உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پنجاب: پولیس کا دعویٰ، کپور تھلا میں بے ادبی نہیں، کئی حراست میں، لوگوں نے ہائی وے کیا جام

    Punjab Latest News: کپور تھلا کے ایس ایس پی ہرکمل پریت سنگھ کھکھ (SSP Harkamalpreet Singh Khakh) نے نظام پور (Nizampur) میں ہوئے مبینہ بے ادبی کے معاملے کو مسترد کرتے ہوئے اسے ابتدائی جانچ (preliminary investigation) میں چوری کے حادثہ کے اشارے دیئے ہیں۔

    Punjab Latest News: کپور تھلا کے ایس ایس پی ہرکمل پریت سنگھ کھکھ (SSP Harkamalpreet Singh Khakh) نے نظام پور (Nizampur) میں ہوئے مبینہ بے ادبی کے معاملے کو مسترد کرتے ہوئے اسے ابتدائی جانچ (preliminary investigation) میں چوری کے حادثہ کے اشارے دیئے ہیں۔

    Punjab Latest News: کپور تھلا کے ایس ایس پی ہرکمل پریت سنگھ کھکھ (SSP Harkamalpreet Singh Khakh) نے نظام پور (Nizampur) میں ہوئے مبینہ بے ادبی کے معاملے کو مسترد کرتے ہوئے اسے ابتدائی جانچ (preliminary investigation) میں چوری کے حادثہ کے اشارے دیئے ہیں۔

    • Share this:
      چندی گڑھ: کپور تھلا میں ہوئی مبینہ بے ادبی (alleged sacrilege in Kapurthala) کے معاملے میں نوجوان کی موب لنچنگ (Mob Lynching) سے متعلق پولیس نے کچھ لوگوں کو حراست میں لیا ہے، جس کے بعد علاقے میں مبینہ کشیدگی ہوگئی ہے۔ کپور تھلا کے ایس ایس پی ہرکمل پریت سنگھ کھکھ (SSP Harkamalpreet Singh Khakh) نے نظام پور (Nizampur) میں ہوئے مبینہ بے ادبی کے معاملے کو مسترد کرتے ہوئے اسے ابتدائی جانچ (preliminary investigation) میں چوری کے حادثہ کے اشارے دیئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ گرودوارے میں کوئی صفحے پھٹے ہوئے نہیں ملے ہیں اور ایسا معلوم ہوتا ہے کہ نوجوان چوری کے خدشے سے وہاں گھسا تھا۔ اس کے بعد جب پولیس نے کچھ لوگوں کو راونڈ اپ کیا تو علاقے کے لوگوں نے کپور تھلا ہائی وے (Kapurthala highway) کو جام کردیا ہے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ یہ سیدھے طور پر قتل کا معاملہ ہے اور ملزمین کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

      ایس ایس پی نے کہا کہ گرودوارہ صاحب میں گرو گرنتھ صاحب اوپر کی منزل پر ہے۔ جہان پر گرو گرنتھ صاحب کے سوروپوں سے کوئی چھیڑ چھاڑ نہیں ہوئی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ نوجوان نے جو جیکٹ پہن رکھی تھی وہ سیوا داروں کی تھی، جسے شاید وہ چوری کرکے لے جا رہا تھا۔ نوجوان کے پاس سے جو آئی کارڈ برآمد ہوئے ہیں وہ کسی خاتون کے اسکول کے بچوں کے ہیں جو اس نے چرائے تھے۔ حالانکہ گرودوارہ کے کارگزار امرجیت سنگھ نے فیس بک پر لائیو اسٹریم کئے گئے ایک ویڈیو میں دعویٰ کیا کہ جب وہ صبح 4 نتنیم (روزانہ عبادت) کے لئے نکلے تو انہوں نے دیکھا کہ نوجوان نشان صاحب کی توہین کر رہا تھا۔

      امرجیت سنگھ نے کہا کہ جب میں نے مشتبہ شخص کو چیلنج دیا تو اس نے اندھیرے میں بھاگنے کی کوشش کی، لیکن کچھ دیر بعد اسے پکڑ لیا گیا۔ گرودوارہ کے گرنتھی نے کہا کہ مشتبہ شخص نے صرف اتنا بتایا کہ اسے دہلی سے بھیجا گیا تھا اور اس کی ایک بہن کو بھی بے حرمتی کے لئے دوسری جگہ مار دیا گیا ہے۔

      حالانکہ ابتدائی جانچ میں پولیس نے اسے ازسر نو مسترد کرتے ہوئے چوری سے متعلق حادثہ بتایا ہے۔ دوسری جانب پنجاب کے پولیس جنرل ڈائریکٹر سدھارتھ چٹو پادھیائے نے ایک ٹوئٹ میں کہا، ’میں نے امرتسر اور کپور تھلا میں ہوئی بدقسمتی والے سانحہ کو سنجیدگی سے لیا ہے۔ ریاست میں فرقہ وارانہ ماحول خراب کرنے کی کسی بھی کوشش سے سختی سے نمٹا جائے گا۔

      قومی، بین الااقوامی، جموں و کشمیر کی تازہ ترین خبروں کے علاوہ  تعلیم و روزگار اور بزنس  کی خبروں کے لیے  نیوز18 اردو کو ٹویٹر اور فیس بک پر فالو کریں۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: