ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

میرٹھ: شہر قاضی نے نماز عید الفطر سے متعلق جاری کی ہدایات

میرٹھ شہر قاضی نے بھی اس تعلق سے ہدایات جاری کرتے ہوئے مساجد اور گھر میں نماز ادا کرنے سے متعلق اہم جانکاری لوگوں تک پہنچانےکی کوشش کی ہے۔

  • Share this:
میرٹھ: شہر قاضی نے نماز عید الفطر سے متعلق جاری کی ہدایات
میرٹھ: شہر قاضی نے نماز عید الفطر سے متعلق جاری کی ہدایات

میرٹھ: لاک ڈاؤن کے دوران مذہبی سرگرمیوں پر پابندی اور احتیاط کے سبب عید کی نماز بھی عیدگاہ اور شہر اور دیہات کی مختلف مساجد میں اجتماعیت کے ساتھ  ادا نہیں کی جائے گی۔ تاہم لاک ڈاؤن کی شرائط پر عمل کرتے ہوئے عید کی نماز مساجد نے ادا کئے جانے کے تعلق سے علمائے کرام نے ہدایات جاری کی ہے۔ میرٹھ شہر قاضی نے بھی اس تعلق سے ہدایات جاری کرتے ہوئے مساجد اور گھر میں نماز ادا کرنے سے متعلق اہم جانکاری لوگوں تک پہنچانےکی کوشش کی ہے۔


شہر قاضی میرٹھ کے مطابق نماز عید الفطر پڑھنا واجب ہے، لیکن لاک ڈاؤن کے سبب ان حالات میں جبکہ عیدگاہ میں اجتماعیت کے ساتھ نماز کرنے پر پابندی ہے اور شہر کی مساجد میں بھی اجتماعی طور پر جماعت کا اہتمام نہیں کیا جا سکتا ہے، ایسے میں شہر اور دیہات کی مساجد میں جہاں امام کے علاوہ 4 افراد نماز ادا کر سکتے ہیں۔ وہیں لوگوں کو گھروں میں ہی عید کی نماز ادا کرنی ہوگی۔ شہر قاضی کے مطابق گھر میں بھی 4 افراد اور ایک امام یعنی 5 افراد احتیاط کے ساتھ نماز ادا کر سکتے ہیں، جن میں تین مردوں کا ہونا شرط ہے۔


شہر قاضی میرٹھ کے مطابق نماز عید الفطر پڑھنا واجب ہے، لیکن لاک ڈاؤن کے سبب ان حالات میں جبکہ عیدگاہ میں اجتماعیت کے ساتھ نماز کرنے پر پابندی ہے۔ علامتی تصویر
شہر قاضی میرٹھ کے مطابق نماز عید الفطر پڑھنا واجب ہے، لیکن لاک ڈاؤن کے سبب ان حالات میں جبکہ عیدگاہ میں اجتماعیت کے ساتھ نماز کرنے پر پابندی ہے۔ علامتی تصویر


شہر قاضی کے مطابق جہاں تک خطبے کا سوال ہے تو عید میں دو خطبے ہوتے ہیں ایک خطبہ جو کہ نماز کے بعد ہوتا ہے، گھر اور مساجد میں امام کے ذریعہ دیا جاسکتا ہے، جس میں قرآن کی آیات اور ترجمہ بیان کیا جا سکتا ہے، لیکن اگرخطبہ دینے والا میسّر نہ ہو تو بھی نماز ادا کی جا سکتی ہے۔ شہر قاضی کے مطابق نماز جمعہ کے لئےخطبے کی شرط ہے، لیکن نماز عید الفطر کے لئے خطبہ شرط نہیں ہے۔ شہر قاضی نے ہدایات جاری کرتے ہوئے اپیل کی کہ ایسی مساجد جہاں نماز جمعہ کی ادائیگی ہوتی ہے، وہاں نماز عید الفطرکا اہتمام کیا جانا چاہئے، جہاں امام کے علاوہ 4 افراد موجود ہو اور احتیاطی تدابیر پر عمل کرتے ہوئے نماز ادا کی جائے۔
First published: May 19, 2020 11:10 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading