உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سمندر میں چین کا دبدبہ ہوگا ختم، ہندوستان سمیت ان 6 ممالک کی بحریہ متحرک، ڈریگن کی بولتی بند؟

    سمندر میں چائنا کی تاناشاہی ہوگی ختم!

    سمندر میں چائنا کی تاناشاہی ہوگی ختم!

    چین کی اس چال بازی کو لے کر کل ہندوستان کے فوجی سربراہ نے بڑا بیان دیا تھا۔ انہوں نے کہا تھا کہ ہندوستان بات چیت سے ہی LAC تنازعہ کا حل چاہتا ہے لیکن اگر جدوجہد ضروری ہوئی تو ہندوستان ہی کامیاب رہے گا۔ اسی مقصد سے ہندوستان یادگار منصوبہ بندی کررہا ہے۔ ایک رپورٹ کے مطابق ہندوستان سمیت دنیا کے 6 ممالک چین کے خلاف سمندری جنگ کی مشق کررہے ہیں۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ہندوستان اور چین کے درمیان تقریباً 13 گھنٹوں کی فوجی سطح کی بات چیت کے بعد لوگ یہ جاننا چاہتے ہیں کہ LAC پر دونوں ملکوں کے درمیان کشیدگی میں کمی آئے گی یا پھر نئے سال مین سرگرمی مزید بڑھے گی۔ بتادیں کہ کل ہندوستان چین کے درمیان میراتھن میٹنگ مثبت سمت میں ہوئی لیکن بے نتیجہ رہی۔ چین کے اڑیل رویے کی وجہ سے چین گوگرا ہاٹ اسپرنگ سےپیچھے ہٹنے کو تیار نہیں ہوا۔ دولت بیگ اولڈی سیکٹر رسہ کشی بھی ختم نہیں ہوئی لیکن پھر بھی چین اگلی بات چیت جلد کرنے کو تیار ہے۔ کچھ رپورٹس بتارہی ہیں کہ چین LAC پر قلعہ بندی کررہا ہے۔ فوجی چھاونی بنا کر اپنی پوزیشن مضبوط کررہا ہے۔

      چین کی اس چال بازی کو لے کر کل ہندوستان کے فوجی سربراہ نے بڑا بیان دیا تھا۔ انہوں نے کہا تھا کہ ہندوستان بات چیت سے ہی LAC تنازعہ کا حل چاہتا ہے لیکن اگر جدوجہد ضروری ہوئی تو ہندوستان ہی کامیاب رہے گا۔ اسی مقصد سے ہندوستان یادگار منصوبہ بندی کررہا ہے۔ ایک رپورٹ کے مطابق ہندوستان سمیت دنیا کے 6 ممالک چین کے خلاف سمندری جنگ کی مشق کررہے ہیں۔

      6 ملکوں کی نیوی متحرک۔۔۔ ڈریگن کی بولتی بند؟
      بلو بیٹل گراونڈمیں چال باز چین کے خلاف یہ نئی تحریک ہے۔ 2022 میں ڈریگن کو بہت بڑا چیلنج مل رہا ہے۔ 270 گھنٹوں کی جنگی مشق چین پر بہت بھاری پڑنے والی ہے۔ بحر اوقیانوس (Pacific Ocean) میں ہورہے اس جنگی مشق کو سی ڈریگن 22 کا نام دیا گیا ہے۔ اس جنگی مشق میں کواڈ ارکان یعنی ہندوستان، امریکہ، جاپان اور آسٹریلیا شامل ہیں۔ ان کے علاوہ اس وار ایکسرسائز میں کینیڈا اور ساوتھ کوریا کی نیوی بھی شامل ہے۔ سی ڈریگن جنگی مشق میں امریکی بحریہ کے ساتویں بیڑے KP-8I پوسائیڈن جہاز اور سب مرین حصہ لے رہی ہیں۔ ہندوستان کی طرف سے بھی پی-8 آئی پوسائیڈن ایئر کرافٹ کو بھیجا گیا ہے۔ یہ طویل دوری تک سمندرمیں گشت لگانے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

      سمندر میں چین کی تاناشاہی ہوگی ختم
      دراصل، دنیا کے کئی ممالک سمندرمیں چین کی تاناشاہی ختم کرنے کے لئے ساتھ آرہے ہیں۔ یوروپ کے دو طاقتور ملک جرمنی اورفرانس نے بھی ہندوستان کے ساتھ ہاتھ ملایا ہے۔ جرمنی کا لیٹسٹ وار شپ بیئرن 21 جنوری کو ممبئی پہنچنے والا ہے۔ فرانس بھی اس کے بعد اپنا وارشپ ہندوستان بھیجنے والا ہے۔ اتنا ہی نہیں۔ جرمنی اور فرانس نے یہ بھی واضح کردیا تھا کہ بحر ہند کا علاقہ ہو یا ساوتھ چائنا سی، یہاں انٹرنیشنل رولس کے تحت ہی ٹریڈ اور باقی آپریشنس ہوں گے۔ یعنی سمندر میں چین کا یکطرفہ دبدبہ قائم کرنے کی چال کامیاب نہیں ہونے دی جائے گی۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: