உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    میرا دوست ہم جنس پرست ہے اور میں ہم جنس پرست نہیں ہونا چاہتا، کیا ہمارا جنسی ماحول متاثر ہوتاہے؟

    میرا دوست ہم جنس پرست ہے اور میں ہم جنس پرست نہیں ہونا چاہتا، کیا ہمارا جنسی ماحول متاثر ہوتا ہے؟

    میرا دوست ہم جنس پرست ہے اور میں ہم جنس پرست نہیں ہونا چاہتا، کیا ہمارا جنسی ماحول متاثر ہوتا ہے؟

    ایک عام حقیقت ہےکہ آپ کسی خاتون کے ساتھ سیکس کرنا چاہتے ہیں یا کسی مرد کے ساتھ یا کسی ٹرانسجینڈر شخص وغیرہ کے ساتھ۔ سیکسوالٹی۔ دوسری طرف، یہ بہت وسیع معنی لئے ہوئے ہے۔

    • Share this:
    میرا دوست ہم جنس پرست ہے اور میں ہم جنس پرست نہیں ہونا چاہتا، کیا ہمارا جنسی ماحول متاثر ہوتا ہے؟

    جنس کا جنسی رجحان (sexual orientation) الگ ہوتا ہے، جب ہم یہ کہتے ہیں کہ ہم اس اور اس جینڈر کے تئیں جاذب ہیں، تو اس وقت ہم اپنی جنسی رجحان کے بارے میں بات کر رہے ہوتے ہیں۔ یہ ایک عام حقیقت ہے کہ آپ کسی خاتون کے ساتھ سیکس کرنا چاہتے ہیں یا کسی مرد کے ساتھ یا کسی ٹرانسجینڈر شخص وغیرہ کے ساتھ۔ سیکسوالٹی۔ دوسری طرف، یہ بہت وسیع معنی لئے ہوئے ہے۔ جنسیت کے مطابق، آپ کے تاثرات، آپ کی حیاتیاتی صنف اور ایک حیاتیاتی صنف کے طور پر آپ کا پورا وجود اس بڑی چھتری ’سیکسوالٹی‘ کے تحت آتا ہے۔

    مجھے لگتا ہے کہ آپ یہ پوچھنا چاہتے ہیں کہ اگر آپ ہم جنس پرستوں کے ساتھ رہتے ہیں تو کیا آپ کی جنسی اورینٹنشن تبدیل ہو جائے گی، اس کا جواب ہے نہیں۔ آپ کا جنسی اورینٹیشن آپ کی مرضی سے جڑا ہوا ہے۔ آپ کے ہم جنس دوستوں کے ماں باپ اسٹریٹ ہیں اور ہمارا معاشرہ عام طور پر مخالف صنف ہے، جو سنیما ہم دیکھتے ہیں، جو کتابیں ہم پڑھتے ہیں وہ سب کے سب اسٹریٹ لوگوں کے درمیان پیارکی کہانیاں ہوتی ہیں، جوکہانیاں اور ہمارا معاشرہ عام طور پر مخالف ہم جنس پرست ہیں، جو اشتہار دکھائے جاتے ہیں، وہ بھی مخالف جنس کو دھیان میں رکھ کر بنائے جاتے ہیں۔

    ہمارے درمیان مخالف جنس کی موجودگی کی بڑے پیمانے پر ہونے کے باوجود کیسے ہمارے دوست ہم جنس پرست بن جاتے ہیں؟ ہمارے آس پاس جتنی بھی باتیں ہیں، وہ سب اس طرح سے ڈیزائن کی گئی ہیں کہ ہم اسٹریٹ ’بنیں‘۔ مجھے امید ہے کہ آپ میری بات سمجھ رہے ہوں گے۔ صرف اس وجہ سے کہ آپ کا دوست آپ کے ساتھ ہمیشہ رہتا ہے، وہ اسٹریٹ نہیں بن جائے گا اور اگر آپ اس کے ساتھ رہتے ہیں تو آپ ہم جنس پرست نہیں بن جائیں گے۔ یہ بس اتنی ہی سادہ سی بات ہے۔

    بہت سارے کیویر لوگوں کو ہر دن بھید بھاو کا سامنا کرنا پڑتا ہے، ان میں سے کئی لوگوں کو لگتا ہے کہ کاش وہ اسٹریٹ ہوتے۔ اور اگر کیویر سے اسٹریٹ بن جانا اتنا ہی آسان ہوتا تو اور وہ بھی اپنے ماحول سے، تو ہمارے آس پاس ہم جنس پرستوں کو ’اسٹریٹ‘ بنانے کے کئی کامیاب بوٹ کیمپ چل رہے ہوتے، لیکن جیسا کہ ہم جانتے ہیں، ایسا نہیں ہے۔ اس لئے آپ اس بات سے خوفزدہ نہ ہوں کہ اگر آپ کے آس پاس سارے لوگ ہم جنس پرست ہیں تو آپ بھی ہم جنس پرست ہوجائیں گے۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: