உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    راجیہ سبھا میں آج پیش کیاجائےگا طلاق ثلاثہ بل۔ ٹی آرایس اوروائی آرکانگریس ارکان کا فیصلہ کن موقف

    علامتی تصویر

    علامتی تصویر

    اب ٹی آر ایس ، وائی ایس آر کانگریس پارٹی پرسب کی نگاہیں ٹکی ہیں۔دونوں پارٹیوں کا طرز عمل آج قابل دید رہے گا۔

    • Share this:
      آج راجیہ سبھا میں طلاق ثلاثہ بل پیش کیاجائیگا۔ بی جے پی نے سبھی ارکان پارلیمنٹ کوایوان میں موجود رہنے کی ہدایت دیتے ہوئے وہپ جاری کیاہے۔راجیہ سبھا میں موجودہ ارکان کی تعداد 241ہیں اور اکثریت کے لیے 121ارکان کی رضامندی ضروری ہے ۔این ڈی اے اتحادیوں کے ارکان کی تعداد 113ہے-جے ڈی یو مخالفت کرے گی تو صرف 107ارکان ہوجائیں گے۔ بتایاجارہاہے کہ جے ڈی یو واک آؤٹ کرسکتی ہے۔ تب ایوان میں ارکان کی تعداد 235رہ جائے گی اور اکثریت کے لیے 118امیدوارضروری ہوں گے۔11سے 12غیر این ڈی اے ارکان کے ووٹوں کی ضرورت پڑے گی۔

      وہیں دوسری جانب اڈیشہ کی بی جے ڈی پارٹی مرکزی حکومت کا ساتھ دے سکتی ہے۔بی جے ڈی کے 7ارکان ہیں ایوان میں اب ٹی آر ایس ، وائی ایس آر کانگریس پارٹی پرسب کی نگاہیں ٹکی ہیں۔دونوں پارٹیوں کا طرز عمل آج قابل دید رہے گا۔ دونوں پارٹیاں ایوان سے واک آؤٹ کریگی؟ یا طلاق ثلاثہ بل کی مخالفت کریگی؟اگر وائی ایس آرکانگریس اورٹی آرایس اس بل کی تائید کرتے ہیں تو راجیہ سبھا میں طلاق ثلاثہ بل منظورہوجائیگا۔
      First published: