی سرخیاں بنی تھیں ۔ ممتا بنرجی نے بھی ان پر نشانہ سادھا تھا ، لیکن اب الیکشن نتائج بتا رہے ہیں کہ اے آئی ایم آئی ایم کو بنگال میں مایوسی ہاتھ لگی ہے ۔

  • Share this:
بہار کے بعد امیدیں وابستہ کئے اویسی کو بنگال کے عوام نے دیا بڑا جھٹکا ، امیدواروں کی ہوئی ایسی حالت
بہار کے بعد امیدیں وابستہ کئے اویسی کو بنگال کے عوام نے دیا بڑا جھٹکا

کولکاتہ : گزشتہ سال بہار اسمبلی اتنخابات میں غیرمتوقع کامیابی حاصل کرنے والی اے آئی ایم آئی ایم کو مغربی بنگال میں زور کا جھٹکا لگا ہے ۔ پارٹی سربراہ اسد الدین اویسی جب مغربی بنگال میں الیکشن لڑنے کیلئے پہنچے تھے ، تب میڈیا میں کافی سرخیاں بنی تھیں ۔ ممتا بنرجی نے بھی ان پر نشانہ سادھا تھا ، لیکن اب الیکشن نتائج بتا رہے ہیں کہ اے آئی ایم آئی ایم کو بنگال میں مایوسی ہاتھ لگی ہے ۔


ریاست میں اویسی نے صرف سات سیٹوں پر ہی امیدوار اتارے تھے ۔ یہ سیٹیں اتہار ، جنگلی ، ساگردگھی ، بھرت پور ، مالتی پور ، رتوآ اور آسنسول ہیں ، لیکن ان میں سے کسی بھی سیٹ پر اے آئی ایم آئی ایم کو کامیابی نہیں ملی ۔ پارٹی امیدواروں کو نہ صرف ہار ملی بلکہ ان کی ضمانت بھی ضبط ہوگئی ۔


الیکشن سے پہلے کہا جارہا تھا کہ بہار کی طرز پر اویسی بنگال میں بھی مسلم ووٹوں کی تقسیم کرسکتے ہیں ، لیکن ایسا نہیں ہوا ۔ حالانکہ شروعات میں فرفرہ شریف کے مذہبی رہنما کے ساتھ ان کے اتحاد کی باتیں کہی جارہی تھیں ، لیکن یہ اتحاد نہیں ہوپایا ۔ اس سے پہلے تک امید کی جارہی تھی کہ اویسی زیادہ سیٹوں پر امیدوار اتاریں گے ۔


بتادیں کہ اسمبلی انتخابات میں تیسری مرتبہ ترنمول کانگریس پھر سے اقتدار میں آئی ہے ۔ پارٹی کو دو سو سے زیادہ سیٹوں پر جیت حاصل ہوئی ہے ۔ ممتا بنرجی نے جیت کے بعد عوام کا شکریہ ادا کیا ہے ۔ تقریبا دو مہینے بعد کھڑے ہوکر ممتا بنرجی نے پریس کانفرنس کو خطاب کرتے ہوئے کہا کہ یہ بنگال کے لوگوں اور جمہوریت کی جیت ہے ۔ بنگال نے آج ہندوستان کو بچالیا ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: May 03, 2021 12:24 AM IST