உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    منی پور میں لینڈ سلائیڈنگ: ملبے سے 4 لاشیں برآمد، اب تک 14 کی موت، 60 سے زائد افراد کے دبے ہونے کا خدشہ

    Manipur landslide: اب تک 14 لاشیں نکالی جا چکی ہیں۔ اس کے علاوہ 23 لوگوں کو بحفاظت بچا لیا گیا ہے۔ درجنوں افراد تاحال لاپتہ ہیں۔

    Manipur landslide: اب تک 14 لاشیں نکالی جا چکی ہیں۔ اس کے علاوہ 23 لوگوں کو بحفاظت بچا لیا گیا ہے۔ درجنوں افراد تاحال لاپتہ ہیں۔

    Manipur landslide: اب تک 14 لاشیں نکالی جا چکی ہیں۔ اس کے علاوہ 23 لوگوں کو بحفاظت بچا لیا گیا ہے۔ درجنوں افراد تاحال لاپتہ ہیں۔

    • Share this:
      Manipur landslide: منی پور میں تباہ کن مٹی کے تودے گرنے سے مرنے والوں کی تعداد بڑھ رہی ہے۔ نیوز ایجنسی اے این آئی نے فوج کے حوالے سے بتایا کہ جمعہ کو ملبے سے مزید 4 افراد کی لاشیں نکالی گئیں۔ اب تک 14 لاشیں نکالی جا چکی ہیں۔ اس کے علاوہ 23 لوگوں کو بحفاظت بچا لیا گیا ہے۔ درجنوں افراد اب بھی لاپتہ ہیں۔ ڈی جی پی پی ڈونگل نے کہا کہ ملبے کے نیچے کتنے لوگ دبے ہیں اس کی صحیح تعداد معلوم نہیں ہوسکی ہے لیکن تقریباً 60 افراد کے پھنسے ہونے کا خدشہ ہے۔ ان میں فوجی، ریلوے ملازمین، دیہاتی اور مزدور شامل ہیں۔
      یہ لینڈ سلائیڈنگ بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب منی پور کے نونی ضلع میں توپل ریلوے اسٹیشن کے قریب ہندوستانی فوج کے 107 علاقائی آرمی کیمپ کے قریب ہوئی۔ یہاں جیری بام سے امپھال کے درمیان ریلوے لائن بنائی جا رہی ہے۔ یہ سپاہی اس کی حفاظت کے لیے تعینات تھے۔ لینڈ سلائیڈنگ کے بعد راحت اور بچاؤ کا کام جاری ہے۔

      Nupur Sharma کو سپریم کورٹ کی پھٹکار، کہا۔ ٹی وی پر پورے ملک سے معافی مانگنی چاہئے

      آسام رائفلز کے علاوہ ہندوستانی فوج کی علاقائی فوج، این ڈی آر ایف، ایس ڈی آر ایف اور دیگر اہلکار دن رات ملبہ ہٹانے میں مصروف ہیں۔ خراب موسم کے باوجود رات گئے سرچ اینڈ ریسکیو آپریشن جاری تھا۔ اس کام میں بلڈوزر بھی لگائے گئے ہیں۔ لینڈ سلائیڈنگ کے ملبے نے دریائے اجائی کا پانی بھی روک دیا تھا جس سے وہاں ایک ذخیرہ بن گیا تھا۔ جس کی وجہ سے آس پاس کے نشیبی علاقے ڈوبنے کا خطرہ پیدا ہو گیا ہے۔



      میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ حادثے کے وقت ٹیریٹوریل آرمی کے 43 فوجی وہاں موجود تھے۔ جن کی لاشیں نکالی گئی ہیں ان میں 11 فوجی ہیں۔ صدر، وزیر اعظم وغیرہ نے بھی حادثے پر دکھ کا اظہار کیا ہے۔ پی ایم مودی نے کہا کہ انہوں نے منی پور کے وزیر اعلیٰ این بیرن سنگھ سے بات کی اور لینڈ سلائیڈنگ سے پیدا ہونے والی صورتحال کا جائزہ لیا۔ انہیں مرکز کی طرف سے ہر ممکن مدد کا یقین دلایا گیا ہے۔ وزیر اعلیٰ این۔ بیرن سنگھ خود موقع پر گئے اور حالات کا جائزہ لیا۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: