ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

کورونا وائرس : ملک کی 13 ریاستیں اور 75 اضلاع لاک ڈاون ، صرف ضروری سروسز رہیں گی چالو

لاک ڈاون سے دوا کی دکان ، راشن کی دکان ، ڈیری ، پٹرول پمپ کو الگ رکھا گیا ہے ۔ وہیں بینک ، پوسٹ آفس ، اے ٹی ایم اور میڈیا دفاتر بھی لاک ڈاون سے باہر رہیں گے ۔

  • Share this:
کورونا وائرس : ملک کی 13 ریاستیں اور 75 اضلاع لاک ڈاون ، صرف ضروری سروسز رہیں گی چالو
احمد آباد میں جنتا کرفیو کا ایک منظر ۔ تصویر : رائٹرس ۔

کورونا وائرس کے انفیکشن سے اتوار کو بہار میں پہلی موت سمیت تین لوگوں کی جانیں تلف ہوگئیں ۔ اس وائرس سے ملک میں اب تک سات لوگوں کی موت ہوچکی ہے جبکہ کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد بڑھ کر 360 ہوگئی ہے ۔ حالات کی سنگینی کے پیش نظر انتظامیہ نے بڑا فیصلہ کرتے ہوئے سبھی مسافر ٹرینوں ، بین ریاستی بس سروس اور میٹرو کو 31 مارچ تک کیلئے بند کردیا ہے ۔ وہیں مرکزی حکومت کے ذریعہ اعلان کئے گئے ملک بھر کے 75 اضلاع میں لاک ڈاون کے علاوہ 13 ریاستی حکومتوں نے بھی اپنی ریاستوں میں لاک ڈاون کا اعلان کردیا ہے ۔


ان ریاستوں میں مہاراشٹر ، کیرالہ ، ہریانہ ، اترا کھنڈ ، مغربی بنگال ، آندھرا پردیش ، تلنگانہ ، پنجاب ، دہلی ، ناگالینڈ ، جموں و کشمیر ، جھارکھنڈ اور راجستھان شامل ہیں ۔ علاوہ ازیں اترپردیش میں بھی 15 اضلاع کو لاک ڈاون کردیا گیا ہے ۔ ریاستوں کو لاک ڈاون کرنے کا فیصلہ ملک میں وزیر اعظم مودی کی اپیل پر اتوار کو 14 گھنٹے کے جنتا کرفیو کے بعد آیا ہے ۔


یہ سروسیز رہیں گی جاری


لاک ڈاون کے دوران ضروری سروسز جاری رہیں گی ۔ اس لاک ڈاون سے دوا کی دکان ، راشن کی دکان ، ڈیری ، پٹرول پمپ کو الگ رکھا گیا ہے ۔ وہیں بینک ، پوسٹ آفس ، اے ٹی ایم اور میڈیا دفاتر بھی لاک ڈاون سے باہر رہیں گے ۔ اس لاک ڈاون میں پرائیویٹ دفاتر ، غیر ضروری سامانوں کی دکانیں اور ٹرانسپورٹ خدمات پوری طرح بند رہیں گی ۔ یہ لاک ڈاون سی آر پی سی کی دفعہ 144 کے تحت لاگو رہے گی ۔ دہلی کی سبھی سرحد پیر کی صبح چھ بجے سے سیل کردی جائیں گی ۔ دہلی میٹرو بھی 31 مارچ تک بند رہے گی ۔

سبھی ٹرینیں بھی رد

وہیں ریلوے نے اعلان کیا ہے کہ اس نے سبھی مسافر ٹرینوں کو 22 مارچ کی نصف شب سے 31 مارچ تک منسوخ کردیا ہے اور اس مدت میں صرف مال گاڑی ہی چلے گی ۔ ریلوے کے ترجمان نے بتایا کہ مسافر اس مدت سے 21 جون تک ٹکٹ رد کرانے پر پورے پیسے کی واپسی کا دعوی کرسکتے ہیں ۔
First published: Mar 22, 2020 11:34 PM IST