ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

انڈیا گیٹ پر دستکاری اور ذائقوں کے ہنر ہاٹ کا آغاز ، جانیں اس سال کیا کیا ہے خاص ؟

ہنر ہاٹ میں سال رواں ڈھائی سو سے زیادہ اسٹال لگائے گئے ہیں ، جن میں میں 179 ہنرمند اپنی کاریگری کا نمونہ لے کر پہنچے ہیں ۔

  • Share this:
انڈیا گیٹ پر دستکاری اور ذائقوں کے ہنر ہاٹ کا آغاز ، جانیں اس سال کیا کیا ہے خاص ؟
انڈیا گیٹ پر دستکاری اور ذائقوں کے ہنر ہاٹ کا آغاز ، جانیں اس سال کیا کیا ہے خاص

مرکزی وزارت اقلیتی امور کے توسط سے ہر سال لگائے جانے والے ہزار ہاٹ کا انعقاد اس مرتبہ انڈیا گیٹ لان میں کیا گیا ہے ۔  مرکزی وزیر ریلوے پیوش گوئل نے اقلیتی امور کے وزیر مختار عباس نقوی اور مرکزی وزیر ہردیپ پوری کے ساتھ ہنر ہاٹ کا افتتاح کیا۔ سینٹرل دہلی میں انڈیا گیٹ لان پر لگایا گیا ہنرہاٹ اس مرتبہ کافی کچھ خاص لے کر آیا ہے ۔ سب سے اچھی بات یہ ہے کہ اس مرتبہ ہاٹ کو ایک سے ڈیڑھ کلومیٹر لمبی جگہ ملی ہے ۔ ڈھائی سو سے زیادہ اسٹال لگائے گئے ہیں ، جن میں میں 179 ہنرمند اپنی کاریگری کا نمونہ لے کر پہنچے ہیں ۔ اسی کے ساتھ ساتھ ملک بھر کے ذائقے بھی یہاں موجود ہیں ۔ خواہ شمالی ہند کا ذائقہ ہو یا پھر جنوبی ہند کا پکوان ، یہاں پر سب کچھ موجود ہے ۔ باورچی خانے کے نام سے 38 اسٹال کھانے پینے کے لگائے گئے ہیں ۔ ہنر ہاٹ میں اترپردیش کے خورجہ کی پوئٹری ، فیروزآباد کی چوڑی، بھدوہی کا قالین اور کشمیری پشمینہ اور پیپرمیشی سب کچھ ملے گا  ۔


یہ ہنر ہاٹ  13 فروری سے 23 فروری یعنی 11 دنوں تک چلے گا ۔ مرکزی وزیر ریلوے پیوش گوئل نے افتتاح کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مختار عباس نقوی اور ان کی ٹیم کو مبارکباد پیش کی ۔ پیوش گوئل نے کہا کہ جس طرح کی ہنرمندی اور کاریگری دیکھنے کو ملی یہ حقیقت میں ملک کی وراثت ہے ۔ اگر کوئی بیرون ملک سے آئے تو اس کو یہاں ضرور آنا چاہئے ۔ تاکہ ان کو احساس ہو کہ اصلی ہندوستان کیا ہے۔ اگر ہم اپنی اس ہنر مندی اور وراثت کو ای کامرس سے جوڑدیں ، تو مزید امکانات پیدا ہو سکتے ہیں ۔


 لگائے گئے 250 اسٹالوں میں سے 50 فیصد خواتین کے اسٹال ہیں ۔تصویر : خرم علی شہزاد ۔
لگائے گئے 250 اسٹالوں میں سے 50 فیصد خواتین کے اسٹال ہیں ۔تصویر : خرم علی شہزاد ۔


ادھر مرکزی وزیر مختار عباس نقوی نے کہا کہ اس مرتبہ کے ہنر ہاٹ کی تھیم ہنر کو کام ہے ۔ ہنر ہاٹ کے ذریعہ دستکاروں اور ہنرمندوں کو روزگار اور روزگار کے مواقع فراہم کرانا وزارت کا ہدف ہے ۔ اب تک پچھلے تین سالوں میں تین لاکھ سے زیادہ روزگار کے مواقع  ہنر ہاٹ کے ذریعہ سے مہیا کرائے گئے ہیں ۔

غور طلب ہے کہ یہاں لگائے گئے 250 اسٹالوں میں سے 50 فیصد خواتین کے اسٹال ہیں ۔ وزارت اقلیتی امور کی ہنر ہاٹ اسکیم کے تحت شرکت کرنے والے ہنرمند دست کاروں کو مفت اسٹال مہیا کرایا جاتا ہے ۔ ساتھ ہی ساتھ ان کے قیام اور طعام کا خرچ اٹھایا جاتا ہے ۔ اب تک ملک میں الگ الگ مقامات پر 19 ہنر ہاٹ کاانعقاد کیا جا چکا ہے اور یہ 20 واں ہنر ہاٹ ہے۔ یہ اسکیم کافی مقبول ہوئی ہے ، یہی وجہ ہے کہ اب وزارت اقلیتی امور تمام ریاستوں میں الگ الگ مقامات پر ہنر ہاٹ کا عزم رکھتی ہے ۔ کل ملا کر یہ کہا جاسکتا ہے کہ عظیم ہندوستان کی عظیم وراثت کا دوسرا نام ہنر ہاٹ ہے ۔
First published: Feb 13, 2020 11:11 PM IST