ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

بغیرٹیسٹ کےقراردیاگیاکویڈمثبت،کشمیرمیں مریض کاالزام،محکمہ صحت نےدی صفائی،جانچ کابھی حکم

نیوز18 اردو نے اس بابت چیف میڈیکل افسر بڈگام ڈاکٹر تجمل سے بات کی تو وہ اس الزام کو غلط بتا رہے ہیں۔ ڈاکٹر تجمل کا کہنا ہے کہ مریض کا سیمپل لیا گیا ہیے اور ٹیسٹ بھی کیا گیا، لیکن ساتھ ہی کہا کہ سیمپل لیتے وقت ضابطوں کی پاسداری نہیں کی گئی ہے،ہیلتھ ٹیکنیشن کو معطل بھی کیاگیاہے اور جانچ کی جارہی ہے۔

  • Share this:
بغیرٹیسٹ کےقراردیاگیاکویڈمثبت،کشمیرمیں مریض کاالزام،محکمہ صحت نےدی صفائی،جانچ کابھی حکم
نیوز18 اردو نے اس بابت چیف میڈیکل افسر بڈگام ڈاکٹر تجمل سے بات کی تو وہ اس الزام کو غلط بتا رہے ہیں۔ ڈاکٹر تجمل کا کہنا ہے کہ مریض کا سیمپل لیا گیا ہیے اور ٹیسٹ بھی کیا گیا، لیکن ساتھ ہی کہا کہ سیمپل لیتے وقت ضابطوں کی پاسداری نہیں کی گئی ہے،ہیلتھ ٹیکنیشن کو معطل بھی کیاگیاہے اور جانچ کی جارہی ہے۔

سری نگر: سنٹرل کشمیر کے بڈگام ضلع میں رہنا والا محمد سلیم (تبدیل شدہ نام) سری نگر میں قائم کووڈ-19 اسپتال میں حیران و پریشاں ہے۔ چاڈورہ علاقہ میں ایک چائے کی دوکان چلانے والا یہ شخص 2 جون کو یہاں لایا گیا۔ محمد سلیم کے مطابق پولیس اور محکمہ صحت کے اہلکار اس کے گھر پہنچے اور اسے بتایا گیا کہ وہ کووڈ پازیٹیو پایا گیا ہے، لہٰذا اسے اسپتال میں داخل کرنا ہوگا۔ اس کے ساتھ اس کی اہلیہ، دو بچوں اور ماں کو بھی کوارنٹائن کیا گیا۔ سلیم کا کہنا ہے کہ اس کا سیمپل کبھی لیا ہی نہیں گیا تو وہ کووڈ مثبت کیسے ہوسکتا ہے؟


نیوز18 اردو نے اس بابت چیف میڈیکل افسر بڈگام ڈاکٹر تجمل سے بات کی تو وہ اس الزام کو غلط بتا رہے ہیں۔ ڈاکٹر تجمل کا کہنا ہے کہ مریض کا سیمپل لیا گیا ہیے اور ٹیسٹ بھی کیا گیا، لیکن ساتھ ہی کہا کہ سیمپل لیتے وقت ضابطوں کی پاسداری نہیں کی گئی ہے، اس کی جانچ کی جارہی ہے۔ ڈاکٹر تجمل کے مطابق جس ہیلتھ ٹیکنیشن نے ٹیسٹ کے لئے مریض کا نمونہ حاصل کیا ہے اس کو معطل کیا گیا ہے اور جانچ کے احکامات جاری کئے گئے ہیں۔ ان کے مطابق انھیں شکایت ملی ہے کہ مذکورہ ٹیکنیشن نے مریض کا سیمپل گھر پرلیا ہے، جو ضوابط کی خلاف ورزی ہے اور اس باپت جانچ کی جارہی ہے۔


ڈاکٹر تجمل کا کہنا ہے کہ مریض کا سیمپل لیا گیا ہے اور ٹیسٹ بھی کیا گیا، لیکن ساتھ ہی کہا کہ سیمپل لیتے وقت ضابطوں کی پاسداری نہیں کی گئی ہے۔
ڈاکٹر تجمل کا کہنا ہے کہ مریض کا سیمپل لیا گیا ہے اور ٹیسٹ بھی کیا گیا، لیکن ساتھ ہی کہا کہ سیمپل لیتے وقت ضابطوں کی پاسداری نہیں کی گئی ہے۔


نیوز18 اردو کو ذرایع سے پتہ چلا کہ جانچ کے لئے گئے نمونہ پر مریض کا فون نمبر نہیں ہے۔ دلچسپ بات یہ ہے کہ جس ٹیکنیشن نے مریض کا سیمپل لیا ہے، وہ اس کا ہمسایہ ہے۔ جب سلیم (مریض) سے پوچھا گیا کہ کیا کوئی دشمنی ہے تو اس نے بتایا کہ اس کے تعلقات ہیلتھ ٹیکنیشن کے ساتھ اچھے ہیں، لیکن وہ اصرار کررہا ہے کہ ٹیکنیشن نے ٹیسٹ کے لیا کبھی اس کا سیمپل لیا ہی نہیں۔



جب اس سے پوچھا گیا کہ اس نے پہلے دن ہی اس پر احتجاج یا اس نے مزاحمت کیوں نہیں کی تو اس کا کہنا تھا کہ وہ کوئی ہنگامہ نہیں کرنا چاہتا تھا، لیکن ساتھ ہی کہا کہ اس نے اسکمز میڈیکل کالج اسپتال پہنچنے کے بعد یہاں کے سی ایم کو ایک درخواست دی کہ اسکو بغیر ٹیسٹ کے کووڈ- 19 مثبت قرار دیا گیا ہے۔ اب سلیم (مریض) دوبارہ ٹیسٹ کروانے کی امید میں ہے۔ اس تنازعہ کے منظر عام ہونےکے بعد اسکمز میڈیکل کالج اسپتال نے انہیں آج کووڈ وارڈ سے نکال کر الگ کمرے میں رکھا ہے۔ سی ایم او بڈگام کاکہنا ہے کہ انھوں نے اس شخص کا دو بارہ ٹیسٹ کرنے کے لئے لیبارٹری کو لکھا ہے۔
First published: Jun 04, 2020 12:20 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading