ہوم » نیوز » No Category

عالمی یوم خواتین کے موقع پر گیسٹ ٹیچرس نے منڈن کے ساتھ ارتھی نکال کر کیا احتجاج

عالمی یوم خواتین کے موقع پر گیسٹ ٹیچرس نے جہاں کمل ناتھ حکومت کے خلاف اپنے اتحاد کا مظاہر ہ کرتے ہوئے منڈن کروا کر حکومت کی ارتھی نکالی تو وہیں کچھ خواتین ٹیچرس نے ارتھی کے ساتھ ستی کی بھی رسم ادا کی ۔

  • Share this:
عالمی یوم خواتین کے موقع پر گیسٹ ٹیچرس نے منڈن کے ساتھ ارتھی نکال کر کیا احتجاج
عالمی یوم خواتین کے موقع پر گیسٹ ٹیچرس نے منڈن کے ساتھ ارتھی نکال کر کیا احتجاج

بھوپال شاہجہانی پارک میں گیسٹ ٹیچرس کا دھرنا 97 ویں دن سے جاری ہے۔ گیسٹ ٹیچرس اپنے مطالبات کو لے کر دسمبر کے پہلے ہفتہ سے دھرنے پر بیٹھے ہیں ۔ جب گیسٹ ٹیچرس نے کمل ناتھ حکومت کی وعدہ خلافی کے خلاف اپنا احتجاج شروع کیا تھا تو اس وقت کڑاکے کی سردی پڑرہی تھی اور اب موسم نے بھی کروٹ لے لی ہے اور بسنت کی بہار چاروں جانب دکھائی دے رہی ہے ۔ لیکن گیسٹ ٹیچرس کی زندگی میں وہی پہلے جیسی ہی ویرانی ہے۔ گزشتہ 97 دنوں میں حکومت کی جانب سے حکومت کا کوئی نمائندہ نہ ان سے ملنے کے لئے آیا اور نہ ہی انتخابی منشور میں کئے گئے ان سے کسی وعدہ کو اب تک پورا کیا گیا۔

عالمی یوم خواتین کے موقع پر گیسٹ ٹیچرس نے جہاں کمل ناتھ حکومت کے خلاف اپنے اتحاد کا مظاہر ہ کرتے ہوئے منڈن کروا کر حکومت کی ارتھی نکالی تو وہیں کچھ خواتین ٹیچرس نے ارتھی کے ساتھ ستی کی بھی رسم ادا کی ۔ گیسٹ ٹیچرس اس بات کو لے کر ناراض ہیں کہ انہیں کالجوں اور اسکولوں میں ہر سال کچھ مہینے کے لئے رکھا جاتا ہے اور پھر جب اسکول بند ہوتے ہیں تو انہیں نکال دیا جاتا ہے ۔ یہ گیسٹ ٹیچرس دو چار سال سے نہیں بلکہ پندرہ سے بیس سالوں سے اس انتظار میں ہیں کہ حکومت ان کی جانب محبت کی نظر ڈالے گئی اور ان کی ملازمت کبھی حتمی بھی ہو سکے گی ۔



گیسٹ ٹیچر آرتی کہتی ہیں کہ اب لڑائی آر پار کی ہے ، اپنے حقوق کے لئے ہم نے یوم خواتین کے دن منڈن کروانے کے ساتھ  ارتھی بھی نکالی ہے اور ستی بھی کی ہے ۔ یہ احتجاج تب تک جاری رہے گا ، جب تک ہمیں اپنا حق نہیں ملتا ہے ۔ یوم خواتین خواتین کے اعزاز کا دن ہوتا ہے لیکن کمل ناتھ سرکار نے اس دن کی بھی لاج نہیں رکھی ہے۔

First published: Mar 08, 2020 09:44 PM IST