اپنا ضلع منتخب کریں۔

    کیرلا میں کالا جادو: دولت کے لیے انسانی قربانی دینے والی لیلیٰ کی ضمانت خارج، ظاہر کیا یہ اندیشہ

    کیرلا میں کالا جادو: دولت کے لیے انسانی قربانی دینے والی لیلیٰ کی ضمانت خارج، ظاہر کیا یہ اندیشہ

    کیرلا میں کالا جادو: دولت کے لیے انسانی قربانی دینے والی لیلیٰ کی ضمانت خارج، ظاہر کیا یہ اندیشہ

    پدما اور روسلین نامی دو خواتین کی نعشوں کو منگل کو بھگول سنگھ اور لیلیٰ کے گھر کے پاس گڈھوں سے نکالا گیا۔ پولیس کے مطابق، ملزم نے متاثرین کو پیسے کا جھانسہ دے کر لالچ دیا تھا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Kerala, India
    • Share this:
      ایرناکولم کی ضلع عدالت نے انسانی قربانی (انسانی بَلی) معاملے میں تیسری ملزم لیلیٰ کی ضمانت کی درخواست مسترد کردی ہے۔ جسٹس شیبو تھامس نے اس نتیجے پر درخواست مسترد کردی کہ جرم انتہائی سنگین ہے۔ عدالت نے کہا، ایسے جرائم کے لیے قانون کے تحت زیادہ سے زیادہ سزا کا پروویژن ہے۔

      پہلی نظر میں اس میں ملوث ثابت ہونے کے لیے مناسب ثبوت ہیں۔ وکیل کی دلیل قبول نہیں کی جاسکتی ہے کہ جرم میں درخواست گزار کے ملوث ہونے کو ثابت کرنے کے لیے کوئی مواد نہیں ہے۔ لگ بھگ سبھی اہم گواہ درخواست گزار کے پڑوسی ہیں۔

      اس لیے، استغاثہ فریق کا اندیشہ ہے کہ درخواست گزار کو ضمانت پر رہا کیے جانے پر وہ گواہوں کو متاثر کرنے یا ڈرانے کی کوشش کرے گی۔ ایسے میں اس بات کو نظرانداز نہیں کیا جاسکتا ہے۔

      یہ ہے معاملہ
      کیرل کے پتھانامتھیٹی ضلع میں کالا جادو کے نام پر دو خواتین کی بَلی دینے کا معاملہ سامنے آیا تھا۔ پولیس کے مطابق، مالی مدد کرنے کے نام پر ان خواتین کو بلایا گیا تھا۔ جس کے بعد ان کا اغوا کیا گیا اور پھر ان کا بے رحمی سے قتل کردیا گیا۔ اتنا ہی نہیں، ملزمین نے خواتین کی نعشوں کے ٹکڑے ٹکڑے کر کے انہیں زمین میں گاڑ دیا تھا۔ اس معاملے کی جانچ کے بعد تین ملزمین کو گرفتار کیا گیا تھا۔

      یہ بھی پڑھیں:
      لڑکی کے ساتھ بس میں سفر کرنا پڑا بھاری، لڑکے کے ساتھ شرپسندوں نے کی یہ حرکت

      یہ بھی پڑھیں:
      پولیس کے زیر حراست ایک شخص کی موت، پولیس اور آر ایس ایس پر خاندان نے لگایا الزام

      پیسہ کمانے کے لیے انسانی بَلی
      پولیس ریمانڈ رپورٹ کے مطابق، میاں بیوی بھگول سنگھ اور لیلیٰ کی جوڑی نے اہم ملزم محمد شفیع کے ساتھ مل کر اس جرم کی سازش رچی تھی۔ ملزمین کی پولیس ریمانڈ رپورٹ میں یہ ذکر کیا گیا ہے کہ اس معاملے میں چونکانے والی بات یہ تھی کہ پیسہ کمانے کے لیے کیے گئے ایک رسم کو پورا کرنے کے لیے اس کے حصے کے طور پر انسانی بَلی دی گئی تھی۔ پدما اور روسلین نامی دو خواتین کی نعشوں کو منگل کو بھگول سنگھ اور لیلیٰ کے گھر کے پاس گڈھوں سے نکالا گیا۔ پولیس کے مطابق، ملزم نے متاثرین کو پیسے کا جھانسہ دے کر لالچ دیا تھا۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: