ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

سنجے راوت کا دعویٰ- کہا- میں نے وارننگ دی تھی، حکومت کے خلاف پریشانی کھڑی کرسکتا ہے واجے

Maharashtra News: راجیہ سبھا رکن پارلیمنٹ نے کہا کہ وہ ان لیڈروں کے نام کا انکشاف نہیں کرسکتے ہیں، لیکن ’میری ان کے ساتھ ہوئی بات چیت کے بارے میں وہ سب بخوبی واقف‘ ہیں۔

  • Share this:
سنجے راوت کا دعویٰ- کہا- میں نے وارننگ دی تھی، حکومت کے خلاف پریشانی کھڑی کرسکتا ہے واجے
سنجے راوت کا دعویٰ- کہا- میں نے وارننگ دی تھی، حکومت کے خلاف پریشانی کھڑی کرسکتا ہے واجے

ممبئی: شیو سینا رکن پارلیمنٹ سنجے راوت نے (Shivsena MP Sanjay Raut) پیر کو دعویٰ کیا کہ پارٹی کے کچھ لیڈروں کو انہوں نے آگاہ کیا تھا کہ ممبئی پولیس کے معطل افسر سچن واجے (Sachin Vaze) مہاراشٹرحکومت کے لئے پریشانی پیدا کرسکتے ہیں۔ واجے ابھی این آئی اے (NIA) کی حراست میں ہیں۔ سنجے راوت نے یہ بھی کہا کہ سچن واجے معاملے نے ریاست میں شیو سینا کی قیادت والے اتحادی حکومت کو ایک اچھا سبق سکھایا ہے۔ مہاراشٹر میں شیو سینا کی قیادت والی مہا وکاس اگھاڑی حکومت نے نیشنلسٹ کانگریس پارٹی (این سی پی) اور کانگریس بھی شامل ہے۔


ممبئی کے ایک پاش علاقے میں 25 فروری کو ایک مشکوک گاڑی کھڑی کی گئی تھی۔ اس میں بارودی اشیا رکھی ہوئی تھی۔ اس معاملے میں مبینہ کردار کو لےکرقومی تفتیشی ایجنسی (این آئی اے) نے اس ماہ کے شروع میں واجے کو گرفتار کیا تھا۔ اس سے پہلے بھی 2004 میں گھاٹ کوپر بم دھماکوں کے ملزم خواجہ یونس کی حراست میں ہوئی موت کے معاملے میں واجے کو معطل کیا گیا تھا اور گزشتہ سال انہیں پھر سے پولیس اہلکار میں شامل کیا گیا تھا۔


سنجے راوت نے ایک ٹی وی چینل سے بات چیت میں کہا، ’جب سچن واجے کو مہاراشٹر پولیس اہلکاروں میں بحال کرنے کا منصوبہ بنایا جا رہا تھا، تو میں نے کچھ لیڈروں کو مطلع کیا تھا کہ وہ ہمارے لئے پریشانی کرسکتے ہیں۔ ان کا برتاو اور کام کرنے کا طریقہ حکومت کے لئے مشکلات پیدا کرسکتا ہے۔


سنجے راوت نے ایک ٹی وی چینل سے بات چیت میں کہا، ’جب سچن واجے کو مہاراشٹر پولیس اہلکاروں میں بحال کرنے کا منصوبہ بنایا جا رہا تھا، تو میں نے کچھ لیڈروں کو مطلع کیا تھا کہ وہ ہمارے لئے پریشانی کرسکتے ہیں۔
سنجے راوت نے ایک ٹی وی چینل سے بات چیت میں کہا، ’جب سچن واجے کو مہاراشٹر پولیس اہلکاروں میں بحال کرنے کا منصوبہ بنایا جا رہا تھا، تو میں نے کچھ لیڈروں کو مطلع کیا تھا کہ وہ ہمارے لئے پریشانی کرسکتے ہیں۔


لیڈروں کے نام کا نہیں کیا انکشاف

راجیہ سبھا رکن پارلیمنٹ نے کہا کہ وہ ان لیڈروں کے نام کا انکشاف نہیں کرسکتے ہیں، لیکن ’میری ان کے ساتھ ہوئی بات چیت کے بارے میں وہ سب بخوبی واقف‘ ہیں۔ سنجے راوت نے کہا کہ وہ کچھ دہائی سے صحافی ہیں اور اسی لئے واجے کے بارے میں جانتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کوئی شخص برا نہیں ہوتا ہے، بلکہ کبھی کبھی حالات اسے ایسا بنا دیتی ہے۔

شیو سینا کے چیف ترجمان نے کہا، ’واجے کی سرگرمیوں اور تنازعہ سمیت پورے معاملے سے ریاست کی اتحادی حکومت کو سبق سیکھنے کو ملا ہے۔ ایک طرح سے یہ اچھا ہوا کہ حادثہ ہوا اور ہم نے سبق سیکھا‘۔ معطل پولیس افسر کا وزیر اعلیٰ ادھو ٹھاکرے کے ذریعہ حمایت کئے جانے کے بارے میں پوچھے جانے پر سنجے راوت نے کہا کہ واجے اور ان کی سرگرمیوں کے بارے میں انہیں مناسب اطلاع نہیں ملی تھی۔

ہفتہ کے روز احمد آباد میں نیشنلسٹ کانگریس پارٹی (این سی پی) کے صدر شرد پوار اور مرکزی وزیر امت شاہ کی ملاقات کے بعد جاری سیاسی قیاس آرائیوں کے بارے میں انہوں نےکہا کہ گجرات کے اس شہر میں مختلف لیڈروں کے ساتھ ملاقات کے لئے امت شاہ جانے جاتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اگر شرد پوار اور امت شاہ کے درمیان ملاقات ہوتی ہے تو اس میں کوئی بہت بڑی بات نہیں ہے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Mar 29, 2021 07:59 PM IST