مہاراشٹر : کانگریس ، این سی پی اور شیو سینا کی حکومت کا فارمولہ تیار ! کون ہوگا وزیر اعلی ؟

مہاراشٹر میں حکومت کی تشکیل کے لیے جمعرات کو کانگریس ،این سی پی اور شیوسینا کی ایک مشترکہ میٹنگ ہوئی ، جس میں کئی اہم معاملات پر غور وخوض کیا گیا ہے۔

Nov 14, 2019 10:27 PM IST | Updated on: Nov 14, 2019 10:27 PM IST
مہاراشٹر : کانگریس ، این سی پی اور شیو سینا کی حکومت کا فارمولہ تیار ! کون ہوگا وزیر اعلی ؟

مہاراشٹر : کانگریس ، این سی پی اور شیو سینا کی حکومت کا فارمولہ تیار ! کون ہوگا وزیر اعلی ؟

مہاراشٹر میں حکومت کی تشکیل کے لیے جمعرات کو کانگریس ،این سی پی اور شیوسینا کی ایک مشترکہ میٹنگ ہوئی ، جس میں کئی اہم معاملات پر غور وخوض کیا گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق ریاست میں نئی حکومت کے لیے کامن منیمم پروگرام تیارکرلیا گیا ہے اور جلد ہی حکومت سازی کی کوشش شروع ہوجائے گی ۔ پہلی بار تینوں پارٹیوں کے لیڈران ایک ساتھ جمع ہوئے ہیں۔ تیار شدہ مسودے کو تینوں پارٹیوں کے ہائی کمان کو بھیجا جائے گا ۔

ذرائع کے حوالے سے خبر آرہی ہے کہ ان تینوں پارٹیوں کے درمیان کامن منیمم پروگرام کو لے کر اتفاق رائے پیدا ہوگیا ہے ۔ اب تک جن معاملات پر اتفاق رائے ہونے کی خبر ملی ہے ، ان میں کسان قرض معافی ، فصل بیمہ اسکیم کا جائزہ ، روزگار ، چھترپتی شیواجی مہاراج اور بی آر امبیڈکر میموریل شامل ہیں ۔ حالانکہ ریاست میں وزیر اعلی کس پارٹی کا ہوگا ، اس کو لے کر کوئی اطلاع نہیں ملی ہے ۔ خیال رہے کہ اس سے پہلے این سی پی نے بھی شیو سینا کے سامنے ڈھائی سال کیلئے اپنی پارٹی کا وزیر اعلی بنانے کی شرط رکھی تھی ۔ تاہم ابھی یہ واضح نہیں ہوسکا ہے کہ دونوں پارٹیوں کے درمیان اس کو لے کر کوئی فیصلہ ہوا ہے یا نہیں ۔

واضح رہے کہ حکومت کی تشکیل کے لیے بنائی جانے والی این سی پی کی رابطہ کمیٹی کے ایک رکن نے اس بات کا دعوی کیا ہے کہ آئندہ 15-20 دنوں میں مہاراشٹر میں شیوسینا ، این سی پی اور کانگریس کی حکومت بن جائے گی ۔ کیونکہ حکومت بنانے کی کوششیں تیز ہوگئی ہیں۔ ممبئی میں پہلی بار تینوں پارٹیوں نے ایک ساتھ ملاقات کی ۔ مہاراشٹر میں مخلوط حکومت کے قیام کے لئے فارمولوں پر تبادلہ خیال کیا جارہا ہے ۔ بدھ کے روز کانگریس اور این سی پی قائدین کا اجلاس ہواتھا ۔ اس کے بعد ، شیو سینا کی جمعرات کے روز بھی ان دونوں پارٹیوں کے ساتھ میٹنگ ہوئی ۔ تینوں پارٹیوں کے رہنماؤں نے مل بیٹھ کر حکومت سازی کے فارمولے پر تبادلہ خیال کیا ۔

این سی پی کے ایک لیڈر کے مطابق میٹنگ میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ ممبئی میں تینوں سیاسی پارٹیوں کے مابین باہمی معاہدے کے بعد سونیا گاندھی اور شرد پوار ایک بار پھر دہلی میں ملاقات کریں گے ۔ پورے عمل کو 15-20 دنوں میں مکمل کرنے کے بعد حکومت سازی کی کوشش کی جائے گی ۔ تینوں پارٹیوں کی پہلی میٹنگ میں کانگریس کے سابق وزیراعلیٰ پرتھوی راج چوان ، ایوان کے لیڈروجے ویڈٹیوار ، مانک راؤ ٹھاکرے ، این سی پی کی طرف سے ریاستی صدرجینت پاٹل ، سینئر لیڈرچھگن بھجبل ، ترجمان نواب ملک اور شیوسینا کے ایوان میں لیڈرایکناتھ شنڈے اور سنیئر لیڈرسبھاش ڈیسائی وغیرہ شامل رہے ۔

مہاراشٹر: حکومت سازی کی کوششیں تیز، کانگریس ، این سی پی اور شیو سینا نے کی پہلی خفیہ میٹنگ

بتایا جاتا ہے کہ تینوں پارٹیوں کی طویل ملاقاتوں کا مقصد یہ ہے کہ ریاست سے صدرراج کا خاتمہ کروایا جائے اور بی جے پی کو اقتدار سے دوررکھتے ہوئے ریاست میں پانچ سال کے لیے ایک پایہ دار اور مضبوط حکومت تشکیل دی جائے ۔ واضح رہے کہ مہاراشٹراسمبلی انتخابات کے نتائج کے آنے کے نصف ماہ گزرجانے کے بعد بھی حکومت سازی میں کسی بھی پارٹی کے آگے نہ آنے کے بعد گورنر نے صدرراج کی سفارش کردی تھی ۔ اس سے قبل انہوں نے بی جے پی ، پھر شیوسینا اور این سی پی کو طلب کر کے حکومت سازی کے سلسلہ میں وقت دیا تھا ، لیکن ایسا نہ ہونے پر صدرراج نافذ کردیا گیا۔

نیوز ایجنسی یو این آئی کے ان پٹ کے ساتھ

Loading...