உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Mangaluru: منگلورو میں مسجد کی تزئین کا کام جاری، وی ایچ پی نے ہنگامہ کھڑا کیا، آخرکیاہےمعاملہ؟

    خاموشی برقرار رکھنے کی ہدایت دی گئی ہے

    خاموشی برقرار رکھنے کی ہدایت دی گئی ہے

    اے این آئی کی خبر کے مطابق منگلورو کے مضافات میں ملالی میں واقع جامع مسجد (Juma Masjid in Malali) میں تزئین و آرائش کے کام کے دوران آرکیٹیکچرل ڈیزائن پر تنازعہ کھڑا کیا گیا ہے۔ مسجد کی انتظامیہ تزئین و آرائش کا کام کرارہی تھی۔

    • Share this:
      منگلورو میں مسجد کی تزئین و آرائش کا کام جاری ہے۔ اسی دوران وی ایچ پی نے دعوی کیا ہے کہ یہاں ہندو مندر جیسا ڈھانچہ ابھرا ہے۔ اسی لیے وی ایچ پی نے کام روکنے کا مطالبہ کیا ہے۔ جمعرات کے روز منگلورو کے مضافات میں ایک پرانی مسجد کے نیچے سے ایک ہندو مندر جیسا آرکیٹیکچرل ڈیزائن دریافت ہونے کا دعوی کیا گیا ہے۔ جس کی ہنوز کوئی تصدیق نہیں کی گئی۔ مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ اس طرح کے ’بے بنیاد دعووؤں‘ سے سماج ے امن کو نقصان پہنچ سکتا ہے۔

      اے این آئی کی خبر کے مطابق منگلورو کے مضافات میں ملالی میں واقع جامع مسجد (Juma Masjid in Malali) میں تزئین و آرائش کے کام کے دوران آرکیٹیکچرل ڈیزائن پر تنازعہ کھڑا کیا گیا ہے۔ مسجد کی انتظامیہ تزئین و آرائش کا کام کرارہی تھی۔ وشو ہندو پریشد (وی ایچ پی) کے رہنماؤں نے ضلع انتظامیہ سے دستاویزات کی تصدیق ہونے تک کام روکنے کو کہا ہے۔

      دریں اثنا دکشینا کنڑ کمشنریٹ نے حکم دیا ہے کہ جب تک مزید احکامات جاری نہیں کیے جاتے اس ڈھانچہ کو برقرار رکھا جائے۔ انتظامیہ اراضی کے ریکارڈ کی چھان بین کر رہی ہے اور لوگوں سے امن برقرار رکھنے کی اپیل کی ہے۔

      مزید پڑھیں: Jobs in Telangana: تلنگانہ میں 80 ہزار نئی نوکریوں کا اعلان، لیکن پہلے سے وعدہ شدہ اردو کی 558 ملازمتیں ہنوز خالی!

      راجیندر کے وی، ڈپٹی کمشنر، دکشینہ کنڑ نے اے این آئی کو بتایا کہ میں نے اس مسئلے کے بارے میں فیلڈ حکام اور محکمہ پولیس سے معلومات حاصل کی ہیں۔ ضلعی انتظامیہ ملکیت کی تفصیلات کے حوالے سے زمین کے پرانے ریکارڈ اور اندراجات کا جائزہ لے رہی ہے۔ ہم محکمہ اوقاف اور وقف بورڈ دونوں سے رپورٹ لیں گے۔

      مزید پڑھیں: TMREIS: تلنگانہ اقلیتی رہائشی اسکول میں داخلوں کی آخری تاریخ 20 اپریل، 9 مئی سے امتحانات

      اہلکار نے کہا کہ دعووں کی درستگی کی جانچ کی جائے گی۔ ہم بہت جلد مناسب فیصلہ لیں گے۔ تب تک میں نے خاموشی برقرار رکھنے کی ہدایت دی ہے اور لوگوں سے درخواست کی ہے کہ وہ کسی نتیجے پر نہ جائیں۔ میں لوگوں سے امن و امان اور امن برقرار رکھنے کی درخواست کر رہا ہوں۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: