உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    این سی پی کے کنونشن میں دکھا ہائی وولٹیج ڈراما، شرد پوار کے سامنے اسٹیج سے اٹھ کر چلے گئے اجیت

    این سی پی کے کنونشن میں دکھائی ہائی وولٹیج ڈراما، شرد پوار کے سامنے اسٹیج سے اٹھ کر چلے گئے اجیت ۔ تصویر: Twitter/NCP

    این سی پی کے کنونشن میں دکھائی ہائی وولٹیج ڈراما، شرد پوار کے سامنے اسٹیج سے اٹھ کر چلے گئے اجیت ۔ تصویر: Twitter/NCP

    نیشنلسٹ کانگریس پارٹی کی جانب سے نئی دہلی میں منعقدہ قومی کنونشن میں اتوار کو کافی ہنگامہ دیکھا گیا ۔ یہاں کنونشن کے درمیان میں ہی اسٹیج چھوڑ کر اجیت پوار باہر نکل گئے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | New Delhi | New Delhi
    • Share this:
      نئی دہلی : نیشنلسٹ کانگریس پارٹی کی جانب سے نئی دہلی میں منعقدہ قومی کنونشن میں اتوار کو کافی ہنگامہ دیکھا گیا ۔ یہاں کنونشن کے درمیان میں ہی اسٹیج چھوڑ کر اجیت پوار باہر نکل گئے ۔ مانا جارہا ہے کہ بولنے والوں کی اطلاع میں جینت پاٹل کا نام ہونے اور خود کا نام نہ ہونے سے اجیت پوار ناراض ہوگئے ۔ این سی پی ذرائع کے مطابق اجیت پوار نے کنونشن میں بولنے کیلئے کسی اور کا نام دیا تھا ۔ حالانکہ کنونشن کو خطاب کرنے والوں میں اپنا نام نہ ہونے اور جینت پاٹل کا نام دیکھ کر اجیت پوار اسٹیج سے اٹھ کر چلے گئے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : مغربی بنگال : سیتل کوچی میں بی جے پی کے جلوس پر حملہ، کئی زخمی، ٹی ایم سی پر الزام


      اجیت پوار کے اس طرح اٹھ کر چلے جانے سے وہاں موجود ان کے حامیوں نے کافی نعرے بازی کی ۔ اسی درمیان پرفل پٹیل نے حامیوں کو پرسکون کرانے کی کوشش کی اور انہیں بتایا کہ اجیت پوار واش روم گئے ہیں ۔ یہ پورا ڈراما شرد پوار کی موجودگی میں ہوا ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: گیانواپی کیس میں کل آئے گا کورٹ کا فیصلہ، جانئے کس نکتے پر رہے گی توجہ مرکوز


      اس سے پہلے این سی پی کے اس آٹھویں قومی سمیلن کو خطاب کرتے ہوئے شرد پوار نے وزیر اعظم مودی کی قیادت والی سرکار کو مہنگائی ، بے روزگاری، کسانوں کے احتجاج سے نمٹنے کے طریقے اور ملک میں مذہبی اقلیتوں کے خلاف نفرت پھیلانے کے معاملہ پر آڑے ہاتھوں لیا ۔ شرد پوار نے اتوار کو کہا کہ ان کی پارٹی دہلی میں موجود حکمراںوں کے سامنے کبھی خود سپردگی نہیں کرے گی ۔

      پوار نے بی جے پی کو اقتدار سے بے دخل کرنے کیلئے غیر بی جے پی پارٹیوں سے ایک مرتبہ پھر مل کر کام کرنے کی اپیل کی ۔ ان کا یہ بیان ایسے وقت میں سامنے آیا ہے ، جب اپوزیشن کے کئی لیڈروں مرکزی جانچ ایجنسیوں کی تفتیش کا سامنا کررہے ہیں ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: