ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

یوپی میں کووڈ۔19 کمانڈ سینٹر کے ملازم نے مریض کو کہا ’’جاکر مر جاو‘‘! آڈیو وائرل

سنگھ نے کہا کہ ’’ کیا اس قسم کی زبان مریضوں کے ساتھ استعمال کی جاسکتی ہے؟۔ اس وقت ہر فرد خوف میں مبتلا ہوتا ہے۔ برائے مہربانی مریضوں سے ایسی باتیں نہ کریں‘‘۔

  • Share this:
یوپی میں کووڈ۔19 کمانڈ سینٹر کے ملازم نے مریض کو کہا ’’جاکر مر جاو‘‘! آڈیو وائرل
علامتی تصویر

اترپردیش کے انٹیگریٹڈ کووڈ کمانڈ سینٹر (Integrated COVID Command Centre) کے ایک ملازم کی ایک آڈیو کلپ دیکھتے ہی دیکھتے جنگل کی آگ کی طرح پھیل گئی ہے۔مریض سنتوش سنگھ (Santosh Singh) نے بتایا کہ انہوں نے وزیراعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ کو خط لکھ کر ملازم کے برتاؤ کے بارے میں شکایت کی ہے۔


سنتوش سنگھ نے کہا کہ ’’میں نے جمعرات کے روز ہیلپ لائن عملے کی طرف سے غیر شائشتہ زبان کے استعمال سے متعلق یوپی کے وزیراعلیٰ کو ایک خط لکھا ہے۔ عالمی وبا کورونا وائرس (COVID-19) سے متاثر ہونے کے بعد اب تک ہمارے خاندان کے چار افراد قرنطینہ میں چلے گئے ہیں‘‘۔


چیف منسٹر کو لکھے گئے خط میں سنتوش سنگھ نے کہا کہ وہ 12 اپریل کو کورونا وائرس سے متاثر ہونے کے بعد مسلسل قرنطینہ میں وقت گزار رہے ہیں۔ واضح رہے کہ سنتوش سنگھ بی جے پی کے لکھنؤ یونٹ کے سابق چیف منوہر سنگھ کے بیٹے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ’’15 اپریل کو صبح 8.14 بجے کمانڈ سینٹر سے فون آیا۔ ایک خاتون نے پوچھا کہ کیا ہم نے ہوم آسولیشن ایپ (home isolation app) ڈاؤن لوڈکیاہے اور مطلوبہ تفصیلات کو بھر دیا ہے؟


انہوں نے کہا کہ ’’میں نے اس خاتون کو بتایا کہ کسی نے میرے گھر والوں کو ایسا کرنے کے لئے نہیں کہاہے اور یہ کہ کسی ڈاکٹر نے اب تک ان سے رابطہ نہیں کیا۔ اس پر وہ خاتون ناراض ہوگئیں اور مجھ سے کہا کہ جاکر مر جاو۔ اس کے بعد کال منقطع ہوگئی‘‘۔

سنگھ نے کہا کہ ’’ کیا اس قسم کی زبان مریضوں کے ساتھ استعمال کی جاسکتی ہے؟۔ اس وقت ہر فرد خوف میں مبتلا ہوتا ہے۔ برائے مہربانی مریضوں سے ایسی باتیں نہ کریں۔ صحت کے ان کارکنان میں انسانیت باقی نہیں ہے اور نہ ہی کوئی خوف ہے‘‘۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Apr 18, 2021 08:34 AM IST