ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

وزیر اعظم مودی سے ملاقات کے بعد ادھو ٹھاکرے نے کہا : سی اے اے اور این آر سی سے ڈرنے کی ضرورت نہیں

ادھو ٹھاکرے نے کہا کہ سی اے اے کولے کر کسی کو ڈرنے کی ضرورت نہیں ہے ۔ این آر سی پر حکومت نے اپنا موقف واضح کردیا ہے ۔ این آر سی پورے ملک میں نافذ نہیں کی جائے گی ، آسام تک کی ہی بات ہے ۔

  • Share this:
وزیر اعظم مودی سے ملاقات کے بعد ادھو ٹھاکرے نے کہا : سی اے اے اور این آر سی سے ڈرنے کی ضرورت نہیں
وزیر اعظم سے ملاقات کے بعد ادھو ٹھاکرے نے کہا : سی اے اے اور این آر سی ڈرنے کی ضرورت نہیں

مہاراشٹر کے وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے نے جمعہ کو وزیر اعظم مودی سے دہلی میں ملاقات کی ۔ ملاقات کے بعد انہوں نے کہا کہ سی اے اے سے کسی کو ڈرنے کی ضرورت نہیں ہے ۔ این پی آر ہر دس سال میں ہونے والی ایک عام کارروائی ہے ۔ مہاراشٹر میں این آر سی نافذ نہیں کرنے کی بات کہہ چکے ادھو ٹھاکرے نے واضح کیا کہ این آر سی سے مسلمانوں کو کوئی خطرہ نہیں ہے ۔


ادھو ٹھاکرے نے ملاقات کے بعد کہا کہ وزیر اعظم سے سی اے اے اور این آر سی پر بھی تبادلہ خیال ہوا ہے ۔ اس مسئلہ پر میں نے اپنا موقف واضح کردیا ہے ۔ اس سے کسی کو ڈرنے کی ضرورت نہیں ہے ۔ این پی آر ہر دس سال میں ہوتا ہے ۔ کسی کا حق نہیں چھینا جائے گا ۔ میں نے اپنی ریاست کے لوگوں کو کہا ہے کہ این آر سی مسلمانوں کیلئے خطرہ نہیں ہے ۔



ادھو ٹھاکرے نے کہا کہ سی اے اے کولے کر کسی کو ڈرنے کی ضرورت نہیں ہے ۔ این آر سی پر حکومت نے اپنا موقف واضح کردیا ہے ۔ این آر سی پورے ملک میں نافذ نہیں کی جائے گی ، آسام تک کی ہی بات ہے ۔ این پی آر اور مردم شماری کی جہاں تک بات ہے تو مردم شماری ہر دس سال میں ہوتی ہے ۔ مہاراشٹر کے لوگوں کو واضح کردیا ہے کہ کسی کے حق کو چھیننے نہیں دوں گا ۔ این آر سی میں مسلمانوں کیلئے جو خطرناک ہے ، ایسا ماحول بنایا جارہا ہے ، یہ نہیں ہونا چاہئے ۔
First published: Feb 21, 2020 11:47 PM IST