ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

احمد آبادمیں کیاجائیگاامریکی صدر،ڈونالڈٹرمپ کاوالہانہ استقبال،پی ایم مودی نےکہا۔سی یوسون

وزیر اعظم نریندر مودی اور صدر ڈونالڈ ٹرمپ ایک لاکھ سے زیادہ لوگوں کی موجودگی میں ایک ساتھ اسٹیج پرشیئر کریں گے۔ روڈ شو اور نمستے ٹرمپ پروگرام کیلئے تمام تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں۔

  • Share this:
احمد آبادمیں کیاجائیگاامریکی صدر،ڈونالڈٹرمپ کاوالہانہ استقبال،پی ایم مودی نےکہا۔سی یوسون
اتوار کے روز امرتسر میں ، ٹرمپ کے ہندوستان کے دورے سے قبل امریکی صدر ڈنالڈ ٹرمپ اور وزیر اعظم نریندر مودی کی تصویروں سے سجے پتنگوں کے ساتھ پتنگ بنانے والی جگموہن کنوجیا د یکھے جاسکتے ہیں۔ (تصویر:پی ٹی آئی)۔

احمد آباد کے موٹیرا میں سردار پٹیل اسٹیڈیم ،نمستے ٹرمپ تقریب کی میزبانی کیلئے تیار ہے۔جو دنیا کا سب سے بڑا کرکٹ اسٹیڈیم ہے۔آج وہاں وزیر اعظم نریندر مودی اور صدر ڈونالڈ ٹرمپ ایک لاکھ سے زیادہ لوگوں کی موجودگی میں ایک ساتھ اسٹیج پرشیئر کریں گے۔ روڈ شو اور نمستے ٹرمپ پروگرام کیلئے تمام تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں۔



وزیراعظم نریندرمودی نے آج کہا ہے کہ ہندوستان ،امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کا استقبال کرنے کیلئے بے صبری سے انتظار کررہا ہے۔پی ایم مودی نے ٹویٹر پر لکھاہے کہ امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے دورے سے ہندوستان اور امریکہ کے تعلقات مزید مستحکم ہونگے۔


اُدھر تاج نگری آگرہ میں بھی امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کا خیر مقدم کرنے کیلئے سبھی تیاریاں کرلی گئی ہیں۔ سڑکوں اور دیواروں کو خوبصورت بنایا گیا ہے اور راستوں پرمختلف طرح کی پینٹنگس بنائی گئی ہیں۔ تاج محل کے سبزازار میں خوبصورت پھلواریلگائی گئی ہے۔امریکی صدرآج احمد آباد میں نمستے ٹرمپ کی عظیم الشان تقریب میں شرکت کے بعد آگرہ پہنچیں گے۔ آگرہ میں صدر ٹرمپ اپنےاہلِ خانہ کے ساتھ غروب آفتاب سے پہلے تقریباً ایک گھنٹہ تاج محل میں گزاریں گے۔

قومی راجدھانی میں امریکی صدر کا استقبال کرنے کیلئےزبردست تیاریاں جاری ہیں۔صدر ٹرمپ کا خیرمقدم کرنے کیلئے دلی میں مختلف اہم مقامات کو پندرہ سو سےبھی زیادہ تلسی اور کثیر رنگ کے ہائی برِڈ ڈائلیہ کے پودوں سے سجایا گیا ہے۔

یادرہے کہ امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کےہندوستان دورے کے پیش نظرکل ہندوستان نے اس بات کو دوہرایا ہے کہ ہند۔ امریکہ کے باہمی تعلقات ایک عالمی حکمت عملی شراکت داری میں تبدیل ہوگئے ہیں۔ وزارت خارجہ نے زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ یہ تعلقات مشترکہ جمہوری قدروں پر مبنی ہیں اور باہمی، علاقائی اور عالمی امور مفاداتکے سلسلے میں دونوں کے مفادات میں یکسانیت بڑھتی جارہی ہے۔
First published: Feb 24, 2020 10:22 AM IST