உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ڈیزل سے چلنے والی ٹرینوں کے ٹکٹ پر نہیں لگے گا سرچارج، Railway نے کرایہ بڑھنے کے اندیشوں کو کیا مسترد

    انڈین ریلوے نے ٹرین کے کرایوں میں اضافے کے اندیشوں کو کیا مسترد۔

    انڈین ریلوے نے ٹرین کے کرایوں میں اضافے کے اندیشوں کو کیا مسترد۔

    میڈیا رپورٹس تھیں جن میں بتایا گیا تھا کہ ہندوستانی ریلوے ڈیزل سے چلنے والی ٹرینوں کے ٹکٹوں پر اضافی چارجز لگائے گی۔ اب ریلوے کی جانب سے ان خبروں کی تردید کی گئی ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ہندوستانی ریلوے نے جمعرات کو واضح کیا کہ اس کا ڈیزل ٹریکشن پر چلنے والی ٹرینوں پر اضافی سرچارج لگانے کا کوئی منصوبہ نہیں ہے۔ دراصل، میڈیا رپورٹس تھیں جن میں بتایا گیا تھا کہ ہندوستانی ریلوے ڈیزل سے چلنے والی ٹرینوں کے ٹکٹوں پر اضافی چارجز لگائے گی۔ اب ریلوے کی جانب سے ان خبروں کی تردید کی گئی ہے۔

      خبر رساں ایجنسی اے این آئی کی رپورٹ کے مطابق ریلوے کی وزارت نے اپنے سرکاری بیان میں کہا کہ میڈیا کے ایک حصے سے پوچھا جا رہا ہے کہ کیا ہندوستانی ریلوے ڈیزل ٹریکشن پر چلنے والی ٹرینوں پر سرچارج لگانے جا رہی ہے۔ تمام متعلقہ افراد کو مطلع کیا جاتا ہے کہ ہندوستانی ریلوے کا ایسا کوئی منصوبہ نہیں ہے۔ ایسی قیاس آرائیاں بے بنیاد ہیں۔


      یہ بھی پڑھیں:
      لڑکیوں کی شادی کی عمر بڑھانے کا بل، پارلیمانی کمیٹی کو اب تک مل چکے ہیں 95,000 ای میل

      ساتھ ہی، بتایا جارہا ہے کہ، مسافروں کو ٹکٹ بک کرواتے وقت اپنی منزل کا پورا پتہ بتانے کی ضرورت نہیں رہے گی۔ ریلوے بورڈ نے اس سلسلے میں گائیڈ لائنز جاری کر دی ہیں۔ واضح رہے کہ یہ سسٹم کورونا کے دور میں شروع کیا گیا تھا تاکہ ضرورت پڑنے پر متعلقہ مسافر سے رابطہ کیا جا سکے۔ ریلوے کے مطابق اب اسے واپس لے لیا گیا ہے۔


      یہ بھی پڑھیں:
      کورونا کی رفتار بڑھتے ہی دہلی Govtکا اسکولوں کو لے کر سخت فیصلہ، کیس ملتے ہی ہوں گے بند

      یہی نہیں مسافروں کی سہولت کے لیے ریلوے نے تین جوڑی ایکسپریس ٹرینوں میں ایک عارضی اضافی کوچ لگانے کا فیصلہ کیا ہے۔ ریلوے نے یہ فیصلہ مسافروں کے زبردست رش کو دیکھتے ہوئے کیا ہے۔ لمبی دوری کی ان ٹرینوں میں اضافی بوگیوں کی سہولت مسافروں کو طویل انتظار سے بچائے گی۔ ان ٹرینوں میں 18237/18238 کوربا - امرتسر - بلاس پور ایکسپریس، 14646/14645 جموں توی - جیسلمیر - جموں توی، 14662/14661 جموں توی - باڑمیر - جموں توی ایکسپریس شامل ہیں۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: