உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سبریمالا میں 'حلال گڑ' پر ہنگامہ ، کیرالہ ہائی کورٹ پہنچا کیس ، بورڈ نے دی صفائی

    سبریمالا میں 'حلال گڑ' پر ہنگامہ ، کیرالہ ہائی کورٹ پہنچا کیس ، بورڈ نے دی صفائی

    سبریمالا میں 'حلال گڑ' پر ہنگامہ ، کیرالہ ہائی کورٹ پہنچا کیس ، بورڈ نے دی صفائی

    سبریمالا میں پرساد میں 'حلال گڑ' کے استعمال سے متعلق خبریں بے بنیاد ہیں اور لگائے گئے الزامات میں کوئی سچائی نہیں ہے ۔ یہ جانکاری تراون کور دیوسوم بورڈ ( ٹی ڈی بی) نے جمعرات کو کیرالہ ہائی کورٹ کو دی ۔

    • Share this:
      کوچی : سبریمالا میں پرساد میں 'حلال گڑ' کے استعمال سے متعلق خبریں بے بنیاد ہیں اور لگائے گئے الزامات میں کوئی سچائی نہیں ہے ۔ یہ جانکاری تراون کور دیوسوم بورڈ ( ٹی ڈی بی) نے جمعرات کو کیرالہ ہائی کورٹ کو دی ۔ بورڈ نے بتایا کہ سبریمالا میں بھگوان ایپپا مندر میں 'پرسادم' تیار کرنے کیلئے 'حلال گڑ' کا استعمال کئے جانے کی خبریں بے بنیاد ہیں ۔ مندر کا انتظام کرنے والے ٹی ڈی بی نے ایک عرضی کا جواب دیتے ہوئے ان الزامات کو خارج کردیا ، جس میں مندر میں پرساد کے طور پر پیش کئے جانے والے 'اروانا' ، 'پیسیم' اور 'اپپم' کی تیاری میں 'حلال گڑ' کے مبینہ استعمال کو بند کرنے کا مطالبہ کیا گیا تھا ۔

      سبریمالا کرم سمیتی کے جنرل کوآرڈینیٹر اور عرضی گزار ایس جے آر کمار نے کیرالہ میں ٹی ڈی بی اور فوڈ سیفٹی کمشنریٹ کو 'حلال گڑ' سے بنے 'اروانا' اور 'اپپم' کی تقسیم کو روکنے کیلئے ہدایت دینے کی مانگ کی تھی ۔ اپنی عرضی میں انہوں کہا تھا کہ سبریمالا مندر میں 'نویدم / پرساد' کی تیاری کیلئے اس کا آگے استعمال نہیں کرنے کیلئے ہدایت جاری ہونی چاہئے ۔ سبریمالا کے ایپپا مندر میں عقیدت مندوں کو اروانا ، گڑ اور چاول سے بنا 'پیسم' اور میٹھے چاول اور گڑ سے بنا 'اپپم' پرساد دیا جاتا ہے ۔

      ٹی ڈی بی نے ہائی کورٹ کو بتایا کہ گڑ کو مہاراشٹر کی ایک کمپنی سے خریدا گیا تھا ۔ پمپا میں گڑ کی کوالیٹی کی جانچ ہوتی ہے اور اس کے بعد ہی مندر کے اہلکاروں کے ذریعہ گڑ کو قبول کیا جاتا ہے ۔ ٹی ڈی بی نے کہا کہ گڑ 2019 اور 2020 میں خریدا گیا تھا ، لیکن کووڈ 19 وبا کی وجہ سے اس کا استعمال نہیں ہوپایا تھا ۔

      بورڈ نے کہا کہ اس سال جب ستمبر میں اس کی کوالیٹی جانچ کی گئی تو پایا گیا کہ یہ گڑ انسانی استعمال کیلئے ٹھیک نہیں ہے ۔ اس کے بعد اس گڑ کی نیلامی کردی گئی ۔ اس گڑ سے جانوروں کا چارہ تیار کیا جاتا ہے ۔ اس کیلئے گر کی نیلامی کی گئی تھی ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: