உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Lakhimpur Kheri Violence: رکن پارلیمنٹ ورون گاندھی نے اپنے ٹوئٹر اکاونٹ کے بایو سے ’بی جے پی‘ لفظ ہٹا دیا

    رکن پارلیمنٹ ورون گاندھی نے اپنے ٹوئٹر اکاونٹ کے بایو سے ’بی جے پی‘ لفظ ہٹا دیا

    رکن پارلیمنٹ ورون گاندھی نے اپنے ٹوئٹر اکاونٹ کے بایو سے ’بی جے پی‘ لفظ ہٹا دیا

    UP Lakhimpur Violence News: بی جے پی رکن پارلیمنٹ ورون گاندھی نے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ کو لکھے گئے خط میں کہا ہے کہ لکھیم پور کھیری میں احتجاجی مظاہرہ کر رہے کسانوں کو بے رحمی سے کچلنے کا جو دل دہلانے والا حادثہ پیش آیا ہے، اس سے پورے ملک کے شہریوں میں ایک درد اور ناراضگی ہے۔

    • Share this:
      لکھنو: اترپردیش کی پیلی بھیت سے رکن پارلیمنٹ ورون گاندھی نے اپنے ٹوئٹر اکاونٹ نے اپنے ٹوئٹر اکاونٹ کے بایو سے ’بی جے پی‘ لفظ ہٹا لیا ہے۔ آپ کو بتادیں کہ ورون گاندھی نے پیر کی صبح وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ کو خط لکھ کر لکھیم پور کھیری تشدد معاملے کی سی بی آئی جانچ کرانے کا مطالبہ کیا تھا اور متاثرین کو ایک کروڑ روپئے کا معاوضہ دینے کا بھی مطالبہ کیا تھا۔ اس سے پہلے یوگی حکومت کے ذریعہ گنے کی قیمت 350₹ فی کوئنٹل اعلان کرنے پر بی جے پی رکن پارلیمنٹ نے ریاستی حکومت کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا تھا کہ برائے مہربانی اس پر ازسرنو غور کرتے ہوئے بڑھتی ہوئی لاگت اور مہنگائی کے لحاظ سے 400 روپئے کی قیمت کا اعلان کریں۔

      بی جے پی رکن پارلیمنٹ ورون گاندھی نے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ کو لکھے گئے خط میں کہا ہے کہ لکھیم پور کھیری میں احتجاجی مظاہرہ کر رہے کسانوں کو بے رحمی سے کچلنے کا جو دل دہلانے والا حادثہ پیش آیا ہے، اس سے پورے ملک کے شہریوں میں ایک درد اور ناراضگی ہے۔ اس حادثہ سے ایک دن پہلے ہی ملک نے عدم تشدد کے علمبردار مہاتما گاندھی جی کی جینتی منائی ہے۔ اگلے ہی دن لکھیم پور کھیری میں ہمارے کسانوں کا جس طرح سے قتل کیا گیا وہ کسی بھی مہذب معاشرے میں ناقابل معافی ہے۔ احتجاج کرنے والے کسان بھائی ہمارے اپنے شہری ہیں۔ اگر کچھ مدعوں کو لے کر کسان بھائی متاثر ہیں اور اپنے جمہوری حقوق کے تحت احتجاجی مظاہرہ کر رہے ہیں تو ہمیں ان کے ساتھ بڑے ہی صبروتحمل کے ساتھ برتاو کرنا چاہئے۔

       بی جے پی رکن پارلیمنٹ ورون گاندھی نے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ کو لکھے گئے خط میں کہا ہے کہ لکھیم پور کھیری میں احتجاجی مظاہرہ کر رہے کسانوں کو بے رحمی سے کچلنے کا جو دل دہلانے والا حادثہ پیش آیا ہے، اس سے پورے ملک کے شہریوں میں ایک درد اور ناراضگی ہے۔

      بی جے پی رکن پارلیمنٹ ورون گاندھی نے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ کو لکھے گئے خط میں کہا ہے کہ لکھیم پور کھیری میں احتجاجی مظاہرہ کر رہے کسانوں کو بے رحمی سے کچلنے کا جو دل دہلانے والا حادثہ پیش آیا ہے، اس سے پورے ملک کے شہریوں میں ایک درد اور ناراضگی ہے۔


      کیا تھا ورون گاندھی کے خط میں

      بی جے پی رکن پارلیمنٹ نے خط میں مزید لکھا ہے کہ ہمیں ہر حال میں اپنے کسانوں کے ساتھ صرف اور صرف گاندھی وادی اور جمہوری طریقے سے قانون کے دائرے میں ہی حساسیت کے ساتھ پیش آنا چاہئے۔ اس حادثہ میں شہیدہ وئے کسان بھائیوں کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے میں ان کے اہل خانہ کے تئیں اپنی تعزیت پیش کرتا ہوں۔ میری آپ سے گزارش ہے کہ اس حادثہ میں ملوث تمام مشتبہ افراد کی فوری نشاندہی کرکے آئی پی سی کی دفعہ 302 کے تحت قتل کا مقدمہ درج کرکے سخت سے سخت کارروائی کی جائے۔ اس موضوع پر عدالت عظمیٰ کی نگرانی میں سی بی آئی کے ذریعہ متعینہ وقت میں جانچ کروا کر قصورواروں کو سزا دلوانا زیادہ مناسب ہوگا۔ اس کے علاوہ متاثرہ فیملی کو ایک ایک کروڑ روپئے کا معاوضہ بھی دیا جائے۔ برائے مہربانی یہ بھی یقینی بنانے کی زحمی کریں کہ مستقبل میں کسانوں کے ساتھ اس طرح کی کوئی بھی ناانصافی یا زیادتی نہ ہو۔ امید ہے کہ اس حادثہ کی سنجیدگی کو دیکھتے ہوئے آپ میری درخواست پر فوری کرنے کی زحمت کریں۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: