جموں۔کشمیر: آرٹیکل370 کی منسوخی کے بعد وادی میں پہلا انکاؤنٹر، ایس پی او بلال شہید

جموں وکشمیر سے آرٹیکل 370 کی منسوخی کے بعد وادی میں سکیورٹی فورسز اور ملیٹنٹوں کے درمیان انکاؤنٹر ہوا ہے۔

Aug 21, 2019 08:29 AM IST | Updated on: Aug 21, 2019 09:12 AM IST
جموں۔کشمیر: آرٹیکل370 کی منسوخی کے بعد وادی میں پہلا انکاؤنٹر، ایس پی او بلال شہید

علامتی تصویر

جموں وکشمیر سے آرٹیکل 370 کی منسوخی کے بعد وادی میں سکیورٹی فورسز اور ملیٹنٹوں کے درمیان انکاؤنٹر ہوا ہے۔ بارہمولہ میں ہوئے اس تصادم میں ایک پولیس آفیسر شہید ہوگیا۔ جبکہ دوسرا زخمی ہوگیا۔ ایک ملیٹنٹ کو بھی سکیورٹی فورسز نے ہلاک کردیا۔ منگل کی شام سے ہی شروع ہوا یہ انکاؤنٹر اب ختم ہوگیا ہے۔

موقع سے بھاری مقدار میں ہتھیار اور گولہ۔بارود برآمد ہوئے ہیں۔ مارے گئے ملیٹنٹ کی پہچان کی جارہی ہے۔

Loading...

بارہمولہ راجدھانی سری نگر سے تقریبا 54 کلومیٹر کی دوری پر ہے۔ ذرائع کے مطابق اس انکاؤنٹر میں دو سے تین ملیٹنٹ کو سی آرپی ایف اور جموں۔کشمیر پولیس کے اسپیشل آپریشن گروپ نے گھیر رکھا تھا۔ خود کو گھرا ہوا دیکھ کر ملیٹنٹوں نے گولی باری شروع کردی جس میں ایس پی او بلال شہید ہوگئے جبکہ ایس آئی امر دیپ پریہار زخمی ہوگئے۔

فی الحال ان کا علاج آرمی اسپتال میں چل رہا ہے۔ اس ماہ کی 5 تاریخ کو جموں۔کشمیر سے آرٹیکل 370 ہٹا لیا گیا تھا۔ اس کے بعد سے یہاں بندشوں کے درمیان ماحول بیحد پرامن تھا۔

 

Loading...