உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Hijab تنازعہ کے درمیان کرناٹک حکومت نے ڈگری-ڈپلومہ کالجوں کی بڑھائی چھٹیاں، اب 16 فروری تک رہیں گے بند

    Hijab Row: کرناٹک میں 16 فروری تک بڑھادی گئی ہیں چھٹیاں۔(AP Photo)

    Hijab Row: کرناٹک میں 16 فروری تک بڑھادی گئی ہیں چھٹیاں۔(AP Photo)

    14 فروری کو کرناٹک میں 10ویں جماعت تک کے اسکولوں کو دوبارہ کھولنے سے پہلے پولیس نے جمعہ کو اوڈپی میں فلیگ مارچ کیا۔ پولیس نے فلیگ مارچ کے ذریعے یہ پیغام دینے کی کوشش کی کہ اسکولوں اور کالجوں میں کسی قسم کی گڑبڑ کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ پولیس کرناٹک کے اسکولوں اور کالجوں کی مسلسل نگرانی کر رہی ہے۔

    • Share this:
      بنگلورو:کرناٹک حکومت (Karnataka Government) نے اعلان کیا کہ پہلی سے دسویں جماعت کے طلباء پیر سے اسکول جائیں گے، کرناٹک میں حجاب (Hijab) کو لے کر پیدا ہونے والے تنازعہ کے ایک دن بعد، جمعہ کو ڈگری اور ڈپلومہ کالج کی چھٹیاں 16 فروری تک بڑھا دی گئیں۔ اس سے قبل جمعرات کو، کالجوں اور ڈگری کالجوں میں 14 فروری سے دسویں جماعت تک کے طلباء کے لیے دوبارہ کلاسیں شروع کرنے کا فیصلہ وزیر اعلیٰ بسواراج بوممئی(CM Basavaraj Bommai) کی صدارت میں ہوئی میٹنگ میں لیا گیا تھا جس میں پرائمری اور سیکنڈری تعلیم، اعلیٰ تعلیم کے محکموں اور اعلیٰ حکام نے شرکت کی تھی۔


      وزیراعلیٰ بسوراج بوممئی نے کہا کہ تین ججوں کی بنچ نے کہا ہے کہ وہ روزانہ کی بنیاد پر اس معاملے کی سماعت کریں گے اور ہر کسی کو امن برقرار رکھنا چاہئے اور حکم آنے تک اسکولوں اور کالجوں میں مذہبی لباس نہیں پہننا چاہئے۔ کرناٹک ہائی کورٹ نے بھی تعلیمی ادارے کھولنے کی ہدایت کر دی ہے۔ بوممئی نے کہا کہ یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ دسویں جماعت تک ہائی اسکول کی کلاسیں پیر سے شروع ہوں گی اور دوسرے مرحلے میں کالج اور ڈگری کالج کھلیں گے۔


      14 فروری کو کرناٹک میں 10ویں جماعت تک کے اسکولوں کو دوبارہ کھولنے سے پہلے پولیس نے جمعہ کو اوڈپی میں فلیگ مارچ کیا۔ پولیس نے فلیگ مارچ کے ذریعے یہ پیغام دینے کی کوشش کی کہ اسکولوں اور کالجوں میں کسی قسم کی گڑبڑ کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ پولیس کرناٹک کے اسکولوں اور کالجوں کی مسلسل نگرانی کر رہی ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: