ہوم » نیوز » وطن نامہ

جموں وکشمیر: ایل اوسی پر4 اکتوبرکو پاکستان فوج کرسکتی ہے یہ ناپاک حرکت، ہندوستانی فوج بھی ہے تیار

مودی حکومت کی جانب سے جموں و کشمیر سے آرٹیکل 370 کی منسوخی کے فیصلے سے بوکھلاہٹ شکارپاکستان ناپاک حرکتیں کرتاجارہاہے۔ آج تک پاکستان اپنے ملک میں اور پی او کے میں کشمیر کے نام پرکئی پروگرام کرنے میں مصروف ہے۔

  • Share this:
جموں وکشمیر: ایل اوسی پر4 اکتوبرکو پاکستان فوج کرسکتی ہے یہ ناپاک حرکت، ہندوستانی فوج بھی ہے تیار
فائل فوٹو

مودی حکومت کی جانب سے جموں و کشمیر سے آرٹیکل 370 کی منسوخی کے فیصلے سے بوکھلاہٹ شکارپاکستان ناپاک حرکتیں کرتاجارہاہے۔ آج تک پاکستان اپنے ملک میں اور پی او کے میں کشمیر کے نام پرکئی پروگرام کرنے میں مصروف ہے۔ وہیں اب خبر یہ ہے کہ پاکستانی فوج4 اکتوبرکوآرٹیکل 370 کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے کشمیر کے شہریوں کے ساتھ لائن آف کنٹرول (ایل او سی) پر مارچ کرکے وادی میں بدامنی پھیلانے کی تیاری کررہی ہے۔ ایسی صورتحال میں ہندوستانی فوج کے ذرائع نے بتایا ہے کہ فوج کے جوانوں نے بھی پوری تیاری کرلی ہے۔ ہندوستانی فوج نے اس مارچ کو پاکستانی فوج کے ذریعہ مدد ملنے کی صورت میں اسے ناکام بنانے کی تیاریاں کرلی ہیں۔

 

ہندوستان کی جانب سے جموں و کشمیر سے آرٹیکل 370 کو ہٹانے اور ریاست کو دو مرکزی علاقوں میں تقسیم کرنے کے فیصلے کے بعد سے ہی پاکستان بوکھلاہٹ کے ساتھ ساتھ مایوسی اورشرمندگی کا مظاہرہ کررہاہے۔پاکستان، ہندوستان کے اس فیصلے کو چیلنج کرنے کے لئے متعدد بین الاقوامی اداروں کا دروازہ کھٹکھٹا رہاہے۔ لیکن ہر جگہ سے اسےمایوسی کا سامنا کرناپڑرہاہے۔وزیراعظم عمران خان نے بھی اس مسئلے کو اقوام متحدہ میں اٹھانے کی کوشش کی تھی ، لیکن ہندوستان نے دلائل کے ذریعہ عمران خان کے جھوٹ کے قلعے کو تباہ کردیا۔
علامتی تصویر اسی دوران ، پاکستان اس معاملے میں ثالثی کا رول ادا کرنے کے لیے امریکہ اپیل کررہاہے،لیکن امریکہ نے یہ بھی واضح کردیا کہ ہندوستان، پہلے ہی ثالثی کے عمل سے انکار کرچکا ہے۔ اسی کے ساتھ ہی امریکہ نے پاکستان پر یہ بھی واضح کردیا کہ ہندوستان کے ساتھ تعلقات کو بہتر بنانے کے لیے اسے اپنے ملک میں دہشت گردوں کے خلاف کارروائی کرنا ہوگی۔
First published: Oct 03, 2019 09:14 PM IST