ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

بنگال اسمبلی الیکشن میں جماعت اسلامی ہند نے بھی لیا اہم فیصلہ

مغربی بنگال میں ہونے والے اسمبلی الیکشن پر ملک بھر کے لوگوں کی نگاہیں ٹکی ہیں۔ الیکشن کے لئے سیاسی جماعتوں کے ساتھ غیر سیاسی تنظیمیں بھی سرگرم ہیں۔ سیکولر جماعتوں کی حمایت میں جماعت اسلامی ہند کی بنگال شاخ نے ریاست کے ہر طبقے میں بیداری مہم چلانے کا فیصلہ کیا ہے۔

  • Share this:
بنگال اسمبلی الیکشن میں جماعت اسلامی ہند نے بھی لیا اہم فیصلہ
بنگال اسمبلی الیکشن میں جماعت اسلامی ہند نے بھی لیا اہم فیصلہ

کولکاتا: مغربی بنگال میں ہونے والے اسمبلی الیکشن پر ملک بھر کے لوگوں کی نگاہیں ٹکی ہیں۔ الیکشن کے لئے سیاسی جماعتوں کے ساتھ غیر سیاسی تنظیمیں بھی سرگرم ہیں۔ سیکولر جماعتوں کی حمایت میں جماعت اسلامی ہند کی بنگال شاخ نے ریاست کے ہر طبقے میں بیداری مہم چلانے کا فیصلہ کیا ہے۔ جماعت اسلامی ہند بنگال شاخ کے امیر جماعت مولانا عبدالرفيق نے ریاست میں بڑھتی سیاسی تناؤ کو افسوسناک بتاتے ہوئے سیکولر جماعتوں کو مضبوط بنانے کے لئے کام کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

بنگال میں امسال اپریل و مئی کے مہینے میں ہونے والے اسمبلی الیکشن کے لئے سیاسی سرگرمیاں تیز ہے۔ ہر پارٹی جیت کی دعویدار ہے۔ لوک سبھا الیکشن میں شاندار کارکردگی کے بعد بی جے پی نے حکومت بنانے کا دعویٰ کیا ہے وہیں ممتا بنرجی تیسری بار اقتدار حاصل کرنے کے لئے پوری طاقت لگا رہی ہیں، جبکہ لفٹ و کانگریس بھی اقتدار ملنے کا دعویٰ کررہی ہیں ان سب سیاسی جماعتوں کے ساتھ کئی سماجی تنظیمیں بھی میدان میں ہیں۔ جماعت اسلامی ہند کی جانب سے ریاست میں لفٹ ،کانگریس و ترنمول کانگریس کو ایک پلیٹ فارم پر لانے کی کوشش کی جارہی ہے وہیں اب جماعت اسلامی نے بی جے پی کے خلاف مورچہ سنبھالتے ہوئے ووٹروں میں بیداری مہم چلانے کا فیصلہ کیا ہے۔ مولانا عبدالرفيق نے مختلف غیر مسلم تنظیموں کے ساتھ کام کرنے کا بھی ارادہ جتاتے ہوئے کہا کہ بنگال الیکشن میں جماعت کا رول اہم ہوگا۔ جماعت مختلف تنظیموں کے رابطے میں ہے اور انکے ساتھ مل کر الیکشن کے لئے کام کرے گی۔اب دیکھنا یہ ہے کہ بنگال اسمبلی الیکشن میں جماعت کی یہ کوشش کتنی اہم ہوگی۔

Published by: Nisar Ahmad
First published: Feb 08, 2021 11:20 PM IST