ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

کرناٹک میں اقلیتی کارپوریشن کا بڑا فیصلہ، 23 ہزار خواتین میں 23 کروڑ روپئے بطور قرض تقسیم کرنے کا اعلان

بنگلورو میں KMDC کے دفتر میں منعقدہ تقریب میں کرناٹک اقلیتی کمیشن کے چیرمین عبدالعظیم کے ہاتھوں اس نئی اسکیم کا افتتاح عمل میں آیا۔ کرناٹک اقلیتی ترقیاتی کارپوریشن کے صدر مختار حسین پٹھان نے کہا کہ آج سے یعنی 11 نومبر 2020 سے اس اسکیم کیلئے آن لائن درخواستیں دی جا سکتی ہیں۔

  • Share this:
کرناٹک میں اقلیتی کارپوریشن کا بڑا فیصلہ، 23 ہزار خواتین میں 23 کروڑ روپئے بطور قرض تقسیم کرنے کا اعلان
کرناٹک میں اقلیتی کارپوریشن کا بڑا فیصلہ، 23 ہزار خواتین میں 23 کروڑ روپئے بطور قرض تقسیم کرنے کا اعلان

بنگلورو: کرناٹک اقلیتی ترقیاتی کارپوریشن (KMDC) نے اپنی روایتی اسکیموں کے ساتھ کورونا وبا کے لاک ڈاؤن سے متاثرہ اقلیتی طبقہ کی خواتین کیلئے مائکرو لون کی اسکیم کا اعلان کیا ہے۔ بنگلورو میں KMDC  کے دفتر میں منعقدہ تقریب  میں کرناٹک اقلیتی کمیشن کے چیرمین عبدالعظیم کے ہاتھوں اس نئی اسکیم کا افتتاح عمل میں آیا۔ کرناٹک اقلیتی ترقیاتی کارپوریشن کے صدر مختار حسین پٹھان نے کہا کہ آج سے یعنی 11 نومبر 2020 سے اس اسکیم کیلئے آن لائن درخواستیں دی جا سکتی ہیں۔ درخواست فارم جمع کرنے کیلئے ایک ماہ کی مدت مقرر کی گئی ہے۔ اس کیلئے خصوصی ویب سائٹ بنایا گیا ہے، جس کا نام ہے، kmdcmicro.karnataka.gov.in

مختار حسین پٹھان نے کہا کہ اس نئی اسکیم کے تحت 23 ہزار خواتین میں 23 کروڑ روپئے بطور قرض تقسیم کرنے کا منصوبہ بنایا گیا ہے۔ 23 ہزار سے زیادہ درخواستیں آنے کی صورت میں آن لائن قرعہ اندازی عمل میں آئے گی۔ انہوں نے کہ مائکرو لون اسکیم میں منتخب ہونے والی ہر خاتون کو راست طور پر انکے بینک کھاتے میں دس ہزار روپئے قرض کی رقم جمع ہوگی۔ 10 ہزار روپئے میں 2 ہزار روپئے سبسیڈی یعنی چھوٹ ہوگی۔ باقی 8 ہزار روپئے تین فیصد شرح سود کے ساتھ ایک سال سے تین سال کی معیاد میں ادا کرنے ہونگے۔مختار حسین پٹھان نے کہا کہ 25 سے 50 سالہ عمر کی خواتین جو بی پی ایل کارڈ رکھتی ہوں اس اسکیم کیلئے درخواست دے سکتی ہیں۔ بازاروں میں اور فٹ پاتھ پر ترکاری، پھل اور پھول، اگر بتی، اسطرح کا چھوٹا موٹا کاروبار کرنے والی خواتین یا پھر گھر بیٹھے کوئی چھوٹی تجارت شروع کرنے کا ارادہ رکھنے والی اقلیتی طبقے کی خواتین اس اسکیم کیلئے درخواست دے سکتی ہیں۔


بنگلورو میں KMDC کے دفتر میں منعقدہ تقریب میں کرناٹک اقلیتی کمیشن کے چیرمین عبدالعظیم کے ہاتھوں اس نئی اسکیم کا افتتاح عمل میں آیا۔
بنگلورو میں KMDC کے دفتر میں منعقدہ تقریب میں کرناٹک اقلیتی کمیشن کے چیرمین عبدالعظیم کے ہاتھوں اس نئی اسکیم کا افتتاح عمل میں آیا۔


کرناٹک اقلیتی کمیشن کے چیرمین عبدالعظیم نے کہا کہ انکی حکومت اقلیتوں کی فلاح و بہبودی کیلئے کوشاں ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس مرتبہ سیلاب اور کورونا وبا کی وجہ سے دیگر سرکاری محکموں کے ساتھ اقلیتی محکمے کے بجٹ میں کٹوتی کی گئی ہے۔ اس کے باوجود اقلیتی محکمہ کیلئے مزید فنڈز حاصل کرنے کی کوشش کی جارہی ہیں۔عبدالعظیم نے کہا کہ محکمی اقلیتی بہبود کی تمام اسکیموں کے نفاذ میں شفافیت لانے کیلئے اقدامات کئے گئے ہیں۔ انہوں نے کہا اقلیتی ترقیاتی کارپوریشن میں ایجنٹوں کافی عمل دخل تھا۔ اس پر قابو پانے کیلئے سخت قدم اٹھائے گئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اقلیتی کارپوریشن کے دفتر میں اگر کوئی دلال پایا جائے تو اسے پولیس کے حوالے کرنے کا بھی فیصلہ لیا گیا ہے۔کرناٹک اقلیتی ترقیاتی کارپوریشن کے چیرمین مختار حسین پٹھان نے کہا کہ سال 2020-21 کیلئے 12 اسکیمیں نافذ کی گئی ہیں۔ تعلیمی قرضہ جات کی اسکیم، کھیتوں میں بور ویلز کیلئے گنگا کلیان یوجنا، شرم شکتی یوجنا، گھروں کی تعمیر کیلئے مارجن منی لون اسکیم، مویشی پالن کی اسکیم، ٹیکسی اور گوڈس وہیکل کی خریدی کیلئے مالی مدد کی اسکیم، اقلیتی کسان فلاح و بہبود اسکیم اسطرح 12 اسکیمیں جاری ہیں۔ مختار حسین پٹھان نے کہا کہ اس کے علاوہ مرکزی حکومت کے ادارے این ایم ڈی ایس ایف کی اسکیمیں بھی اقلیتی طبقے کیلئے موجود ہیں۔ اقلیتی ترقیاتی کارپوریشن کے چیرمین نے اقلیتوں سے اپیل کی ہے کہ وہ سرکاری اسکیموں سے فائدہ اٹھائیں۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Nov 11, 2020 11:56 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading