اپنا ضلع منتخب کریں۔

    بیوی کے ناجائز تعلقات کے شک میں حیوان بنا شوہر، 4 سال کی بیٹی کو زندہ جلایا

    بیوی کے ناجائز تعلقات کے شک میں حیوان بنا شوہر، 4 سال کی بیٹی کو زندہ جلایا

    بیوی کے ناجائز تعلقات کے شک میں حیوان بنا شوہر، 4 سال کی بیٹی کو زندہ جلایا

    Jharkhand Crime News: شوہر کے قہر سے بچنے کے لئے بیوی گھر سے باہر نکل کر بھاگی، جس سے اس کی جان بچ گئی۔ شوہر کو شک تھا کہ اس کی بیوی کا کسی اور کے ساتھ ناجائز تعلقات ہیں۔ اس حادثہ کو انجام دینے کے بعد ملزم شوہر بھی گھر چھوڑ کر فرار ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Lohardaga, India
    • Share this:
      رانچی: جھارکھنڈ سے دل دہلا دینے والا ایک حادثہ سامنے آیا ہے۔ یہاں ایک شخص نے اپنی بیوی کے ناجائز تعلقات کے شک میں آگ بگولہ ہوکر اپنی چار سال کی بیٹی کو کیروسین ڈال کر آگ لگا دی، جس سے بیٹی شدید طور پر زخمی ہوگئی۔ زخمی حالت میں علاج کے لئے بچی کو صدر اسپتال میں داخل کرایا گیا، جہاں پر ابتدائی علاج کے بعد بچی کے زخم کی سنگینی کو دیکھتے ہوئے بہتر علاج کے لئے ریمس ریفر کر دیا گیا ہے۔

      حادثہ لوہردگہ ضلع کے کسکو تھانہ علاقے کے گاؤں کوچہ برناگ گاوں کا ہے۔ بچی کی حالت سنگین بنی ہوئی ہے۔ آگ لگنے سے بچی کا جسم 80 فیصد جل چکا ہے۔ اطلاع ملنے کے بعد پولیس معاملے کی جانچ اور آگے کی کارروائی میں مصروف ہوگئی ہے۔ اس معاملے میں رشتہ داروں کا بیان درج کیا گیا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ کسکو تھانہ کے کوچا برناگ گاوں کے باشندہ پپو تری کو شک تھا کہ اس کی بیوی ہیرا دیوی کے کسی کے ساتھ ناجائز تعلقات ہیں۔

      جھارکھنڈ کے لوہردگہ ضلع میں ایک شخص نے اپنی بیوی کے ناجائز تعلقات کے شک میں آگ بگولہ ہوکر اپنی چار سال کی بیٹی کو کیروسین ڈال کر آگ کے حوالے کردیا۔
      جھارکھنڈ کے لوہردگہ ضلع میں ایک شخص نے اپنی بیوی کے ناجائز تعلقات کے شک میں آگ بگولہ ہوکر اپنی چار سال کی بیٹی کو کیروسین ڈال کر آگ کے حوالے کردیا۔


      جمعہ کے روز دیر شام پپو توری شراب کے نشے میں دھت ہوکر اپنے گھر آیا۔ اس کے بعد وہ اپنی بیوی سے جھگڑا کرنے لگا۔ پپو توری نے اپنی بیوی کو چاقو دکھاکر جان سے مارنے کی کوشش کی، جس کے بعد پپو توری کی بیوی ہیرا دیوی گھر سے باہر بھاگ گئی۔ اسی درمیان پپو توری نے اپنی چار سال کی بیٹی سومارا کماری کو گھر کے کمرے میں بند کرکے آگ لگا دی، جس کی وجہ سے سوماری کماری 80 فیصد تک جل گئی ہے۔ مقامی لوگوں کی مدد سے سوماری کماری کو فوری طور پر علاج کے لئے لوہردگہ صدر اسپتال لایا گیا۔

      یہ بھی پڑھیں۔

      درد بھری کہانی، میرٹھ میڈیکل کالج میں 12 سال کی بچی بنی ماں، ڈی این اے سے ہوگی والد کی پہچان

      یہ بھی پڑھیں۔

      ’سب سے زیادہ کنڈوم ہم استعمال کر رہے ہیں‘، بھاگوت کے بیان پر اویسی کا پلٹ وار

      اطلاع ملنے کے بعد پولیس نے صدر اسپتال پہنچ کر بچی کے رشتہ داروں کا بیان درج کیا ہے۔ حادثہ کے بعد پپو توری فرار بتایا جا رہا ہے۔ اس حادثہ سے متعلق لوگ حیران ہیں۔ کسکو تھانہ پولیس اور صدر تھانہ پولیس پورے معاملے کی جانچ کرکے آگے کی کارروائی میں مصروف ہوگئی ہے۔ حادثہ سے متعلق متاثرہ بچی کی ماں بھی کافی خوف میں ہے۔ بچی کی ماں ہیرا دیوی نے بتایا کہ گھر میں شوہر بیوی کے درمیان آپسی تنازعہ چل رہا تھا۔ شوہر پپو توری شراب پیئے ہوئے تھا اور ناجائز تعلقات کا الزام لگاکر چاقو سے مارنا چاہتا تھا، تبھی میں گھر سے بھاگ گئی۔ اس کے بعد پپو توری نے نشے کی حالت میں اپنی چار سالہ بیٹی کو کمرے میں بند کرکے آگ لگا دی۔

      ابتدائی علاج کرنے والے صدر اسپتال کے ڈاکٹر سداما کمار نے بتایا کہ بچی کی حالت بے حد سنگین ہے۔ جلنے سے جسم کا 80 فیصد حصہ جل گیا ہے۔ ایسی حالت میں مریض کو بچانا کافی مشکل ہوتا ہے۔ ہم نے علاج کرکے جلد سے جلد بہتر علاج کے لئے ریمس بھیج دیا ہے تاکہ وقت پر علاج ملے اور بچی بچ سکے۔

      آکاش ساہو کی رپورٹ
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: