آ ئی این ایکس میڈیا کیس : کارتی چدمبرم کو ایک دن کی سی بی آئی حراست میں بھیجا گیا

راجدھانی ایک کی ذیلی عدالت نے آئی این ایکس میڈیا سے وابستہ کالے دھن کو قانونی بنانے کے کیس میں سابق مرکزی وزیر پی چدمبرم کے بیٹے کارتی چدمبر کو ایک دن کے لئے مرکزی تفتیشی بیورو (سی بی آئی) کی حراست میں آج بھیج دیا۔

Feb 28, 2018 08:58 PM IST | Updated on: Feb 28, 2018 08:58 PM IST
آ ئی این ایکس میڈیا کیس : کارتی چدمبرم کو ایک دن کی سی بی آئی حراست میں بھیجا گیا

سابق مرکزی وزیر پی چدمبرم کے بیٹے كارتي چدمبرم : فائل فوٹو۔

نئی دہلی : راجدھانی ایک کی ذیلی عدالت نے آئی این ایکس میڈیا سے وابستہ کالے دھن کو قانونی بنانے کے کیس میں سابق مرکزی وزیر پی چدمبرم کے بیٹے کارتی چدمبر کو ایک دن کے لئے مرکزی تفتیشی بیورو (سی بی آئی) کی حراست میں آج بھیج دیا۔ خصوصی جج سمیت آنند نے دونوں فریقوں کی طویل جرح سننے کے بعد کارتی کو ایک دن کے لئے سی بی آئی کی حراست میں بھیجنے کا حکم دیا۔ سی بی آئی کے وکیل نے جہاں عدالت کو دلیل دی کہ کارتی جانچ میں تعاون نہیں کرہے ہیں وہیں جونےئر چدمبر م کی طرف سے پیش سینئر وکیل منو سنگھوی نے اسے سیاست پر مبنی معاملہ قرار دیا۔

سی بی آئی نے کارتی کو لندن سے چنئی ہوائی اڈے پر صبح اترتے ہی حراست میں لے لیا تھا۔ کچھ دیر ہوائی اڈے پر ہی پوچھ گچھ کئے جانے کے بعد کارتی کو گرفتار کرلیا گیا تھا۔ سی بی آئی کارتی کو چنئی سے دہلی ہیڈکوارٹر لیکر آئی اور شام کو اس نے انہیں پٹیالہ ہاوس عدالت میں خصوصی جج کے سامنے پیش کیا۔ سی بی آئی نے کارتی کے لئے پندرہ دنوں کی پولیس حراست مانگی تھی لیکن اسے فی الحال صرف ایک دن کی مہلت ہی مل سکی۔

عدالت میں سماعت ہونے سے پہلے مسٹر سنگھوی نے کارتی سے تنہائی میں بات چیت کی مہلت مانگی جسے جج نے قبول کرلیا۔ مسٹر سنگھوی کو کارتی سے تنہائی میں بات چیت کے لئے محض دس منٹ کا وقت ملا۔ اس کے بعد سماعت شروع ہوئی۔ گزشتہ برس پندر ہ مئی کو سی بی آئی نے کارتی کے خلاف مجرمانہ سازش رچنے، فریب دہی، بدعنوان اور غیرقانونی کام کے لئے رقم لینے ، سرکاری ملازمین کو فیصلے تبدیل کرنے کے لئے متاثر کرنے اور دیگر مجرمانہ معاملات درج کئے تھے۔ کارتی چدمبرم پر الزام ہے کہ انہوں نے مبینہ طورپر ممبئی کے آئی این ایکس میڈیا (اب 9ایکس میڈیا) کے فورن انویسٹمنٹ پروموشن بورڈ (ایف آئی پی بی) سے ہری جھنڈی دلانے کے نام پر 3.5کروڑ روپے لئے تھے۔ اس وقت کارتی کے والد مسٹر چدمبرم مرکزی وزیر تھے۔ آئی این ایکس میڈیا کو تب اندرانی مکھرجی اور پیٹرمکھرجی چلا رہے تھے۔ یہ دونوں شینا بورا قتل معاملہ میں بھی ملزم ہیں۔

خیال رہے کہ دو دن قبل ہی دہلی کی ایک عدالت نے کارتی کے چارٹرڈ اکاونٹنٹ (سی اے) ایس بھاسکر رمن کو 14دن کی عدالتی حراست میں بھیج دیا تھا۔ بھاسکر رمن کو بھی آئی این ایکس میڈیا سے وابستہ کالے دھن کو قانونی بنانے کے معاملہ میں گرفتار کیا گیا تھا۔ اس درمیان ایسی خبر ہے کہ اندرانی مکھرجی نے سی بی آئی کو پوچھ گچھ کے دوران بتایا کہ کارتی نے ایف آئی پی بی کی منظوری کے لئے تقریباََ ساڑھے چھ کروڑ روپے کی مانگ کی تھی۔ سمجھا جاتا ہے کہ سی بی آئی نے اسی بیان کو بنیاد بناکر کارتی کو گرفتار کیا ہے۔

Loading...

Loading...