ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

سیرم انسٹی ٹیوٹ اور بھارت بایوٹیک سے مرکزی حکومت نے کہا : کورونا ویکسین کی قیمت کریں کم

India gears up to inoculate all aged above 18: ملک میں یکم مئی سے 18 سال سے زیادہ عمر کے لوگوں کیلئے ٹیکہ کاری مہم کی شروعات کی جارہی ہے ۔

  • Share this:
سیرم انسٹی ٹیوٹ اور بھارت بایوٹیک سے مرکزی حکومت نے کہا : کورونا ویکسین کی قیمت کریں کم
سیرم اور بھارت بایوٹیک سے مرکزی حکومت نے کہا : کورونا ویکسین کی قیمت کریں کم

نئی دہلی : کورونا ویکسین کی قیمتوں پر جاری گھمسان کے درمیان مرکزی حکومت نے سیرم انسٹی ٹیوٹ اور بھارت بایوٹیک سے اپنی اپنی ویکسین کی قیمت کم کرنے کیلئے کہا ہے ۔ پی ٹی آئی نے سرکاری ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ سرکار نے دونوں کمپنیوں کو قیمت میں کمی کرنے کیلئے کہا ہے ۔ بتادیں کہ کئی ریاستی سرکاروں اور اپوزیشن پارٹیوں نے ویکسین کی قیمت کو لے کر مرکزی حکومت پر نشانہ سادھا ہے ۔


سیرم انسٹی ٹیوٹ آف انڈیا نے کہا ہے کہ کورونا وائرس کے ٹیکہ کووی شیلڈ کی قیمت ریاستی سرکاروں کیلئے 400 روپے فی ڈوز اور پرائیویٹ اسپتالوں کیلئے 600 روپے فی ڈوز ہوگی ۔ کمپنی کے سی ای او نے یہ بھی کہا کہ 150 روپے فی ڈوز کا موجودہ کنٹریکٹ ختم ہونے کے بعد مرکزی حکومت کیلئے بھی قیمت 400 روپے فی ڈوز ہوگی ۔ بتادیں کہ ملک میں یکم مئی سے 18 سال سے زیادہ عمر کے لوگوں کیلئے ٹیکہ کاری مہم کی شروعات کی جارہی ہے ۔


ادھر بھارت بایوٹیک کی قیمت ریاستی سرکاروں کیلئے 600 روپے فی ڈوز رکھی گئی ہے جبکہ پرائیویٹ اسپتالوں کیلئے فی ڈوز قیمت 1200 روپے ہے ۔ کمپنی کے چیئرمین کرشنا ایم ایلا نے ایک بیان میں کہا کہ بھارت بایوٹیک مرکزی سرکار کو 150 روپے کی قیمت میں ویکسین دے رہی ہے ۔ ایکسپورٹ کیلئے کمپنی نے ویکسین کی قیمت 15 سے 20 ڈالر کے درمیان میں رکھی ہے ۔


حالیہ رپورٹس کی مانیں تو ملک کی 17 ریاستوں نے اپنے اپنے لوگوں کیلئے مفت ٹیکہ کاری کا اعلان کیا ہے ۔ ان ریاستوں میں مدھیہ پردیش ، جموں و کشمیر ، ہماچل پردیش ، گوا ، کیرالہ ، چھتیس گڑھ ، بہار ، جھارکھنڈ ، اترپردیش ، آسام ، سکم ، مغربی بنگال ، تمل ناڈو ، آندھرا پردیش ، تلنگانہ اور ہریانہ شامل ہیں ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Apr 26, 2021 07:40 PM IST