உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Gauhar Chistri Arrest:بھیس ​​بدل کرپولیس اہلکاروں نےپڑھی نماز!، گوہر چشتی کو پکڑنے کےلیے پولیس کو اورکیاکرناپڑا؟

    Youtube Video

    گوشہ محل کے علاقے میں احسن عرف منور کی چوڑیوں کی دکان ہے۔ گوہر نے پولیس سے بچنے کے لیے یکم جولائی سے منور کا موبائل استعمال کیا تھا۔ اجمیر پولس کی ٹیم میں شامل پانچوں لوگوں نے گوہر کو پکڑنے کے لیے پوری طرح سے مسلمانوں کی طرح کپڑے پہنے۔ کئی بار پولیس ٹیم میں موجود طوب خانہ مسجد میں نماز بھی ادا کیں

    • Share this:
      Gauhar Chistri Arrest: قابل اعتراض بیان دے کر فرار ہونے والے اجمیر درگاہ کے خادم گوہر چشتی کو گرفتار کرلیاگیاہے۔جو حیدرآباد سے فرار ہونے کی کوشش کررہے تھے۔ جب راجستھان پولیس شاہ عنایت گنج پولیس کے ساتھ گوہر چشتی کو پکڑنے گئی تو اس وقت اس نے گھر کی پہلی منزل کی کھڑکی سے چھلانگ لگانے کی کوشش کی۔ لیکن پولیس ٹیم نے اسے چھت پر ہی پکڑ لیا۔ دراصل احسن اللہ عرف منور جو گوہر چشتی کا معاون بتایا گیا ہے۔ حیدرآباد میں رانی bangles کے نام سے چوڑیوں کا کاروبار کرتا ہے۔ گوہر اور احسن اللہ ایک دوسرے کو تقریباً 20سال سے جانتے ہیں۔ ان کا تعارف اس وقت ہوا جب احسن اللہ اجمیر کی درگاہ پر آئے۔ اس کے بعد گوہر خود کئی بار حیدرآباد گئے۔

      جے پور سے حیدرآباد تک بھاگا۔

      گوہر 30 جون کو جے پور سے ہوائی جہاز سے حیدرآباد پہنچے تھے۔ پولیس کی پانچ رکنی ٹیم جو اجمیر سے گئی تھی، اس کے حیدرآباد پہنچنے کی اطلاع مخبر سے ملی۔ وہاں کی آرٹلری مسجد جو کہ تھانہ بیگم بازار کا علاقہ ہے۔ گوشہ محل کے علاقے میں احسن عرف منور کی چوڑیوں کی دکان ہے۔ گوہر نے پولیس سے بچنے کے لیے یکم جولائی سے منور کا موبائل استعمال کیا تھا۔ اجمیر پولس کی ٹیم میں شامل پانچوں لوگوں نے گوہر کو پکڑنے کے لیے پوری طرح سے مسلمانوں کی طرح کپڑے پہنے۔ کئی بار پولیس ٹیم کے اہلکاروں نے  حیدرآباد کی طوب خانہ مسجد میں نماز بھی ادا کیں

      یہ بھی پڑھیں :

      راجستھان پولس نے خفیہ منصوبہ بنایا
      اجمیر پولیس کو شبہ تھا کہ بیگم بازار پولیس حاصل کرنے پر اس میشن کی تفصیلات لیک ہوسکتی ہے ۔ اس لیے راجستھان پولیس نے اس تھانے کے بجائے دوسرے تھانے کی پولیس سے مدد لی ۔ گوہر اور منور نے پولیس ٹیم کو دیکھ کر بھاگنے کی ناکام کوشش کی اور انہوں نے پولیس اہلکاروں پر بھی حملہ کرنے کی بھی کوشش کی۔ اجمیر پولیس کو یہ بھی اطلاع ملی ہے کہ 17 جون اور اس کے آس پاس گوہر کے بینک اکاؤنٹ سے تقریباً 22 لاکھ روپے کی بڑی رقم بھی ای-ٹرانسفر کی گئی ہے۔ پولیس اب گوہر کے بینک اکاؤنٹ کی بھی چھان بین کر رہی ہے۔

      کیا ہے پورا معاملہ؟

      قابل ذکر بات یہ ہے کہ بی جے پی لیڈر نوپور شرما کو پیغمبر اسلام کے بارے میں متنازعہ تبصرہ کرنے پر ملک بھر میں احتجاج کا سامنا ہے۔ ایسے میں اجمیر شریف درگاہ کے خادم سید سرور چشتی نے نوپور شرما کے ریمارکس کی مخالفت کرتے ہوئے خطرناک ایجی ٹیشن کی وارننگ دی تھی۔ اجمیر درگاہ کے ایک اور عالم سلمان چشتی نے مبینہ طور پر نوپور شرما کا سر قلم کرنے پر انعام کا اعلان کیا تھا۔ تاہم سلمان چشتی کو اشتعال انگیز بیانات دینے پر پہلے ہی گرفتار کر لیا گیا تھا۔
      Published by:Mirzaghani Baig
      First published: