உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Iran-India Relations: چابہار بندرگاہ پر تعاون جاری رکھیں گے ہندوستان اور ایران، دونوں ممالک نے ظاہر کیا باہمی اتفاق

    Iran-India Relations: چابہار بندرگاہ پر تعاون جاری رکھیں گے ہندوستان اور ایران، دونوں ممالک نے ظاہر کیا باہمی اتفاق ۔ فائل فوٹو ۔

    Iran-India Relations: چابہار بندرگاہ پر تعاون جاری رکھیں گے ہندوستان اور ایران، دونوں ممالک نے ظاہر کیا باہمی اتفاق ۔ فائل فوٹو ۔

    Chabahar Port,India Iran ties: ہندوستان کیلئے چابہار بندرگاہ کئی معنوں میں اہم ہے ۔ چابہار بندرگاہ سے گھرے افغانستان تک سمندر راستہ کے مقصد سے ایک اہم منصوبہ ہے ۔ سمندری راستے سے عالمی بازار تک رسائی بنانے کیلئے یہ کافی کفایتی اور سب سے مستحکم راستہ مانا جاتا ہے ۔

    • Share this:
      نئی دہلی : ایران کے وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان بدھ کو ہندوستان کے دورے پر پہنچے ۔ وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے اپنے ایرانی ہم منصب کے ساتھ بدھ کو افغانستان ، یوکرین اور دیگر علاقائی و عالمی معاملات پر گفتگو کی ۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے کاروبار، صحت، لوگوں کے درمیان رابطے سمیت دوطرفہ تعلقات کا جائزہ لیا ۔ دونوں ممالک نے وسطی ایشیا سمیت اس خطہ کیلئے ٹرانزٹ ہب کے طور پر چابہار بندرگاہ کے فروغ کیلئے آپسی تعاون کو جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کیا ہے ۔ بتایا جارہا ہے کہ اہم بندرگاہ کے آپریشن کو لے کر دونوں ممالک کے نمائندے جلد ہی ملاقات کریں گے ۔

      ہندوستان کیلئے چابہار بندرگاہ کئی معنوں میں اہم ہے ۔ چابہار بندرگاہ سے گھرے افغانستان تک سمندر راستہ کے مقصد سے ایک اہم منصوبہ ہے ۔ سمندری راستے سے عالمی بازار تک رسائی بنانے کیلئے یہ کافی کفایتی اور سب سے مستحکم راستہ مانا جاتا ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : ایل جی انتظامیہ نے Kashmiri مائیگرنٹ پی ایم پیکیج ملازمون کیلئے کیا پرموشن پالیسی کا اعلان


      ایران کے وزیر خارجہ کا عہدہ سنبھالنے کے بعد حسین پہلی مرتبہ ہندوستان کے دورہ پر ہیں ۔ اس دوران انہوں نے بدھ کو ہندوستان کے وزیر خارجہ ایس جے شنکر سے بات چیت کی ۔ اپنے دورہ کے دوران ایران کے وزیر خارجہ نے وزیر اعظم نریندر مودی اور نیشنل سیکورٹی ایڈوائزر اجیت ڈوبھال سے بھی گفتگو کی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: راجیہ سبھا الیکشن میں ووٹ نہیں ڈال سکیں گے نواب ملک اور انل دیشمکھ


      میٹنگ کے بعد وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے ٹویٹ کیا کہ ایران کے وزیر خارجہ کے ساتھ مختلف موضوعات پر گفتگو ہوئی ۔ ہم نے کاروبار، رابطے ، صحت ، لوگوں کے درمیان رابطے سمیت باہمی تعلقات کا جائزہ لیا ۔

      وزیر خارجہ نے کہا کہ افغانستان، یوکرین، جے سی پی او سمیت علاقائی اور عالمی معاملات پر تبادلہ خیال کیا ۔ وزارت خارجہ کے مطابق ایران کے وزیرخارجہ نئی دہلی میں میٹنگوں کے بعد ممبئی اور حیدرآباد کا بھی دورہ کریں گے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: