بچوں کا سہارا لے کر کشمیر میں دہشت گردی پھیلانے کی کوشش میں پاکستان ، چلی یہ نئی چال

پاکستانی فوج اور دہشت گرد تنظیموں نے مل کر پی او کے کے مقامی لوگوں کو مشتعل کرنے کی کوشش کی ۔ انہوں نے بدھ کو ایل او سی پر احتجاج کی اپیل کی ۔

Sep 06, 2019 08:40 PM IST | Updated on: Sep 06, 2019 08:40 PM IST
بچوں کا سہارا لے کر کشمیر میں دہشت گردی پھیلانے کی کوشش میں پاکستان ، چلی یہ نئی چال

بچوں کا سہارا لے کر کشمیر میں دہشت گردی پھیلانے کی کوشش میں پاکستان ، چلی یہ نئی چال

جموں و کشمیر سے آرٹیکل 370 ہٹنے کے بعد بوکھلایا پاکستان اپنی حرکتوں سے باز نہیں آرہا ہے ۔ پاکستان نے مقامی لوگوں کو پھنسا کر نئی چال چلنے کی کوشش کی ہے ۔ حالانکہ ہندوستانی فوج نے بروقت اس کی چال کو ناکام بنادیا ۔

دراصل پاکستانی فوج اور دہشت گرد تنظیموں نے مل کر پی او کے کے مقامی لوگوں کو مشتعل کرنے کی کوشش کی ۔ انہوں نے بدھ کو ایل او سی پر احتجاج کی اپیل کی ۔ وہ سینکڑوں لوگوں اور اسکولی بچوں کو لے کر ایل او سی کے پاس پہنچے ۔ وہ کشمیریوں کو یہ بتانے کی کوشش کررہے تھے کہ وہ ان کے ساتھ ہیں ۔

Loading...

دہشت گرد تنظیموں کے کارندے سمیت جب مظاہرین ہندوستانی فوج کی چوکیوں کے سامنے پہنچے ، تو ہندوستانی فوج نے ان کی اس حرکت کو نظر انداز کردیا ۔ وہ ہندوستان کے خلاف نعرے بازی کررہے تھے ۔ ہندوستانی فوج نے کوئی ہلچل نہیں کی ، جس کے بعد وہ واپس لوٹ گئے ۔ مظاہرین کا مقصد ہندوستانی فوج کی کسی بھی حرکت کو بڑا بناکر ہنگامہ کرنے کا تھا ۔ تاہم فوج نے ان کے منصوبہ کو ناکام بنادیا ۔

Pakistan, loc, violence, india pakistan, international border, line of control, पाकिस्‍तान, एलओसी, अंतरराष्‍ट्रीय सीमा, भारत पाकिस्‍तान

پاکستانی حکومت چاہتی تھی کہ مقامی لوگوں کو ایل او سی کے پاس لایا جائے ، تاکہ ہندوستانی فوج کوئی کارروائی کرے ، جس کی وہ غلط تشہیر کرسکے اور اس معاملہ کو بین الاقوامی سطح پر اٹھا سکے ۔ راجوری ضلع میں واقع لام سیکٹر کے اس پار پی او کے کے کھجریٹا شہر کے پاس چروئی کے لوگ ایل او سی کے پاس پہنچے اور پیڑوں پر چڑھ کر ہندوستانی فوج اور ہندوستان کے خلاف نعرے بازی کرنے لگے ۔

حالانکہ ہندوستانی فوج نے صبر و تحمل سے کام لیا ۔ سبھی حرکتوں پر نظر رکھی ، لیکن کوئی کارروائی نہیں کی ۔ آخر کار لوگوں کو مجبور ہوکر واپس لوٹنا پڑگیا اور پاکستان اپنے منصوبے میں کامیاب نہیں ہوسکا ۔

Loading...