ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

بھوپال میں بڑے سیکس ریکیٹ کا پردہ فاش ، قابل اعتراض حالت میں چار خواتین سمیت 10 گرفتار

ڈی سی پی کرائم برانچ ادیتی بھاوسار نے بتایا کہ پولیس کو سیکس ریکیٹ کی اطلاع ملی تھی ۔ کلینک کی آڑ میں گزشتہ ایک ڈیڑھ سال سے سیکس ریکیٹ چل رہا تھا ۔

  • Share this:
بھوپال میں بڑے سیکس ریکیٹ کا پردہ فاش ، قابل اعتراض حالت میں چار خواتین سمیت 10 گرفتار
بھوپال میں بڑے سیکس ریکیٹ کا پردہ فاش ، قابل اعتراض حالت میں چار خواتین سمیت 10 گرفتار

مدھیہ پردیش کے بھوپال میں کلینک کی آڑ میں چل رہے سیکس ریکیٹ کا کرائم برانچ نے پردہ فاش کیا ہے ۔ ملزم پوشیدہ امراض کی دکان اور کلینک کی آڑ میں سیکس ریکیٹ چلا رہا تھا ۔ یہی نہیں کلینک بھی رجسٹریشن کے بغیر ہی چلائی جارہی تھی ۔ کرائم برانچ نے اس معاملہ میں چار خواتین سمیت 10 ملزمین کو گرفتار کیا ہے ۔ گرفتار ملزمین کا سرغنہ سچن چوہان ہے ، جو بھوپال کے برکھیڑی علاقہ میں کلینک کی آڑ میں سیکس ریکیٹ چلا رہا تھا ۔


بھوپال میں ملزم سچن چوہان کے ذریعہ چلائے جارہے سیکس ریکیٹ پر پولیس نے چھاپہ ماری کی ۔ گرفتار لوگوں میں سچن چوہان کے علاوہ باڑی بریلی کا سابق سرپنچ عرفان خان بھی شامل ہے ۔ دراصل کرائم برانچ پولیس نے جب برکھیڑی علاقہ میں ایک کلینک پر چھاپہ مارا تو اس سیکس ریکیٹ کا پردہ فاش ہوا ۔ یہاں فرضی طریقہ سے لائنس کے بغیر کلینک چلائی جارہی تھی اور اسی کلینک کی آڑ میں سیکس ریکیٹ چل رہا تھا ۔ فی الحال پولیس نے معاملہ درج کرلیا ہے اور ملزمین سے پوچھ گچھ کی جارہی ہے ۔


ڈی سی پی کرائم برانچ ادیتی بھاوسار نے بتایا کہ پولیس کو یہاں سیکس ریکیٹ کی اطلاع ملی تھی ، جہاں کلینک کی آڑ میں گزشتہ ایک ڈیڑھ سال سے سیکس ریکیٹ چل رہا تھا ۔ پولیس نے جب یہاں چھاپہ مارا تو جائے واقعہ پر چھ مرد اور چار خواتین مشتبہ حالت میں ملے ۔ کرائم برانچ پولیس فرضی کلینک کی بھی جانکاری حاصل کررہی ہے ۔ ملزمین سے پوچھ گچھ میں پولیس کو کئی بڑے ناموں کے سامنے آنے کی امید ہے ۔

First published: Mar 03, 2020 06:27 PM IST