ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں وکشمیر: دفعہ 370 کی منسوخی کے بعد پی ڈی پی کی پہلی پارٹی میٹنگ، محبوبہ مفتی اب بھی نظر بند

نیشنل کانفرنس کے نائب صدر اور سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے اس میٹنگ کے بارے میں ردعمل ظاہر کرتے ہوئے اپنے ایک ٹویٹ میں کہا: 'یہ دیکھ کر خوشی ہوئی کہ یوتھ پی ڈی پی نے سیاسی میٹنگوں کا آغازکیا۔

  • UNI
  • Last Updated: Sep 16, 2020 04:57 PM IST
  • Share this:
جموں وکشمیر: دفعہ 370 کی منسوخی کے بعد پی ڈی پی کی پہلی پارٹی میٹنگ، محبوبہ مفتی اب بھی نظر بند
جموں وکشمیر: دفعہ 370 کی منسوخی کے بعد پی ڈی پی کی پہلی پارٹی میٹنگ

سری نگر: سال گزشتہ کی پانچ اگست کو جموں و کشمیر کی خصوصی پوزیشن کی تنسیخ کے بعد بدھ کے روز پہلی بار پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی) کی ایک میٹنگ منعقد ہوئی۔ یہ میٹنگ یوتھ پی ڈی پی صدر وحید الرحمان پرہ نے صوبائی انتظامیہ سے باقاعدہ اجازت حاصل کرنے کے بعد طلب کی تھی۔ پارٹی کے ترجمان سہیل بخاری نے یو این آئی کو بتایا: 'ہمیں تین ستمبر کو میٹنگ کرنے کی اجازت نہیں دی گئی جب پارٹی کے سینئر لیڈر غلام نبی ہانجورہ نے پارٹی ہیڈ کوارٹر پر سینئر لیڈروں کی ایک میٹنگ طلب کی تھی'۔

انہوں نے کہا تاہم آج ہمیں میٹنگ کی اجازت دی گئی کیونکہ سرکار کے پاس کوئی چارہ ہی نہیں تھا، جب مرکزی وزیر مملکت برائے امور داخلہ نے منگل کے روز پارلیمنٹ میں کہا کہ کشمیر میں کوئی لیڈر نظر بند نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ تین ستمبر کو ہمارے لیڈروں کو گھروں سے باہر نکلنے تک کی اجازت نہیں دی گئی اور پارٹی ہیڈ کوارٹر کی طرف جانے والے راستوں کو بھی بند کر دیا گیا تھا۔ تاہم بدھ کی میٹنگ میں سینئر لیڈروں نے بھی شرکت کی۔ انہوں نے کہا کہ یہ میٹنگ یوتھ پی ڈی پی صدر وحید الرحمان پرہ نے صوبائی انتظامیہ سے باقاعدہ اجازت حاصل کرنے کے بعد طلب کی تھی۔ پارٹی ترجمان نے بتایا کہ میٹنگ میں مختلف امور بشمول جموں و کشمیر میں موجودہ صورتحال پر گفت و شنید ہوئی۔




 دریں اثنا نیشنل کانفرنس کے نائب صدر اور سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے اس میٹنگ کے بارے میں ردعمل ظاہر کرتے ہوئے اپنے ایک ٹویٹ میں کہا: 'یہ دیکھ کر خوشی ہوئی کہ یوتھ پی ڈی پی نے سیاسی میٹنگوں کا آغازکیا۔

دریں اثنا نیشنل کانفرنس کے نائب صدر اور سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے اس میٹنگ کے بارے میں ردعمل ظاہر کرتے ہوئے اپنے ایک ٹویٹ میں کہا: 'یہ دیکھ کر خوشی ہوئی کہ یوتھ پی ڈی پی نے سیاسی میٹنگوں کا آغازکیا۔

دریں اثنا نیشنل کانفرنس کے نائب صدر اور سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے اس میٹنگ کے بارے میں ردعمل ظاہر کرتے ہوئے اپنے ایک ٹویٹ میں کہا: 'یہ دیکھ کر خوشی ہوئی کہ یوتھ پی ڈی پی نے سیاسی میٹنگوں کا آغازکیا۔ سیاسی سرگرمیاں بلا کسی خلل کے بحال ہونی چاہئے اور انتظامیہ کی ذمہ داری ہے کہ وہ تمام سیاسی پارٹیوں کے لئے یکساں مواقع کی فراہمی کو یقینی بنائے'۔ قابل ذکر ہے کہ انتظامیہ نے پی ڈی پی کی 3 ستمبر کو ہونی والی میٹنگ میں لیڈروں کو شرکت کرنے کی اجازت نہیں دی تھی۔ بعض لیڈروں کو گھروں سے بھی باہر قدم نکالنے کی اجازت نہیں دی گئی تھی۔ دریں اثنا پارٹی صدر محبوبہ مفتی پانچ اگست 2019 سے لگاتار نظربند ہیں۔ حکومت نے گزشتہ ماہ ان کی پبلک سیفٹی ایکٹ کے تحت نظر بندی میں تین ماہ کی توسیع کی۔

Published by: Nisar Ahmad
First published: Sep 16, 2020 04:57 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading