உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ماں کی موت کے بعد رحم مادر میں چل رہی تھی بیٹی کی دھڑکن، ڈاکٹروں کی جدوجہد سے ملی زندگی

    ماں کی موت کے بعد رحم مادر میں چل رہی تھی بیٹی کی دھڑکن، ڈاکٹروں کی جدوجہد سے ملی زندگی

    ماں کی موت کے بعد رحم مادر میں چل رہی تھی بیٹی کی دھڑکن، ڈاکٹروں کی جدوجہد سے ملی زندگی

    Karnataka Hospital News: ضلع کے رونا تالک کے مشیگیری گاوں کی رہنے والی حاملہ انا پورنا کو گھر میں اچانک مرگی کے دو دورے آئے، جس کے بعد اہل خانہ گھبرا گئے۔ خاتون کو فوراً اسپتال لے جایا گیا، جہاں ابتدائی علاج کے بعد خاتون کو ضلع اسپتال ریفر کردیا گیا، لیکن بدقسمتی سے راستے میں ہی خاتون کا بلڈ پریشر گرنے لگا اور اس کی موت ہوگئی۔

    • Share this:

      بنگلورو: کرناٹک کے گاڈگ ضلع میں ڈاکٹروں اور اسپتال اسٹاف نے رحم مادر میں پل رہی ایک ننہی بچی کو زندگی عطا کی ہے۔ یہاں ضلع اسپتال کے ڈاکٹروں کی ٹیم نے حاملہ ماں کی موت ہونے کے بعد اس کے حمل سے بیٹی کو محفوظ نکال لیا۔


      ضلع کے رونا تالک کے مشیگیری گاوں کی رہنے والی حاملہ انا پورنا کو گھر میں اچانک مِرگی کے دو دورے آئے، جس کے بعد اہل خانہ گھبرا گئے۔ خاتون کو فوراً اسپتال لے جایا گیا، جہاں ابتدائی علاج کے بعد خاتون کو ضلع اسپتال ریفرکردیا گیا، لیکن بدقسمتی سے راستے میں ہی خاتون کا بلڈ پریشر کم ہونے لگا اور اس کی موت ہوگئی۔


      ڈاکٹروں کی سوجھ بوجھ کام آئی


      حالانکہ اسپتال پہنچنے پرجب ڈاکٹروں کی ٹیم نے جانچ کی، تو پایا کہ رحم مادر میں پل رہے بچے کی دھڑکن چل رہی ہے۔ اس کے بعد ضلع اسپتال کے ڈاکٹروں کی ٹیم، جس میں ڈاکٹر ونود، ڈاکٹر جیا راج، ڈاکٹرکیرتھن اور ڈاکٹر اسمرتی شامل تھے... نے فوراً مستعدی دکھاتے ہوئے اہل خانہ سے اجازت لے کر صرف 15 منٹ میں آپریشن کے ذریعہ بچی کو زندہ باہرنکال لیا۔


      یہ بھی پڑھیں۔


      پاکستان کے عالمی کپ سے باہر ہوتے ہی حسن علی کا باراتی ڈانس وائرل


      اس بارے میں ڈاکٹر باسن گوڑا کارگی گوڑا اسپتال کے ایڈمنسٹریٹو افسر نے کہا، ’یہ بہت ہی نایاب حصولیابی ہے۔ ڈاکٹروں کی ٹیم نے تیزی سے کام کیا، جب انہیں یہ پتہ لگا کہ رحم مادر میں پل رہے بچے کی دل کی دھڑکن چل رہی ہے، تو انہوں نے مہلوک خاتون کے رحم مادر سے آپریشن کے ذریعہ بچے کو باہر نکالنے کا خطرہ بھرا فیصلہ لیا۔ اہل خانہ نے ڈاکٹروں کی بات کو سمجھنے کے بعد اس کی اجازت دے دی‘۔


      یہ بھی پڑھیں۔


      کٹرینہ کیف-وکی کوشل کی شادی میں شامل ہوں گے یہ مہمان، تیار ہوگئی مہمانوں کی فہرست


      ’بیوی نہیں رہی، لیکن بیٹی کو دیں گے بہتر زندگی‘


      اس حادثہ کے بعد مہلوک خاتون انا پورنا کے شوہر انتہائی مایوس بھی تھے اور راحت بھی محسوس کر رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ میں خدا سے دعا کرتا ہوں کہ ایسے حالات کا سامنا کسی اور کو نہ کرنا پڑے۔ روتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ایک سال پہلے ہی ہماری شادی ہوئی تھی اور ہم نے زندگی کے اس نئے سفرکی ابھی ہی شروعات کی تھی۔ اب وہ مجھے ایسے چھوڑ کر چلی گئی۔ مجھے امید ہے کہ ہماری بیٹی کی زندگی بہت بہتر ہوگی۔

      Published by:Nisar Ahmad
      First published: