ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

گلشن کمارقتل کیس: بامبے ہائی کورٹ نےمجرم عبدالرؤف عرف داؤدمرچنٹ کی سزائے عمرقیدکورکھابرقرار

بامبے ہائی کورٹ نے ٹی سیریز کے مالک گلشن کمار قتل کیس میں عبدالرؤف عرف داؤد مرچنٹ کو قصور وار قراردیتے ہوئے عمرقید کی سزا کو برقرار رکھا۔ اس کے علاوہ ہائی کورٹ نے دوسرے ملزم عبد الرشید کو بھی مجرم قرار دیا ہے جسے پہلے سیشن کورٹ نے بری کردیا تھا۔

  • Share this:
گلشن کمارقتل کیس: بامبے ہائی کورٹ نےمجرم عبدالرؤف عرف داؤدمرچنٹ کی سزائے عمرقیدکورکھابرقرار
ممبئی ہائی کورٹ

گلشن کمار قتل کیس سے منسلک  درخواست پر بامبے ہائی کورٹ نے  اپنا فیصلہ سنایا ہے۔ کورٹ نے قتل کے مجرم عبدالرؤف عرف داؤد مرچنٹ کی عمر قید کی سزا کو برقرار رکھا۔بامبے ہائی کورٹ نے ٹی سیریز کے مالک گلشن کمار قتل کیس میں  عبدالرؤف عرف داؤد مرچنٹ کو قصور وار قراردیتے ہوئے عمرقید کی سزا کو برقرار رکھا۔ اس کے علاوہ ہائی کورٹ نے دوسرے ملزم عبد الرشید کو بھی مجرم قرار دیا ہے جسے پہلے سیشن کورٹ نے بری کردیا تھا۔


مہاراشٹر سرکار نے عبدالرشید کو بری کرنے کے فیصلے کو  ہائی کورٹ میں چیلنج کیا تھا۔ عبدالرشید کوعمر قید کی سزا سنائی گئی تھی۔جبکہ  کورٹ  نے اس معاملہ میں مہاراشٹرا حکومت کی اپیل کو مسترد کرتے ہوئے  رمیش تورانی کو بری کرنے کے فیصلے کو برقرار رکھا۔



گلشن کمار کو 12 اگست 1997 کو قتل کیا گیا تھا۔ جیتیشور مہادیو مندر کے باہر ان پر 16 گولیوں چلائی گئی تھی۔ گلشن کمار کو قتل کرنے کی سازش میں  داؤد ابراہیم اور ابو سالم کا نام آیا تھا۔ گلشن کمارکو مارنے کے لئے مندر کے باہر دو شاطر شوٹروں کو تعینات کیا گیا تھا۔

گلشن کمار نے80 کی دہائی میں ٹی سیریز کی بنیاد رکھی تھی۔ 90 کی دہائی میں وہ کیسٹ کنگ کے نام سے مشہور ہوئے۔ اس معاملے میں مرچنٹ کو سزا سنائی گئی تھی۔ 2002 میں  اسے عمر قید کی سزا سنائی گئی۔ 2009 میں اسے اپنی بیمار والدہ سے ملنے کے لئے پیرول پر رہا گیا تھا لیکن بعد میں وہ بنگلہ دیش فرار ہوگیا۔ فرضی پاسپورٹ کیس میں بنگلہ دیش پولیس نے  اسےگرفتار کیا تھا۔
Published by: Mirzaghani Baig
First published: Jul 01, 2021 05:39 PM IST