ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

جانچ میں سنسنی خیز انکشاف ، اس دہشت گرد تنظیم سے "تنخواہ" لیتا تھا معلطل ڈی ایس پی دیویندر سنگھ

حزب المجاہدین کے دہشت گرد نوید مشتاق کے ساتھ دیویندر کو 11 جنوری کو گرفتار کیا گیا تھا ، جس کے بعد اس کو معطل کردیا گیا ۔

  • Share this:
جانچ میں سنسنی خیز انکشاف ، اس دہشت گرد تنظیم سے
جانچ میں سنسنی خیز انکشاف ، اس دہشت گرد تنظیم سے تنخواہ لیتا تھا معلطل ڈی ایس پی دیویندر سنگھ

دہشت گردوں کی مدد کرنے کے ملزم معطل ڈی ایس پی دیویندر سنگھ کے بارے میں نیا انکشاف ہوا ہے ۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق دیویندر سنگھ دہشت گرد تنظیم سے "تنخواہ" لے رہا تھا ۔ 11 جنوری کو دہشت گرد نوید مشتاق کی مدد کیلئے گرفتار دیویندر سنگھ کے اس معاملہ کی جانچ قومی جانچ ایجنسی ( این آئی اے ) کررہی ہے ۔ انگریزی اخبار انڈین ایکسپریس کی ایک رپورٹ کے مطابق دیویندر دہشت گرد تنظیم حزب المجاہدین کو مدد کرنے کیلئے "تنخواہ" لیتا تھا ۔


بتادیں کہ حزب المجاہدین کے ہی دہشت گرد نوید مشتاق کے ساتھ دیویندر کو 11 جنوری کو گرفتار کیا گیا تھا ، جس کے بعد اس کو معطل کردیا گیا ۔ اخبار نے دعوی کیا ہے کہ دیویندر نے نہ صرف نوید کو ٹرانسپورٹ کرنے اور چھپنے کیلئے جگہ دینے کیلئے حزب المجاہدین سے پیسے لئے ۔ بلکہ پورے سال مدد کرنے کیلئے بھی پیسے لیتا تھا ۔ رپورٹ کے مطابق ایک افسر نے بتایا کہ جب دیویندر پکڑا گیا تب وہ نوید کو جموں لے کر جارہا تھا ، جس کے بعد نوید وہاں سے پاکستان جاتا ۔


افسران نے جانکاری دی کہ دیویندر 20-30 لاکھ روپے کیلئے سمجھوتہ کررہا تھا ۔ وہ پہلے بھی نوید کو جموں لے کر گیا تھا ، لیکن اس کو پوری ادائیگی نہیں کی گئی تھی ۔ کئی سال سے نوید کے رابطہ میں رہ چکا دیویندر اس کے پے رول پر کام کرتا تھا ۔


وہیں دیویندر سنگھ کے ساتھ گرفتار دہشت گرد تنظیم حزب المجاہدین کا خود ساختہ کمانڈر نوید بابو نے اپنے تعلقات کی معلومات دینی شروع کردی ہے اور پوچھ گچھ میں اس نے بتایا کہ وہ تحلیل اسمبلی کے آزاد ممبر اسمبلی کے رابطے میں بھی حال ہی میں تھا ۔ افسران نے جمعرات کو یہ جانکاری دی ۔

نوید عرف بابو جس کا پورا نام سید نوید مشتاق احمد ہے ، فی الحال این آئی اے کی حراست میں ہے ۔ این آئی اے اس معاملہ کی جانچ کررہی ہے ، جس میں جموں و کشمیر پولیس کا افسر دیویندر سنگھ شامل ہے اور 11 جنوری کو نوید سمیت دہشت گردوں کووادی سے باہر پہنچانے میں مدد کرنے کیلئے گرفتار کیا گیا تھا ۔ افسران کے مطابق نوید نے دعوی کیا ہے کہ شمالی کشمیر میں دہشت گردوں کا مضبوط ٹھکانہ بنانے کیلئے وہ ممبر اسمبلی سے مسلسل رابطے میں تھا اور چھپنے کے ممکنہ علاقوں کی تلاش کررہا تھا ۔ خیال رہے کہ جموں و کشمیر اسمبلی میں تین آزاد ممبران اسمبلی تھے ۔
First published: Jan 31, 2020 11:00 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading