ڈرائی فروٹ بیچ رہے کشمیری نوجوانوں کو بے رحمی سے پیٹا، سوشل میڈیا پر ویڈیو وائرل

اترپردیش کے دارالحکومت لکھنئو کے ڈالی گنج میں بدھ کے روز ڈرائی فروٹ بیچ رہے دو کشمیری نوجوانوں کی پٹائی کا معاملہ سامنے آیا ہے۔

Mar 07, 2019 08:31 AM IST | Updated on: Mar 07, 2019 10:13 AM IST
ڈرائی فروٹ بیچ رہے کشمیری نوجوانوں کو بے رحمی سے پیٹا، سوشل میڈیا پر ویڈیو وائرل

اترپردیش کے دارالحکومت لکھنئو کے ڈالی گنج میں بدھ کے روز ڈرائی فروٹ بیچ رہے دو کشمیری نوجوانوں کی پٹائی کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ دراصل، جموں و کشمیر کے کلگام  سے تعلق رکھنے والے دو نوجوان یہاں ڈرائی فروٹ بیچ رہے تھے۔ اس بیچ کچھ لوگ وہاں پہنچے اور ان کی پہچان پوچھ کر پٹائی شروع کر دی۔ حالانکہ مقامی لوگوں کی مخالفت کرنے کے بعد پٹائی کرنے والے نوجوان وہاں سے چلے گئے۔ کچھ لوگوں نے اس پورے حادثہ کا ویڈیو بنا کر سوشل میڈیا پر وائرل کر دیا ہے۔

متاثر نوجوانوں کی شکایت پر پولیس نے مارپیٹ اور دھمکی دینے کا معاملہ درج کر لیا ہے اور تحقیقات کی جا رہی ہے۔ لکھنئو پولیس نے ٹویٹ کر کے اس واقعہ کی تصدیق کی ہے اور کہا کہ معاملہ درج کر لیا گیا ہے اور ضروری کاروائی کی جا رہی ہے۔

Loading...

حادثہ کے وقت جب ان نوجوانوں سے پوچھا گیا کہ پٹائی کیوں کر رہے ہو تو انہوں نے جواب دیا، ’’ وہ کشمیری ہیں‘‘۔ قابل غور ہے کہ اس سے قبل بھی ڈالی گنج میں ڈرائی فروٹ بیچنے والے کشمیری نوجوانوں کی پٹائی کا معاملہ سامنے آچکا ہے۔

مذکورہ معاملہ پر پولیس نے بتایا کہ ڈالی گنج  میں کشمیری نوجوان ڈرائی فروٹ بیچ رہے تھے۔ تبھی تین چار نوجوان وہاں پہنچے اور یہ پوچھا کہ وہ کیسے یہاں ڈرائی فروٹ بیچ رہے ہیں۔ کشمیری نوجوانوں نے ابھی جواب بھی نہیں دیا تھا کہ ان لوگوں نے ان پر حملہ بول دیا۔ انہیں ڈنڈے سے پیٹنے لگے۔ یہ حادثہ بدھ کی شام تقریبا چھ بجے کا ہے۔

 

Loading...