ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

کشمیر زون پولیس انسپکٹر کا د عویٰ- رواں برس 27 آپریشنز میں 64 جنگجو مارے گئے

وجے کمار نے بتایا کہ 'رواں برس جنوری سے اب تک ہم نے کم از کم 27 آپریشنز لانچ کئے۔ ان آپریشنز میں لگ بھگ 64 جنگجو مارے گئے جن میں تین بڑے کمانڈر جیش محمد کے قاری یاسین، انصار غزوۃ الہند کے برہان کوکا اور حزب المجاہدین کے آپریشنل کمانڈر ریاض نائیکو شامل ہیں۔

  • UNI
  • Last Updated: May 07, 2020 07:19 PM IST
  • Share this:
کشمیر زون پولیس انسپکٹر کا د عویٰ- رواں برس 27 آپریشنز میں 64 جنگجو مارے گئے
آئی جی پی نے کہا- کشمیر میں رواں برس 27 آپریشن میں 64 جنگجو مارے گئے۔ فائل فوٹو

سری نگر: کشمیر زون پولیس کے انسپکٹر جنرل وجے کمار نےکہا کہ وادی کشمیر میں رواں برس 27 جنگجو مخالف آپریشنز میں تین کمانڈروں سمیت 64 جنگجو مارے گئے۔ نیز 25 سرگرم جنگجو اور جنگجوئوں کے 125 اعانت کار بھی گرفتار کئے گئے۔

وجے کمار نے جمعرات کو یہاں ایک پریس کانفرنس کے دوران نامہ نگاروں کو بتایا: 'رواں برس جنوری سے اب تک ہم نے کم از کم 27 آپریشنز لانچ کئے۔ ان آپریشنز میں لگ بھگ 64 جنگجو مارے گئے جن میں تین بڑے کمانڈر جیش محمد کے قاری یاسین، انصار غزوۃ الہند کے برہان کوکا اور حزب المجاہدین کے آپریشنل کمانڈر ریاض نائیکو شامل ہیں۔ اس کے علاوہ ہم نے 25 سرگرم جنگجوئوں کو گرفتار کیا۔ نیز 125 او جی ڈبلیوز بھی گرفتار کئے گئے'۔

آئی جی پولیس نے کہا کہ حزب المجاہدین کے آپریشنل کمانڈر ریاض نائیکو کی ہلاکت کے بعد وادی میں پیدا شدہ صورتحال میں بہتری آنے کے ساتھ ہی مواصلاتی خدمات بحال کی جائیں گی۔ انہوں نے کہا: 'لاء اینڈ آڈر کی صورتحال میں بہتری آئی جی کے کہنے پر نہیں آتی ہے۔ ہم لاء اینڈ آڈر کی صورتحال کو برقرار رکھنے کے لئے کچھ ٹولز کا استعمال کرتے ہیں۔ ہمارا پہلا ٹول کرفیو نافذ کرنا، دوسرا کیمونیکیشن بلاک کرنا اور تیسرا فورسز کی نفری تعینات کرنا ہے۔ یہ ہمارے پاس موجود قانونی ٹولز ہیں'۔ ان کا مزید کہنا تھا: 'کیمونیکیشن بلاک کرنا بہت ضروری تھا۔ اگر بلاک نہیں کرتے تو بہت زیادہ افواہ بازی ہوتی اور سوشل میڈیا پر پرانے ویڈیوز اپ لوڈ کئے جاتے۔ صورتحال پر قابو پانے کے ساتھ ہی مواصلاتی خدمات بحال کی جائیں گی'۔

وجے کمار نے کہا کہ میرا ذاتی تجربہ ہے کہ وادی میں رمضان کے مہینے میں حملوں میں اضافہ دیکھنے کو ملتا ہے۔ ہماری پلاننگ ہےکہ ہم کورونا وائرس لاک ڈائون کے بیچ جنگجو مخالف آپریشنز میں کمی نہیں بلکہ تیزی لائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ جب تک کورونا وائرس کا خطرہ ہے تب تک مقامی جنگجوئوں کی لاشیں ان کے آبائی قبرستانوں میں دفنانے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ آئی جی پی نے ریاض نائیکو کی ہلاکت کو سیکورٹی فورسز کے لئے ایک بہت بڑی کامیابی قرار دیتے ہوئے کہا کہ وادی میں اب جنگجوئوں کی صفوں میں شمولیت کے رجحان میں مزید کمی آئے گی۔

ان کا مزید کہنا تھا: 'ریاض نائیکو آٹھ سال پرانا جنگجو تھا۔ وہ ہر ایک یا دو ماہ میں ایک ویڈیو یا آڈیو ریلیز کرتا تھا جس میں وہ نوجوانوں کو جنگجوئوں کی صفوں میں شمولیت اختیار کرنے کے لئے اکساتا تھا۔ مجھے کہنے میں کوئی ہچکچاہٹ نہیں ہے کہ جنگجوئوں کی صفوں میں ان کی پکڑ مضبوط تھی'۔ وجے کمار نے کہا کہ ریاض نائیکو کے اپنے علاقے میں کافی ہائیڈ آوٹس تھے۔ مرنے سے پہلے ہم چھ سات ہائیڈ آوٹس کا ہم پتہ لگا چکے تھے۔ یہ ساتواں ہائیڈ آوٹ تھا جس میں وہ ملے۔ انہوں نے حزب المجاہدین کی لیڈرشپ کے متعلق ایک سوال کے جواب میں کہا کہ لیڈرشپ بنتی رہتی ہے۔ وہ نیا لیڈر خود بنائیں گے اور ہم اس کے پیچھے پڑیں گے۔ کون نیا لیڈر بنا ہے مجھے پتہ ہے۔

آئی جی پی نے ہندوارہ میں کچھ دن قبل جاں بحق ہونے والے جسمانی طور پر معذور لڑکے کے بارے میں کہا: 'ہندوارہ میں بدقسمتی سے جسمانی طور پر معذور ایک لڑکے کو گولی لگی تھی۔ ہم مہلوک لڑکے کے گھر والوں سے ملے اور ان سے کہا کہ اگر یہاں پر جنازہ اور تدفین ہوئی تو بہت لوگ جمع ہوں گے'۔ ان کا مزید کہنا تھا: 'چونکہ وہ ریڈ زون تھا اور وہاں کورونا وائرس پھیلنے کا خدشہ تھا۔ ان کے فیملی ممبرس مطمئن ہوگئے اور ہم نے ان کے کچھ رشتہ داروں کو ساتھ لیکر لاش کو بارہمولہ میں سپرد خاک کیا'۔
First published: May 07, 2020 06:32 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading