உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستان کی حرکت کا ہندوستانی فوج نےدیا جواب، ایل اوسی پر دہشت گردوں کے لانچ پیڈکواڑادیا

    جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ کے سری گفوارہ علاقے میں سیکورٹی فورسز اورجنگجوؤں کے درمیان مسلح تصادم میں 'جیش محمد' سے وابستہ 2 جنگجو ہلاک جبکہ ایک خاتون زخمی ہوئی۔ پولیس ترجمان نےکہا کہ سری گفوارہ میں تصادم کے دوران 'جیش محمد' سے وابستہ دو جنگجو ہلاک اور ایک خاتون زخمی ہوئی ہے۔

    جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ کے سری گفوارہ علاقے میں سیکورٹی فورسز اورجنگجوؤں کے درمیان مسلح تصادم میں 'جیش محمد' سے وابستہ 2 جنگجو ہلاک جبکہ ایک خاتون زخمی ہوئی۔ پولیس ترجمان نےکہا کہ سری گفوارہ میں تصادم کے دوران 'جیش محمد' سے وابستہ دو جنگجو ہلاک اور ایک خاتون زخمی ہوئی ہے۔

    ہندوستانی فوج نے لائن آف کنٹرول کے اس طرف بنے دہشت گردوں کے لانچ پیڈ کو نشانہ بنایا۔ ساتھ ہی دہشت گردوں کے گولہ بارود رکھنے کی جگہ پر بھی حملے کئے۔

    • Share this:
      سری نگر: ایک طرف جہاں پوری دنیا کورونا وائرس (Coronavirus) سے جدوجہد کر رہی ہے۔ وہیں پڑوسی ملک پاکستان (Pakistan) اپنی ناپاک حرکتوں سے باز نہیں آرہا ہے۔ وہ لائن آف کنٹرول (ایل اوسی) پر مسلسل جنگ بندی کی خلاف ورزی کررہا ہے۔ پاکستان کی طرف سے جمعہ کو جموں وکشمیر کے کپواڑہ میں ہندوستانی سیکورٹی اہلکاروں پر فائرنگ کی گئی۔

      اس کا منہ توڑ جواب دیتے ہوئے ہندوستانی فوج (Indian Army) نے دہشت گردانہ لانچ پیڈوں اور ان کے ٹھکانوں کو تباہ کردیا۔ آرمی ذرائع کے مطابق، ہندوستانی فوج نےلائن آف کنٹرول کے اس طرف بنے دہشت گردوں کے لانچ پیڈ کو نشانہ بنایا۔ ساتھ ہی دہشت گردوں کے گولہ بارود رکھنے کی جگہ پر بھی کئی حملے کئے۔ اس میں دشمن کو بھاری نقصان پہنچا ہے۔

      گولی باری سے پھیلی دہشت

      کپواڑہ کےکیرن سیکٹر میں جمعہ کی صبح تقریباً 11 بجے سے شروع ہوئی گولی باری سے علاقے کے لوگوں میں دہشت پھیل گئی۔ ایک افسرنے بتایا کہ ہمارے سیکورٹی اہلکاروں نے موثر اور مضبوط دشمنوں کو جواب دیا۔ دہشت گردوں کے لانچ پیڈ اور گولہ بارود رکھنے والی جگہ کو برباد کردیا گیا۔ اس میں پاکستان کی طرف سے زبردست نقصان ہوا ہے۔

      کپواڑہ کے کیرن سیکٹر میں جمعہ کی صبح تقریباً 11 بجے سے شروع ہوئی گولہ باری سے علاقے کے لوگوں میں دہشت کا ماحول ہے۔ علامتی تصویر
      کپواڑہ کے کیرن سیکٹر میں جمعہ کی صبح تقریباً 11 بجے سے شروع ہوئی گولہ باری سے علاقے کے لوگوں میں دہشت کا ماحول ہے۔ علامتی تصویر


      پاکستان مسلسل کررہا ہے جنگ بندی کی خلاف ورزی

      اس سے قبل پاکستان کی طرف سے بدھ کو جموں وکشمیر کے پونچھ ضلع میں ایل او سی پر ایڈوانس چیک پوائنٹ پر گولی باری کی گئی۔ ایک دفاعی ترجمان نے بتایا کہ بدھ کی رات میں پاکستان نے راجوری سیکٹر میں ایل او سی پر بغیر اکساوے کی جنگ بندی کی خلاف ورزی کرتے ہوئے چھوٹے ہتھیاروں سے گولہ باری کی اور مورٹار داغے تھے۔ حالانکہ، ہندوستانی فوج نے بھی اس کا معقول جواب دیا تھا۔

      پاکستانی فوجیوں نے منگل اور پیرکو منکوٹے علاقے اور جمعہ کو سندربنی- نوشیرہ سیکٹر کی ایڈوانس چیک پوسٹ پر گولی باری کی، جس میں 6 سیکورٹی اہلکار زخمی ہوگئے تھے۔ ریاستی وزیر دفاع شریپد نائک نے بدھ کو بتایا کہ اس سال یکم جنوری سے 23 فروری کے درمیان بین الاقوامی سرحد اور ایل اوسی پر 646 بار جنگ بندی کی خلاف ورزی کی گئی ہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: