ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

سپریم کورٹ سے مختار انصاری کو لگا بڑا جھٹکا، یوپی کے باندہ جیل میں شفٹ کرنے کا حکم

UP News: یوپی حکومت (UP Government) کا کہنا تھا کہ مختار انصاری (Mukhtar Ansari) عدالتی کارروائی سے بچنا چاہتے ہیں۔

  • Share this:
سپریم کورٹ سے مختار انصاری کو لگا بڑا جھٹکا، یوپی کے باندہ جیل میں شفٹ کرنے کا حکم
سپریم کورٹ سے مختار انصاری کو لگا بڑا جھٹکا، یوپی کے باندہ جیل میں شفٹ کرنے کا حکم

نئی دہلی/ لکھنو: سپریم کورٹ (Supreme court) نے جمعہ کے روز ایک اہم فیصلہ سناتے ہوئے گینگسٹر سے لیڈر بنے مختار انصاری (Mukhtar Ansari) کو پنجاب کی جیل سے اترپردیش کے باندہ جیل میں ٹرانسفر کرنے کا حکم دیا ہے۔ پنجاب حکومت دو ہفتوں میں مختار انصاری کو یوپی حکومت کے حوالے کرنا ہوگا۔ مختار انصاری جنوری 2019 سے پنجاب کی جیل میں بند ہیں۔ مختار انصاری اترپردیش میں درجنوں مجرمانہ معاملے میں ملزم ہیں اور یہاں سارے معاملے ریاست کے الگ الگ عدالتوں میں زیر التوا ہیں۔ ان معاملوں پر کارروائی نہیں ہو پارہی ہے، کیونکہ مختار انصاری پیش نہیں ہو پارہے ہیں۔ مختار انصاری نے عدالت کو بتایا تھا کہ وہ اترپردیش کی جیل میں نہیں جانا چاہتے ہیں، کیونکہ وہاں انہیں جان کا خطرہ ہے۔


یوپی حکومت کا سپریم کورٹ میں کہنا تھا کہ مختار انصاری عدالتی کارروائی سے بچنا چاہتے ہیں۔ پنجاب حکومت نے مختار انصاری کی حمایت کرتے ہوئے کہا تھا کہ مختار انصاری کی طبعیت ٹھیک نہیں ہے، اس لئے انہیں پنجاب سے باہر ٹرانسفر نہیں کیا جاسکتا۔ اب سپریم کورٹ نے مختار انصاری کو یوپی بھیجنے کا حکم دیا ہے۔ حال ہی میں اترپردیش کے دورے سے لوٹے پنجاب کانگریس حکومت کے وزیر جیل سکھجندر سنگھ رندھاوا تنازعہ میں گھر گئے ہیں۔ اس دورے کے بعد اترپردیش حکومت کے وزیر سدھارتھ ناتھ سنگھ نے الزام لگایا ہے کہ وہ یوپی آکر پنجاب کی روپڑ جیل میں بند لیڈر مختار انصاری کے قریبی لوگوں سے ملے تھے۔


یوپی حکومت کا سپریم کورٹ میں کہنا تھا کہ مختار انصاری عدالتی کارروائی سے بچنا چاہتے ہیں۔
یوپی حکومت کا سپریم کورٹ میں کہنا تھا کہ مختار انصاری عدالتی کارروائی سے بچنا چاہتے ہیں۔


پنجاب کی جیل میں کیوں بند ہیں مختار انصاری؟

پنجاب پولیس مختار انصاری کو 10 کروڑ روپئے کی رنگداری مانگنے کے معاملے میں دو سال پہلے پروڈکشن وارنٹ پر موہالی لے آئی تھی۔ مختار انصاری پر الزام تھا کہ موہالی کے ایک بڑے بلڈر کو فون کرکے خود کو مختار انصاری بتاتے ہوئے 10 کروڑ روپئے مانگے گئے تھے۔ 24 جنوری 2019 کو عدالت میں پیش کرنے کے بعد اسے 14 دن کی عدالتی حراست میں بھیج دیا گیا تھا، جانچ کے سبب تب سے مختار انصاری روپڑ جیل میں بند ہیں۔

یوپی میں درج ہیں کئی معاملے

مافیا مختار انصاری پر اترپردیش میں کئی مجرمانہ معاملے درج ہیں اور وہاں کی پولیس نے سپریم کورٹ میں اسے روپڑ جیل سے یوپی کی غازی پور جیل میں منتقل کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ یوپی پولیس نے سپریم کورٹ میں دی گئی عرضی میں کہا ہے کہ پنجاب حکومت ایک گینگسٹر کو بچانے کی کوشش کررہی ہے، جبکہ پنجاب حکومت نے سپریم کورٹ میں دلیل دی ہے کہ طبی اسباب کے سبب مختار انصاری کو فی الحال روپڑ جیل سے منتقل نہیں کیا جاسکتا۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Mar 26, 2021 06:17 PM IST