உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Mohali fair: موہالی میلے میں ہر جگہ خوف ہی خوف! جوئرائیڈ ہوا تباہ، 5 بچوں سمیت 10 افراد زخمی

    قصورواروں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔

    قصورواروں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔

    Mohali fair: ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ آف پولیس (ڈی ایس پی) ہرسمرن سنگھ بال نے کہا کہ اس تقریب میں لوگوں کی بڑی تعداد موجود تھی کیونکہ یہ اتوار کا دن تھا۔ ہم یہ جاننے کی کوشش کر رہے ہیں کہ یہ کیسے ہوا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Hyderabad, India
    • Share this:
      Mohali fair: اتوار کی شام موہالی کے فیز-8 میں دسہرہ گراؤنڈ (Dussehra Ground) میں جاری تقریب کے دوران زمین سے 50 میٹر اوپر سے جوئیرائیڈ (ڈراپ ٹاور) گرنے سے پانچ بچوں سمیت کم از کم 10 افراد شدید زخمی ہو گئے ہیں۔ زخمیوں کو فیز 6 کے سول اسپتال اور موہالی کے فورٹس اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔ سول اسپتال میں داخل ہونے والوں میں 23 سال کے راجدیپ سنگھ ، 31 سال ہتیش کمار، 28 سالہ جینت اور 23 سالہ بھاونا بھی شامل ہیں۔

      ان کے علاوہ جیوتی شرما، اس کی بیٹی مانیا شرما، سونم، راجبیر دھابرا، بنی وادھوا، فورٹس اسپتال میں زیر علاج ہیں۔ رپورٹ درج ہونے تک زخمیوں میں سے ایک کی شناخت نہیں ہو سکی۔ ان میں سے بیشتر کو کمر اور چہرے پر چوٹیں آئی ہیں تاہم تمام افراد کی حالت خطرے سے باہر بتائی جاتی ہے۔

      ایک عینی شاہد جسپریت کور نے کہا کہ ہم نے زخمیوں کو اٹھایا اور انھیں ہسپتال لے گئے۔ وہاں کوئی ایمبولینس نہیں تھی اور جشن کے باؤنسرز بھی ہمیں دھمکیاں دینے کی کوشش کر رہے تھے۔ اس واقعہ کے بعد یہاں کے ملازمین بھی موقع سے فرار ہوگئے۔ سب ڈویژنل مجسٹریٹ سربجیت کور اور نائب تحصیلدار ارجن گریوال موقع پر پہنچ گئے۔

      یہ بات قابل ذکر ہے کہ ’لندن برج‘ (London Bridge) کے نام کی تقریب 31 اگست کو ختم ہونی تھی لیکن اس میں 11 ستمبر تک توسیع کر دی گئی۔ آرگنائزر سنی سنگھ نے کہا کہ ہمیں پتہ چل جائے گا کہ یہ کیسے ہوا ہے؟۔ ایسا لگتا ہے کہ کوئی تکنیکی مسئلہ تھا۔ اس سے قبل بھی ہم نے کئی میلوں کا انعقاد کیا لیکن ایسا کبھی نہیں ہوا۔ ہم پولیس اور انتظامیہ کے ساتھ تعاون کریں گے۔

      یہ بھی پڑھیں: 


      ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ آف پولیس (ڈی ایس پی) ہرسمرن سنگھ بال نے کہا کہ اس تقریب میں لوگوں کی بڑی تعداد موجود تھی کیونکہ یہ اتوار کا دن تھا۔ ہم یہ جاننے کی کوشش کر رہے ہیں کہ یہ کیسے ہوا۔ اس کے مطابق مقدمہ درج کیا جائے گا۔ وہیں موہالی کے ڈپٹی کمشنر امیت تلوار نے کہا کہ ہم انکوائری کریں گے اور قصورواروں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: