کملیش تیواری قتل کیس : گجرات اے ٹی ایس کو ملی بڑی کامیابی، 2 اہم ملزمین گرفتار

ڈی آئی جی (اے ٹی ایس) ہمانشو شکلا کا کہنا ہے کہ ان دونوں نے کملیش پر حملہ کیا۔ ملزمان کے نام اشفاق اور معین الدین ہیں۔ انہیں گجرات ، راجستھان سرحد سے گرفتار کیا گیاہے۔

Oct 22, 2019 11:48 PM IST | Updated on: Oct 22, 2019 11:52 PM IST
کملیش تیواری قتل کیس : گجرات اے ٹی ایس کو ملی بڑی کامیابی، 2 اہم ملزمین گرفتار

گجرات اے ٹی ایس کی ٹیم نے منگل کو، ہندو سماج پارٹی کے قومی صدر کملیش تیواری قتل کے معاملے میں گجرات۔ راجستھان سرحد سے مفرور دو ملزموں کو گرفتارکیا۔ بتایاجاتاہے کہ گرفتاردونوں ملزمین نے کملیش کو گولی مارکر ہلاک کیا تھا۔ ڈی آئی جی (اے ٹی ایس) ہمانشو شکلا کا کہنا ہے کہ ان دونوں نے کملیش پر حملہ کیا۔ ملزمان کے نام اشفاق اور معین الدین ہیں۔ انہیں گجرات ، راجستھان سرحد سے گرفتار کیا گیاہے۔اے ٹی ایس کا کہنا ہے کہ یہ دونوں پاکستان فرار ہونے کی کوشش کررہے تھے۔

کملیش تیواری قتل کیس : گجرات اے ٹی ایس کو ملی بڑی کامیابی، 2 اہم ملزمین گرفتار۔(تصویر:نیوز18ہندی)۔ کملیش تیواری قتل کیس : گجرات اے ٹی ایس کو ملی بڑی کامیابی، 2 اہم ملزمین گرفتار۔(تصویر:نیوز18ہندی)۔

Loading...

گجرات۔ راجستھان سرحد کے قریب ہوئی گرفتاری

اے ٹی ایس کے مطابق دونوں ملزمین کی مسلسل خبریں آرہی تھیں۔ لیکن دونوں ملزمین مستقل طورپراپنا مقام تبدیل کررہے تھے۔ کئی بارایسا ہوا کہ پولیس کے پہنچنے سے پہلے ہی ملزم ہوٹل یا گیسٹ ہاوز سے نکل جاتے تھے۔ لیکن مخبروں کے ذریعہ ملزمین کے مقام کی اطلاع مسلسل ملتی رہی۔

 

گجرات اے ٹی ایس کی تحقیقات سے ہوا انکشاف

اے ٹی ایس کے ڈی آئی جی ہمانشو شکلا نے بتایا کہ تفتیش کے دوران معلوم ہوا ہے کہ ناگپور سے گرفتارسید عاصم علی گذشتہ ڈیڑھ سال سے سورت سے گرفتار ملزم راشد ، محسن اور فیضان سے رابطے میں تھا۔ خاص بات یہ ہے کہ اس ڈیڑھ سال کے دوران ، ان ملزمین نے کبھی بھی ایک دوسرے سے بات کرنے کے لئے اپنے فون تک کا استعمال نہیں کیا۔

بتایاجاتاہے کہ گرفتاردونوں ملزمین نے کملیش کو گولی مارکر ہلاک کیا تھا۔(تصویر:نیوز18ہندی)۔ بتایاجاتاہے کہ گرفتاردونوں ملزمین نے کملیش کو گولی مارکر ہلاک کیا تھا۔(تصویر:نیوز18ہندی)۔

یہ لوگ ہمیشہ کسی اورکے فون میں نیا سم لگا کربات کرتے تھے۔ کبھی کبھی وہ سڑک پرچلتے اورکسی کافون مانگتے اوراس میں ایک نیا سم لگاتے اور آپس میں باتیں کرتے۔ جب گفتگو ختم ہوجاتی تووہ سم پھینک دیتے تھے۔ ملزم کے مابین دونئے سم کارڈ کے ذریعہ ہمیشہ بات چیت ہوتی رہی۔ پولیس کو شبہ ہے کہ اس طرح سے ، ملزم گفتگو کے لئے سیکڑوں سم کارڈ استعمال کیا کرتے تھےاور پھر انہیں توڑکرپھینک دیتے تھے۔

اترپردیش پولیس نے رقمی انعام کا بھی کیا تھا اعلان

پیرکی شام یوپی پولیس نے کملیش تیواری قتل کیس میں ملوث دواہم ملزمین شیخ اشفاق حسین اور پٹھان معین الدین احمد عرف فرید کی تصویرجاری کی تھی۔ یوپی پولیس کے ڈی جی پی او پی سنگھ نے بتایا کہ قتل کیس کے دو ملزمین اشفاق اور معین الدین پٹھان کی گرفتاری کے لیے پولیس کو اطلاع دینے والے افراد کو پانچ لاکھ روپئے کا انعام دیاجائیگا۔

کملیش تیواری قتل کیس:ملزموں کو مدد فراہم کرنے کے الزام میں ایک اورمولانا حراست میں۔(تصویر:نیوز18گجراتی)۔ کملیش تیواری قتل کیس:ملزموں کو مدد فراہم کرنے کے الزام میں ایک اورمولانا حراست میں۔(تصویر:نیوز18گجراتی)۔

Loading...