ہوم » نیوز » وطن نامہ

جموں وکشمیر: روف احمد ڈارنے پیش کی رمضان میں کشمیریت اورانسانیت کی مثال، ندی میں ڈوب رہے پانچ لوگوں کی بچائی زندگی

بہادرسیاح گا ئڈ کی لاش بھوانی پل کے سامنے ہفتہ کی صبح برآمد کی گئی اورکارروائیوں کو مکمل کرنے کے بعد اس کے رشتہ داروں کو سونپ دی گئی۔

  • Share this:
جموں وکشمیر: روف احمد ڈارنے پیش کی رمضان میں کشمیریت اورانسانیت کی مثال، ندی میں ڈوب رہے پانچ لوگوں کی بچائی زندگی
پانچ سیاحوں کی جان بچا کراپنی زندگی قربان کرنے والے روف احمد ڈار: فائل فوٹو

کشمیریت کی مثال پیش کرتے ہوئے ایک سیاح گائڈ نے جموں وکشمیرکے اننت ناگ ضلع کے مشہورپہلگام ریزارٹ میں لدرندی سے مغربی بنگال کے دوسیاحوں سمیت پانچ لوگوں کو بچانےکےلئے جان دے دی۔ سیاحوں کی  کشتی (نوکا) لدرندی میں اچانک تیزہواوں کے جھونکے میں پھنسنےکے بعد ماورا کے نزدیک پلٹ گئی۔ رجسٹرڈ پیشہ وررافٹر روف احمد ڈارنے اپنی جان کی پرواہ نہ کرتے ہوئے ندی میں چھلانگ لگا دی۔


سری نگرسے 96 کلو میٹردورپہلگام میں جمعہ کی شام کوجب یہ حادثہ ہوا، اس وقت کشتی  میں تین مقامی لوگ اورمغربی بنگال کا ایک جوڑا سوار تھا۔ ناظرین کے حوالے سےافسران نے بتایا کہ سیاح گائڈ کےطورپرجوڑے کے ساتھ موجود روف ڈارنے دیکھا کہ وہ لوگ ندی میں ڈوب رہے ہیں، تواس نے بغیروقت ضائع کئے ندی میں چھلانگ لگا دی اورانہیں بچا لیا۔


ناظرین نےبتایا کہ اس کے بعد فوراً تلاشی اوربچاو مہم شروع کی گئی اوراسٹیٹ ڈیزاسٹر   فورسیزکی ٹیموں نے پولیس اورمقامی لوگوں کے ساتھ مل کرتلاشی مہم چلائی۔ جمعہ کی دیر رات تک تلاش جاری رہی، لیکن اندھیرے کےسبب مہم روکنی پڑی۔ انہوں نےبتایا کہ بہادر سیاح گائڈ کی لاش بھوانی پل کےقریب ہفتہ کی صبح برآمد کی گئی اورکارروائیوں کےبعد اس کےرشتہ داروں کو سونپ دی گئی۔


اننت نات کےڈپٹی کمشنرخالد جہانگیرنےکہا 'یہ روف ڈارکےذریعہ پیش کی گئی کشمیریت کی اصلی مثال ہے، جو ہمیں پیار، بھائی چارہ اوردیکھ بھال سکھاتی ہے۔ ڈارنے کشمیری مہمان نوازی کی سچی مثال پیش کرتے ہوئے دوگھریلو سیاح سمیت پانچ لوگوں کا میابی کے ساتھ بچا لیا'۔ چیف سکریٹری بی وی آرسبرامنیم کے احکامات پر32 سالہ روف ڈارکے اہل خانہ کوچارلاکھ روپئے کی مالی مدد دی گئی ہے۔ ڈارکے اہل خانہ میں والدین، بھائی اوربیوی ہیں۔ ایک سینئرپولیس افسرنےبتایا کہ کولکاتا کےنندن نگرکےسیاح منیش کمارصراف اور شویتا صراف کو سری نگرلے جایا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ انہیں روف ڈارکی وجہ سے دوسری زندگی ملی ہے۔

ریاست کے افسران اورلیڈران نے ظاہرکیا افسوس

ریاست کےسیاحتی انچارج اورگورنرستیہ پال ملک کے مشیرخورشید غنائی نے روف ڈارکی موت پرافسوس ظاہرکیا۔ انہوں نے کہا 'اپنی جان کی پرواہ کئے بغیرروف ڈارنے لدرندی کی تیزلہروں میں پانچ لوگوں کوڈوبنے سے بچالیا۔ یہ کسی شخص کی سب سے بڑی قربانی ہے'۔ سابق وزیراعلیٰ عمرعبداللہ نے بھی افسوس کا اظہارکیا۔ انہوں نے کہا کہ اس بہادرشخص روف ڈارکو میرا سلام۔ انہوں نے پلٹی ہوئی کشتی سے سیاحوں کو بچایا، لیکن اپنی جان گنوا دی۔ اللہ انہیں جنت میں اعلیٰ مقام دے'۔ کانگریس کے ریاستی صدر جی اے میرنے ڈارکو سچی کشمیریت کی علامت قراردیا۔
First published: Jun 02, 2019 04:55 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading