உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Karnataka: نوٹس کے بعد منگلورو میں حجاب کے بغیر کلاس میں آئیں مسلم طالبات

    Karnataka: نوٹس کے بعد منگلورو میں حجاب کے بغیر کلاس میں آئیں مسلم طالبات

    Karnataka: نوٹس کے بعد منگلورو میں حجاب کے بغیر کلاس میں آئیں مسلم طالبات

    Karnataka Muslim Girl Hijab Row: کالج پرنسپل انسویا رائے نے کہا کہ حجاب کے خلاف حکم کی خلاف ورزی کرنے کیلئے تین طالبات کو وجہ بتاو نوٹس جاری کیا گیا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ دو لڑکیوں نے وضاحت پیش کردی تھی، جبکہ تیسری طالبہ نے ابھی تک نوٹس کا جواب نہیں دیا ہے ۔

    • Share this:
      منگلورو: ڈریس کوڈ کی خلاف ورزی کرنے پر نوٹس ملنے کے بعد منگلورو کے کالج میں ایک مسلم طالبہ حجاب پہنے بغیر کلاس میں شامل ہوئی ۔ کالج پرنسپل انسویا رائے نے کہا کہ حجاب کے خلاف حکم کی خلاف ورزی کرنے کیلئے تین طالبات کو وجہ بتاو نوٹس جاری کیا گیا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ دو لڑکیوں نے وضاحت پیش کردی تھی، جبکہ تیسری طالبہ نے ابھی تک نوٹس کا جواب نہیں دیا ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: جے این یو کی طالبہ آفرین فاطمہ کے والد جاوید کے گھر پر چلا بلڈوزر


      پرنسپل نے بتایا کہ نوٹس کا جواب دینے والی ایک طالبہ ہفتہ کو کلاس میں شامل ہوئی۔ کلاس میں ونایک دامودر ساورکر کی تصویر ٹانگنے والے کچھ طلبہ کو لے کر دس جون کو طلبہ کے دو گروپوں کے درمیان جھڑپ کے بارے میں پوچھے جانے پر رائے نے کہا کہ کالج کے افسران نے واقعہ سے متعلق شکایت درج نہیں کرائی ہے ۔ اس درمیان پولیس نے دونوں طلبہ گروپوں کی شکایت کی بنیاد پر جھڑپ کے معاملہ میں کالج کے چھ طلبہ کے خلاف معاملہ درج کیا ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: Gujarat: بورسد شہر میں تشدد، چار پولیس اہلکار زخمی، کثیر تعداد میں سیکورٹی اہلکار تعینات


      بتادیں کہ کرناٹک ہائی کورٹ نے 15 جون کو مسلم طالبات کے ایک گروپ کے ذریعہ دائر ان عرضیوں کو خارج کردیا تھا، جن میں کلاس روم کے اندر حجاب پہننے کی اجازت مانگی گئی تھی ۔ عدالت کی تین ججوں کی بینچ نے کہا تھا کہ اسکول کی ڈریس مقرر کئے جانے پر طلبہ اعتراض نہیں کرسکتے ۔

      دوسری جانب کرناٹک کے اڈوپی میں واقع گورنمنٹ وومینس پری یونیورسٹی کالج میں داخلہ کی خواہش مند مسلم طلبہ کی تعداد میں اس سال اضافہ ہوا ہے ۔ اسی کالج سے سب سے پہلے حجاب تنازع شروع ہوا تھا ۔ یہ جانکاری اڈوپی کے ممبر اسمبلی رگھوپتی بھٹ نے دی جو کالج ڈیولپمنٹ کمیٹی کے صدر بھی ہیں ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: