جے این کو جنسی استحصال کیس : پروفیسر اتل جوہری کو پٹیالہ ہاوس کورٹ سے ملی ضمانت

جواہر لال نہرو یونیورسٹی کےپروفیسر اتل جوہری کو پٹیالہ ہاوس کورٹ سے 30000 کی بانڈ پر ضمانت مل گئی ہے ۔

Mar 20, 2018 09:07 PM IST | Updated on: Mar 20, 2018 09:07 PM IST
جے این کو جنسی استحصال کیس : پروفیسر اتل جوہری کو پٹیالہ ہاوس کورٹ سے ملی ضمانت

نئی دہلی : جواہر لال نہرو یونیورسٹی کےپروفیسر اتل جوہری کو پٹیالہ ہاوس کورٹ سے 30000 کی بانڈ پر ضمانت مل گئی ہے ۔ جنسی استحصال معاملہ میں اتل جوہری کو دہلی پولیس نے کورٹ میں پیش کیا تھا ۔ دہلی پولیس نے اتل جوہری سے پوچھ تاچھ کے بعد گرفتار کیا گیا تھا ۔ عدالت میں پولیس نے پروفیسر اتل جوہری کی پولیس ریمانڈ نہیں مانگی ۔ پولیس نے کہا کہ جانچ پوری ہوچکی ہے ، لہذا ملزم کو عدالتی حراست میں بھیج دیا جائے ۔

ملزم اتل جوہری نے عدالت میں ضمانت عرضی داخل کی ۔ عدالت میں ملزم پروفیسر جوہری کے وکیل آر کے وادھوا نے دلیل دی کہ اگر پروفیسر جوہری جیل جاتے ہیں تو کوئی بھی پروفیسر کسی بھی طالبہ کو اپنے پاس بلانے سے ڈرے گا۔ ملزم جوہری نے کتنے اچھے اچھے طلبہ دئے ہیں ۔ بحث کے دوران خود ملزم جوہری نے عدالت سے کہا کہ وہ سیاست کے شکار ہوگئے ہیں ۔ آپ کو بتا دیں کہ ملزم کے خلاف دہلی پولیس نے استحصال کے 8 مقدمے درج کئے ہیں۔

قبل ازیں جوہری کو جنسی استحصال کے الزامات میں حراست میں لیا گیا تھا۔ پروفیسر جوہری کے خلاف 16 مارچ کو جنسی استحصال کی شکایت کی گئی تھی۔ سی آر پی سی کی دفعہ 164 کے تحت چار طالبات نے اپنے بیانات پولیس میں درج کرادئے ہیں۔ اس معاملہ میں پروفیسر جوہری کے خلاف کچھ دیگر دفعات کے تحت بھی ایف آئی آر درج کی جاسکتی ہیں۔

Loading...

Loading...